ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

الرٹ! اگلے 24 گھنٹے میں آسکتا ہے چکرواتی طوفان، 'ایم فن'، ان علاقوں میں ہوگی بھاری بارش

اڈیشہ میں طوفان کے ممکنہ خطرے سے نمٹنے کے لئے تیاریوں کے حصے کے طور پر جمعہ کے روز 12 ساحلی اضلاع میں انتباہ جاری کیا گیا۔ ساتھ ہی کلیکٹروں سے لوگوںں کیلئے متبادل شیلٹر ہوم کا انتظام کرنے کو کہا گیا ہے۔ اوڈیشہ ریلیف کمشنر پی کے جینا نے بتایا کہ انہوں نے چیف سکریٹری اسیت ترپاٹھی کے ساتھ طوفان کی صورتحال اور ریاست پر اس کے اثرات کا جائزہ لیا۔

  • Share this:
الرٹ! اگلے 24 گھنٹے میں آسکتا ہے چکرواتی طوفان، 'ایم فن'، ان علاقوں میں ہوگی بھاری بارش
اڈیشہ میں طوفان کے ممکنہ خطرے سے نمٹنے کے لئے تیاریوں کے حصے کے طور پر جمعہ کے روز 12 ساحلی اضلاع میں انتباہ جاری کیا گیا۔ ساتھ ہی کلیکٹروں سے لوگوںں کیلئے متبادل شیلٹر ہوم کا انتظام کرنے کو کہا گیا ہے۔ اوڈیشہ ریلیف کمشنر پی کے جینا نے بتایا کہ انہوں نے چیف سکریٹری اسیت ترپاٹھی کے ساتھ طوفان کی صورتحال اور ریاست پر اس کے اثرات کا جائزہ لیا۔

نئی دہلی: محکمہ موسمیات نے اگلے 24 گھنٹوں میں چکرواتی طوفان آنے کا اندیشہ ظاہر کیا ہے۔ اس کے چلتے مغربی بنگال (West Bengal) اور اوڈیشہ (Odisha) کے کئی علاقوں میں بھاری بارش کا الرٹ دیا ہے۔ اس طوفام کو ایم فن (Cyclone Amphan,) نام دیا گیا ہے۔ خلیج بنگال جنوب مشرق میں صبح 5 بج کر 30 منٹ پر کم دباؤ کا ایک علاقہ دیکھا گیا۔ یہ اگلے 24 گھنٹوں میں طوفان کا روپ لے سکتا ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق ممکنہ کم دباؤ کا علاقہ شمال-شمال مشرق کا رخ کرتے ہوئے اپنے راستے پر واپس آئے گا اور خلیج بنگال کی طرف رخ کرے گا۔ کم پریشر والے علاقے کی رفتار کا ابھی تک پتہ نہیں چل سکا ہے اور محکمہ موسمیات اس بارے میں معلومات دیں گے کہ ساحل پر ممکنہ طوفان کہاں آئے گا۔ یہ طوفان شمالی اوڈیشہ ، جنوبی بنگال یا بنگلہ دیش سے بھی ٹکرا سکتا ہے۔ حالانکہ محکمہ موسمیات نے ابھی تک کوئی قطعی معلومات نہیں دی ہے ، تاہم محکمہ نے ابھی تک یہ واضح نہیں کیا ہے کہ کم دباؤ کا علاقہ اور بڑھ جائے گا اور بعد میں یہ طوفان کی شکل اختیار کر لے گا۔


اڈیشہ میں طوفان کے ممکنہ خطرے سے نمٹنے کے لئے تیاریوں کے حصے کے طور پر جمعہ کے روز 12 ساحلی اضلاع میں انتباہ جاری کیا گیا۔ ساتھ ہی کلیکٹروں سے لوگوںں کیلئے متبادل شیلٹر ہوم کا انتظام کرنے کو کہا گیا ہے۔ اوڈیشہ ریلیف کمشنر پی کے جینا نے بتایا کہ انہوں نے چیف سکریٹری اسیت ترپاٹھی کے ساتھ طوفان کی صورتحال اور ریاست پر اس کے اثرات کا جائزہ لیا۔

Published by: sana Naeem
First published: May 16, 2020 01:26 PM IST