உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بنگلورو میں اردو زبان میں بچوں کو سائنس اورٹیکنالوجی کی تعلیم پر مباحثہ کا انعقاد

    بنگلورو: بنگلورو کے حمیدشاہ کمپلیکس میں اردو بیداری پروگرام کا انعقاد کیا گیا۔ کرناٹک اردو اکیڈمی اورفیڈریشن آف کرناٹک مسلم ایسوسی ایشن کے تحت منعقدہ اس پروگرام میں اردو اسکولوں کے مسائل پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

    بنگلورو: بنگلورو کے حمیدشاہ کمپلیکس میں اردو بیداری پروگرام کا انعقاد کیا گیا۔ کرناٹک اردو اکیڈمی اورفیڈریشن آف کرناٹک مسلم ایسوسی ایشن کے تحت منعقدہ اس پروگرام میں اردو اسکولوں کے مسائل پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

    بنگلورو: بنگلورو کے حمیدشاہ کمپلیکس میں اردو بیداری پروگرام کا انعقاد کیا گیا۔ کرناٹک اردو اکیڈمی اورفیڈریشن آف کرناٹک مسلم ایسوسی ایشن کے تحت منعقدہ اس پروگرام میں اردو اسکولوں کے مسائل پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:

      بنگلورو: بنگلورو کے حمیدشاہ کمپلیکس میں اردو بیداری پروگرام کا انعقاد کیا گیا۔ کرناٹک اردو اکیڈمی اورفیڈریشن آف کرناٹک مسلم ایسوسی ایشن کے تحت منعقدہ اس پروگرام میں اردو اسکولوں کے مسائل پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔


      ڈاکٹرطحٰہ متین نے کہاکہ انگریزی کی یلغارسے ہر زبان کادائرہ تنگ ہوتا جارہا ہے۔ یہاں تک کے سائنس اور ٹیکنالوجی کی زبان بھی انگریزی بن چکی ہے۔ لہذااردو یا دیگرزبانوں میں سائنس اور ٹیکنالوجی کے مضامین پڑھنا اب فائدہ مند نہیں رہا۔


      تاہم ان کے ان خیالات سے کئی مقررین نےاتفاق نہیں کیا۔ انہوں نے کہا کہ اردوزبان میں موثر طریقے سےسائنس اور ٹیکنالوجی کی تعلیم دی جاسکتی ہے۔ مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی کا ڈپلومہ کورس اس کی بہترین مثال ہے ۔


      اس بحث میں عام طورپریہ رائے ابھر کرسامنے آئی کہ موجودہ دور میں ہرطالب علم کودو سے تین زبانیں سیکھنی ضروری ہے۔ لہذااردو کے طلبہ بھی اپنی مادری زبان کے ساتھ قومی اورعلاقائی زبانوں پر دسترس حاصل کریں۔

      First published: