உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بنگلورو میں تنزانیہ کی طالبہ پرحملے کے الزام میں پانچ گرفتار، راہل نے رپورٹ طلب کی

    بنگلورو۔ تنزانیہ کی طالبہ کو بنگلورو میں مبینہ طور پر پیٹنے اوربرہنہ کرنےکے معاملےمیں پانچ ملزمین کو گرفتار کیاگیا ہےـ

    بنگلورو۔ تنزانیہ کی طالبہ کو بنگلورو میں مبینہ طور پر پیٹنے اوربرہنہ کرنےکے معاملےمیں پانچ ملزمین کو گرفتار کیاگیا ہےـ

    بنگلورو۔ تنزانیہ کی طالبہ کو بنگلورو میں مبینہ طور پر پیٹنے اوربرہنہ کرنےکے معاملےمیں پانچ ملزمین کو گرفتار کیاگیا ہےـ

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:

      بنگلورو۔ تنزانیہ کی طالبہ کو بنگلورو میں مبینہ طور پر پیٹنے اوربرہنہ کرنےکے معاملےمیں پانچ ملزمین کو گرفتار کیاگیا ہےـ ریاستی حکومت نے کہا ہےکہ پوری سنجیدگی کے ساتھ معاملے کی تحقیات کی جارہی ہیں۔ دوسری جانب کانگریس کے نائب صدرراہل گاندھی نے ریاستی حکومت سے رپورٹ طلب کی ہے۔


       تنزانیہ کی طالبہ پر ہوئے حملے کا معاملہ ریاستی حکومت کیلئے پشیمانی کا سبب بناہواہے۔ یہ  معاملہ انٹرنیشنل خبروں کی سرخیوں میں رہا۔ ریاست کے وزیر داخلہ ڈاکٹر جی پرمیشور نےکہاکہ اس معاملے میں پولیس نے پانچ ملزمین کوگرفتارکرلیا ہے۔وزیرداخلہ نے کہاکہ گزشتہ  31جنوری کی رات تنزانیہ کے طلبہ  پرحملے کا واقعہ پیش آیا ہے۔ وزیرداخلہ نے بنگلورو میں تنزانیہ کی طالبہ پرہوئے حملے کی وجہ یوں بتائی کہ سوڈانی طالب علم محمد احمد اسمعیل  کی کار سے سڑک حادثہ میں تنزانیہ کی خاتون کی موت کے بعد برہم ہجوم نے کار کونذرآتش  کر دیا تھا۔ محمد احمد اسمعیل اس  وقت نشہ کی حالت میں تھا۔اس واقعہ کےبعد نئے  سال کے جشن کے لیے نکلےتنزانیہ کےچارطلبہ پرحملہ ہوا۔ تنزانیہ کی طالبہ کے کپڑے کھینچ کراس کے ساتھ دھکا مکی کی گئی۔


      وزیر داخلہ جی پرمیشور نے کہاکہ ان حقائق سے  وزارت خارجہ کو واقف کرادیا گیا ہے۔ مزید جانچ کیلئے حکومت نے معاملے کو سینٹرل کرائم برانچ کے حوالے کردیاہے۔انہوں نے کہاکہ بنگلورو میں 12ہزار بیرون ممالک کے طلبہ مختلف کالجوں میں زیرتعلیم ہیں۔ حکومت ان طلبہ کو مکمل تحفظ فراہم کرنا اپنی ذمہ داری سمجھتی ہے۔ تاہم پرمیشور نے مشورہ دیاکہ بیرون ممالک کے طلبہ کوبھی ادب کےساتھ رہنا چاہئے۔

      First published: