உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Heat Wave in India:گرمی نے توڑا 122 سال کا ریکارڈ، مارچ کے مہینے میں سب سے زیادہ رہا ٹمپریچر، ان ریاستوں میں رہے گا برا حال

    Youtube Video

    Heat Wave in India: اپریل کے مہینے میں ہی گرمی سے عوام کی حالت ابتر ہے۔ دہلی کے ہمایوں کے مقبرے کی زیارت کے لیے آئے کچھ لوگوں نے بتایا کہ وہ ابھی گھر سے نکلے ہیں، پھر بھی گھوم نہیں سکتے اور حالت مزید خراب ہو گئی ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: Heat Wave in India:ملک میں اس مرتبہ مارچ کے مہینے میں گرمی نے گزشتہ 122 سال کا ریکارڈ توڑ دیا ہے۔ مارچ 2022 میں ریکارڈ کیا گیا اوسط زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 1901 سے 2022 کے درمیان 33.10 ڈگری سیلسیس کے ساتھ پچھلے 122 سالوں میں اب تک کا سب سے زیادہ ہے اور اس نے مارچ 2010 کا 33.09ڈگری سیلسیس کا ریکارڈ توڑ دیا ہے۔

      اس بار مارچ کے مہینے سے ہی شدید گرمی شروع ہو گئی تھی اور ملک کے کئی حصوں میں درجہ حرارت 40 ڈگری تک جا پہنچا تھا۔ دارالحکومت دہلی کے کچھ علاقوں میں مارچ میں 40 ڈگری تک درجہ حرارت ریکارڈ کیا گیا تھا اور اس وقت کی گرمی کو دیکھتے ہوئے اندازہ لگایا جا رہا تھا کہ کئی ریکارڈ ٹوٹ جائیں گے اور ایسا ہی ہوا۔

      یہ بھی پڑھیں:

      Rajasthan: کرولی میں کرفیو، بائیک ریلی پر پتھراو، 42 سے زیادہ زخمی، علاقہ میں کشیدگی


      دہلی کے سائنسداں ڈاکٹر آر۔ کی جینامنی نے بتایا کہ دارالحکومت میں مارچ میں درجہ حرارت 39 سے 41 ڈگری تک چلا گیا اور گزشتہ 2 دنوں سے تیز ہوا چل رہی ہے جس کی وجہ سے درجہ حرارت 2 ڈگری تک گر گیا ہے تاہم آئندہ چند دنوں تک بارش کا کوئی امکان نہیں ہے۔

      ان ریاستوں میں ہونے والی ہے سب سے زیادہ گرمی
      شمال مغربی ہندوستان میں مارچ 2022 کے دوران پچھلے 122 سالوں میں سب سے زیادہ اوسط درجہ حرارت 30.73 ڈگری سیلیس ہے (اس سے پہلے 2004 میں سب سے زیادہ 30.67 ڈگری سیلسیس تھا)۔ اوسطا کم از کم درجہ حرارت 15.26 ڈگری سیلسیس ہے جس کے ساتھ دوسرا سب سے زیادہ درجہ حرارت (2010 میں 15.4 ڈگری سیلسیس) ہے۔ اسی وقت، اوسط درجہ حرارت 22.99 ڈگری سیلسیس کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے (گزشتہ 122 سالوں میں سب سے زیادہ درجہ حرارت 2010 میں 23.01 ڈگری تھا)۔ اس بار ملک کے جن حصوں میں گرمی زیادہ پڑنے والی ہے، وہ ہیں مدھیہ پردیش، چھتیس گڑھ، راجستھان اور گجرات۔ بڑی بات یہ ہے کہ اس بار مغربی ہمالیہ میں مارچ میں بھی ریکارڈ درجہ حرارت ریکارڈ کیا گیا ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Fire Fighters Robot:اب نہیں جائے گی فائرفائٹرس کی جان،آگ بجھانے کا کام کرے گایہ خاص روبوٹ

      اپریل کے مہینے میں ہی گرمی سے عوام کی حالت ابتر ہے۔ دہلی کے ہمایوں کے مقبرے کی زیارت کے لیے آئے کچھ لوگوں نے بتایا کہ وہ ابھی گھر سے نکلے ہیں، پھر بھی گھوم نہیں سکتے اور حالت مزید خراب ہو گئی ہے۔ گھر سے پانی کی بوتلیں لائے تھے لیکن گرمی کی وجہ سے زیادہ پانی پیا اور پانی ختم ہوگیا تو پانی کی بوتل دوبارہ بھر لی۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: