உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Protests against Raja Singh: حیدرآباد میں راجہ سنگھ کے خلاف احتجاج جاری، 2 مسلم نوجوان بری طرح زخمی

    تصویر اے این آئی

    تصویر اے این آئی

    مذکورہ رپورٹ کے مطابق دو نوجوانوں نے الزام لگایا کہ جب وہ دفتر سے واپس آرہے تھے تو اسی دوران انہیں تقریباً 25 افراد نے بیگم بازار میں مارا پیٹا۔ انہوں نے یہ بھی الزام لگایا کہ پولیس والوں نے مدد طلب کرنے کے باوجود ان کی مدد نہیں کی۔ Protests against Raja Singh

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Hyderabad | Telangana | Karnataka | Maharashtra | Lucknow
    • Share this:
      حیدرآباد: حیدرآباد میں اب بھی بدستور کشیدگی جاری ہے کیونکہ منگل کے روز نامپلی کریمنل عدالت کی جانب سے بی جے پی ایم ایل اے راجہ سنگھ (Raja Singh) کو ضمانت دینے کے بعد شہر کے کئی علاقوں جیسے چار مینار، مغل پورہ، امبر پیٹ، ٹولی چوکی، مہدی پٹنم اور دیگر مقامات پر احتجاجی مظاہرے ہورہے ہیں۔ پرانے شہر کے تقریباً تمام علاقوں میں نوجوان بدھ کی صبح تک احتجاج کرتے ہوئے دیکھے گئے ہیں۔ احتجاج کے دوران مظاہرین راجہ سنگھ کو سخت سے سخت سزا دینے اور اسے گرفتار کرنے کا مطالبہ کررہے ہیں۔

      سیاست ڈاٹ کام کی ایک رپورٹ کے مطابق حیدرآباد کے نوجوانوں نے کہا کہ راجہ سنگھ کے خلاف پرامن احتجاج کو روکنے کے لیے پولیس لاٹھی چارج کا سہارا لے رہی ہے۔ ان میں سے کچھ نے الزام لگایا کہ دھول پیٹ کے مقامی لوگ اپنی شناخت کی تصدیق کے بعد مسلمانوں پر حملہ کر رہے ہیں۔ انہوں نے یہ بھی الزام لگایا کہ پولیس خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے اور ان کے خلاف بروقت کاروائی نہیں کررہی ہے۔
      بیگم بازار میں دو نوجوانوں کی پٹائی:


      مذکورہ رپورٹ کے مطابق دو نوجوانوں نے الزام لگایا کہ جب وہ دفتر سے واپس آرہے تھے تو اسی دوران انہیں تقریباً 25 افراد نے بیگم بازار میں مارا پیٹا۔ انہوں نے یہ بھی الزام لگایا کہ پولیس والوں نے مدد طلب کرنے کے باوجود ان کی مدد نہیں کی۔ ان میں سے ایک کے سر پر شدید چوٹیں آئیں۔


      کچھ نوجوانوں کا دعویٰ ہے کہ پولیس دھول پیٹ اور بیگم بازار جیسے علاقوں میں کوئی کارروائی نہیں کر رہی ہے جبکہ پرانے شہر کے علاقوں میں احتجاج کو دبانے کے لیے بھاری پولیس فورس تعینات کی گئی ہے۔


      راجہ سنگھ کے خلاف مظاہروں کے دوران جھڑپوں میں اب تک ایک پولیس سب انسپکٹر سمیت چار افراد زخمی ہوئے ہیں۔ پرانے شہر میں راجہ سنگھ کے خلاف احتجاج زور پکڑتا جارہا ہے۔ گزشتہ رات کئی ریلیاں نکالی گئیں۔ سب سے بڑا احتجاج شاہ علی بندہ (Shalibanda) میں منعقد ہوا۔

      یہ بھی پڑھیں:

      T Raja Controversial Speech: بی جے پی MLA ٹی راجہ کے پیغمبر محمدﷺ کے خلاف توہین آمیز تبصرہ سے اویسی ناراض، کہا بی جے پی کو مسلمانوں سے نفرت

      صبح تقریباً 3 بجے ان میں سے کچھ احتجاجیوں نے گوشہ محل (Goshamahal) کی طرف مارچ کرنے کی کوشش کی، لیکن پولیس نے اس کوشش کو روک دیا۔ صورتحال پر قابو پانے کے لیے ریپڈ ایکشن فورس، ریاستی پولیس اور آرمڈ ریزرو کے اہلکاروں کی بڑی تعداد کو تعینات کیا گیا ہے۔


      یہ بھی پڑھیں:

      Raja Singh suspended from BJP: راجہ سنگھ بی جے پی پارٹی سے معطل! پیغمبر اسلام ﷺ کی گستاخی کے خلاف ایکشن

      دریں اثناء مولانا مرتضیٰ پاشا نے پرانے شہر کے نوجوانوں سے اپیل کی ہے کہ وہ اس جال میں نہ پھنسیں اور اپنے گھروں کو لوٹ جائیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: