உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Hyderabad: تلنگانہ میڈیا اکیڈمی کی جانب سے اردو صحافیوں کیلئے دو روزہ تربیتی ورکشاپ کا آغاز

    Hyderabad: تلنگانہ میڈیا اکیڈمی کی جانب سے اردو صحافیوں کیلئے دو روزہ تربیتی ورکشاپ کا آغاز

    Hyderabad: تلنگانہ میڈیا اکیڈمی کی جانب سے اردو صحافیوں کیلئے دو روزہ تربیتی ورکشاپ کا آغاز

    Telangana News : اردو صحافت کے دو سو سال کی تکمیل کی خوشی میں تشکیل تلنگانہ کے بعد پہلی مرتبہ تلنگانہ میڈیا اکیڈمی کی جانب سے اردو صحافیوں کے لئے دو روزہ تربیتی ورکشاپ کا اردو مسکن ہال حیدرآباد میں شاندار آغاز ہوا ۔ آج پہلے ہی دن صحافیوں کی کثیر تعداد نے اس ورکشاپ میں شرکت کرتے ہوئے استفادہ کیا۔

    • Share this:
      حیدرآباد : اردو صحافت کے دو سو سال کی تکمیل کی خوشی میں تشکیل تلنگانہ کے بعد پہلی مرتبہ تلنگانہ میڈیا اکیڈمی کی جانب سے اردو صحافیوں کے لئے دو روزہ تربیتی ورکشاپ کا اردو مسکن ہال حیدرآباد میں شاندار آغاز ہوا ۔ آج پہلے ہی دن صحافیوں کی کثیر تعداد نے اس ورکشاپ میں شرکت کرتے ہوئے استفادہ کیا۔ اس اجلاس کی صدارت میڈیا اکیڈمی کے چیئرمن الم نارائنا نے کی جبکہ مہمانان اعزازی کے طور پر رکن قانون ساز کونسل سید امین الحسن جعفری، رکن اسمبلی ممتاز احمد خاں، کارپوریٹرز مصطفیٰ علی مظفر، محمد غوث، تلنگانہ اردو ورکنگ جرنلسٹس کے صدر ماروتی ساغر، تلنگانہ اردو ورکنگ جرنلسٹس فیڈریشن کے صدر ایم اے ماجد، الیکٹرانک میڈیا ایسوسی ایشن کے صدر محمد اسمعیل، میڈیا اکیڈمی سکریٹری وینکٹیشور راو ، اور دیگر شریک تھے۔ ان کے علاوہ ٹی یو ڈبلیو جے ایف کے جنرل سکریٹری سید غوث محی الدین، جوائنٹ سکریٹری حبیب علی الجیلانی، آرگنائزینگ سکریٹری محمد امجد علی، ٹی یو ڈبلیو جے ایف حیدرآباد ڈسٹرکٹ کنوینر اور بی بی این چینل کے نیوز ایڈیٹر و اینکر ایم اے محسن بھی اس موقع پر موجود تھے۔

       

      یہ بھی پڑھئے: Hyderabad: کوٹھی سرکاری اسپتال میں بڑی پہل، درد زہ کو کم کرنے لافنگ گیس کا پہلی بار استعمال


      اس ورکشاپ میں میڈیا اکیڈمی کے چیئرمین الم نارائن نے اردو زبان کی اہمیت و افادیت بیان کرتے ہوئے کہا کہ اردو زبان صرف مسلمانوں کی زبان نہیں بلکہ یہ ہماری تہذیب کا حصہ ہے۔ دکنی اردو حیدرآباد کا فخر ہے۔ ریاست تلنگانہ کے وزیرداخلہ محمد محمود علی نے اردو زباں کے تحفظ و بقا مین اردو صحافیوں کے رول کو غیر معمولی قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ اردو صحافیوں کے خدمات کو فراموش نہیں کیا جاسکتا۔

       

      یہ بھی پڑھئے: حیدرآبادمیں سکوں کےمیوزیم کا آغاز، 119 سال پرانےہندوستانی سکوں کاہوگادیدار


      ریاست کے وزیرداخلہ محمد محمود علی نے کہا کہ ایک ایسے وقت جب اردو زباں کو سازش کے تحت ختم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے، ریاست تلنگانہ میں اردو زباں کی ترقی و ترویج کی ہر ممکن کوشش کی جارہی ہے۔ نیز تربیتی ورکشاپ میں ہوم منسٹر محمود علی نے صحافیوں کے مختلف سوالات کے جواب دئے۔ وہیں انہوں نے ایکریڈیٹیشن کارڈ، ٹول گیٹ پر صحافیوں کی گاڑیوں کو رعایت، و دیگر مراعات دینے پر غور کرنے کی بھی بات کہی۔

      میڈیا اکیڈیمی آف تلنگانہ نے سی این آئی سینٹرل نیوز آف انڈیا کے صحافی محمد قیصر کی گزشتہ دنوں ہوئی موت پر انہیں تعزیت پیش کی تو وہیں مرحوم محمد قیصر کی اہلیہ کو اکیڈمی اور تلنگانہ اردو ورکنگ جرنلسٹ فیڈریشن کی کامیاب نمائندی پر ایک لاکھ روپے کا چیک، ماہانہ تین ہزار روپے الاﺅنس اور اُن کے بچوں کو دسویں جماعت پاس ہونے تک ماہانہ ایک ہزار روپے دینے کا اعلان کیا گیا ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: