ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

آپ جب یہ خط پڑھ رہے ہوں گے تب میں نہیں ہوں گا، مجھ پر ناراض مت ہونا

نئی دہلی۔ حیدرآباد میں پی ایچ ڈی کے دلت طالب علم کی خودکشی کے بعد ہنگامہ بڑھتا جا رہا ہے۔

  • IBN7
  • Last Updated: Jan 18, 2016 07:35 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
آپ جب یہ خط پڑھ رہے ہوں گے تب میں نہیں ہوں گا، مجھ پر ناراض مت ہونا
نئی دہلی۔ حیدرآباد میں پی ایچ ڈی کے دلت طالب علم کی خودکشی کے بعد ہنگامہ بڑھتا جا رہا ہے۔

نئی دہلی۔ حیدرآباد میں پی ایچ ڈی کے دلت طالب علم کی خودکشی کے بعد ہنگامہ بڑھتا جا رہا ہے۔ حیدرآباد میں طلبہ مسلسل مظاہرہ کر رہے ہیں۔ دراصل خودکشی کرنے والے طالب علم روہت کو 4 اور دلت طالب علموں کے ساتھ کالج سے نکال دیا گیا تھا۔ روہت نے اپنے آخری خط میں تفصیل سے ساری باتیں لکھی ہیں۔


روہت کا آخری خط


گڈ مارننگ


آپ جب یہ خط پڑھ رہے ہوں گے تب میں نہیں ہوں گا، مجھ پر ناراض مت ہونا۔ میں جانتا ہوں کہ تم میں سے بہت سے لوگوں کو میری پرواہ تھی، آپ لوگ مجھ سے پیار کرتے تھے اور آپ نے میرا بہت خیال بھی رکھا۔ مجھے کسی سے کوئی شکایت نہیں ہے۔ مجھے ہمیشہ سے خود سے ہی پریشانی رہی ہے۔ میں اپنی روح اور اپنے بدن کے درمیان خلیج کو بڑھتا ہوا محسوس کرتا رہا ہوں۔

میں ایک دانو بن گیا ہوں، میں ہمیشہ ایک مصنف بننا چاہتا تھا، سائنس پر لکھنے والا، کارل سگان کی طرح۔ لیکن آخر میں میں صرف یہ خط لکھ پا رہا ہوں۔ میں پہلی بار اس طرح کا خط لکھ رہا ہوں، پہلی بار میں آخری خط لکھ رہا ہوں۔ مجھے معاف کرنا اگر اس کا کوئی مطلب نہ نکلے تو۔ آپ جو میرا خط پڑھ رہے ہیں، اگر کچھ کر سکتے ہیں تو مجھے اپنی سات ماہ فیلو شپ ملنی باقی ہے ایک لاکھ 75 ہزار روپے۔ برائے مہربانی یہ یقینی کر دیں کہ یہ پیسہ میرے خاندان کو مل جائے۔ مجھے رام جی کو چالیس ہزار روپے دینے تھے۔ انہوں نے کبھی پیسے واپس نہیں مانگے، لیکن برائے مہربانی فیلو شپ کے پیسے سے رام جی کو پیسے دے دیں۔ میں چاہوں گا کہ میری آخری رسوم امن اور خاموشی سے ہو۔ لوگ ایسا برتاؤ کریں کہ میں آیا تھا اور چلا گیا۔ میرے لئے آنسو نہ بہائے جائیں۔ آپ جان جائیں کہ میں مر کر خوش ہوں جینے سے زیادہ۔ امبیڈکر اسٹوڈنٹس ایسوسی ایشن پریوار، آپ سب کو مایوس کرنے کے لئے معافی۔ آپ سب نے مجھ سے بہت پیار کیا ... سب کو مستقبل کے لئے سلام۔

آخری بار

جے بھیم

میں رسمی باتیں لکھنا بھول گیا۔ خود کو مارنے کے میرے اس کام کے لئے کوئی ذمہ دار نہیں ہے، کسی نے مجھے ایسا کرنے کے لئے بھڑکایا نہیں، نہ تو اپنی حرکتوں سے اور نہ ہی اپنے الفاظ سے۔ یہ میرا فیصلہ ہے اور میں اس کے لئے ذمہ دار ہوں۔ میرے جانے کے بعد میرے دوستوں اور دشمنوں کو پریشان نہ کیا جائے۔
First published: Jan 18, 2016 07:33 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading