ہوم » نیوز » وطن نامہ

ماں کے لئے برہنہ رہنا عام بات، کیا سماجی اخلاقیات پر پڑ سکتا ہے اثر؟

اس کی ماں فرانسیسی ہے جبکہ باپ ہندوستانی۔ فرانس میں اپنی فیملی کے ساتھ اس کی ماں سمندر کے ساحل پر برہنہ ہو جایا کرتی تھی اور اسی لئے ان کو لگتا ہے کہ برہنہ رہنا عام بات ہے اور باتھ روم سے برہنہ نکلنے میں انہیں کچھ بھی برا نہیں لگتا۔ اس کے والد ان کی آزادی کی ایک حد تک حمایت کرتے ہیں، اگر دوسرے لوگوں کو اعتراض نہیں ہے تو کیا گھر میں برہنہ رہنا ٹھیک ہے؟

  • Share this:
ماں کے لئے برہنہ رہنا عام بات، کیا سماجی اخلاقیات پر پڑ سکتا ہے اثر؟
ماں کے لئے برہنہ رہنا عام بات، کیا سماجی اخلاقیات پر پڑ سکتا ہے اثر؟

اس کی ماں فرانسیسی ہے جبکہ باپ ہندوستانی۔ فرانس میں اپنی فیملی کے ساتھ اس کی ماں سمندر کے ساحل پر برہنہ ہو جایا کرتی تھی اور اسی لئے ان کو لگتا ہے کہ برہنہ رہنا عام بات ہے اور باتھ روم سے برہنہ نکلنے میں انہیں کچھ بھی برا نہیں لگتا۔ اس کے والد ان کی آزادی کی ایک حد تک حمایت کرتے ہیں، اگر دوسرے لوگوں کو اعتراض نہیں ہے تو کیا گھر میں برہنہ رہنا ٹھیک ہے؟


اگر فیملی کے ممبران کو برا نہیں لگتا ہے تو برہنہ رہنے میں کوئی برائی نہیں ہے۔ لیکن ہاں، کئی بار ہمارے پرانے خیالات ننگے رہنے کو سیکسوئل، نامناسب، غیر اخلاقی اور برداشت نہیں کرنے کے لائق مانتے ہیں۔ لیکن اگر آپ اپنے گھر میں ننگے رہتے ہیں اور آپ کی فیملی کو اس پر کوئی اعتراض نہیں ہے تو اس میں کوئی برائی نہیں ہے۔ لیکن اتنا کچھ کے بعد بھی، اس بات کا خیال رکھا جانا چاہئے کہ توازن بنا رہے اور برہنہ رہنے کی بات کہیں عضو کا مظاہرہ بن کر نہ رہ جائے۔ سماجی اخلاقیات میں کپڑا پہننے کی بات نہ صرف ہمیں مخالف موسم، بیماری وغیرہ سے بچاتا ہے بلکہ دوسروں اور ہمارے پرائیویٹ کے درمیان ایک سرحد بھی کھینچتا ہے۔ اگر آپ اس کے بارے میں پوچھ رہے ہیں اور آپ یہ نہیں سمجھ پا رہے ہیں کہ کیا صحیح ہے اور کیا غلط تو ہمیں یہ یاد رکھنا چاہئے کہ ہم سبھی کو اپنی پسند کے ساتھ جینے کا حق ہے اور آپ اپنی ماں کو کہہ سکتے ہیں کہ وہ باتھ روم سے نکلتے ہوئے گاون کا استعمال کریں اور یا پھر وہ یہ وقت مقرر کرلیں کہ کس وقت وہ اپنے کمرے میں برہنہ رہ سکتی ہیں۔


پھر برہنہ رہنے کو سیکسوئل بھی مانا جا سکتا ہے اور فطری بھی اور یہ لوگوں کی سوچ پر منحصر کرتا ہے۔ اگر آپ کی ماں کے لئے برہنہ رہنا ان کے جسم کی ایک فطری حالت ہے اور آپ اور آپ کے والد کو اس سے کوئی پریشانی نہیں ہے تو آپ بھی اسے اسی نظریے سے دیکھنے کی بات سیکھ سکتی ہیں۔ جسم جو سیکسوئل مطلب سے پوری طرح  الگ ہے اور اگر آپ اس بات کو لے غیر مطمئن محسوس کرتے ہیں تو آپ انہیں بہت ہی عاجزی کے ساتھ کہہ سکتے ہیں کہ انہیں اپنی پرائیویسی میں برہنگی پر عمل کرنا چاہئے۔


 

 
Published by: Nisar Ahmad
First published: Feb 01, 2021 11:44 PM IST