உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    محض48 گھنٹوں میں پی ایم مودی کے بدلے خیال ، کہا جے ڈی ایس پر خراب نہ کریں ووٹ

    کرناٹک اسمبلی انتخابات میں پی ایم مودی کے ذریعہ جے ڈی ایس سپریمو کی تعریف کئے جانے کے بعد اچانک انہوں نے یو ٹرن لے لیا ۔

    کرناٹک اسمبلی انتخابات میں پی ایم مودی کے ذریعہ جے ڈی ایس سپریمو کی تعریف کئے جانے کے بعد اچانک انہوں نے یو ٹرن لے لیا ۔

    کرناٹک اسمبلی انتخابات میں پی ایم مودی کے ذریعہ جے ڈی ایس سپریمو کی تعریف کئے جانے کے بعد اچانک انہوں نے یو ٹرن لے لیا ۔

    • Share this:
      کرناٹک اسمبلی انتخابات میں پی ایم مودی کے ذریعہ جے ڈی ایس سپریمو کی تعریف کئے جانے کے بعد اچانک انہوں نے یو ٹرن لے لیا ۔ جمعرات کی روز مودی نے کہا کہ آپ اپنا ووٹ جے ڈی ایس کو دے کر خراب نہ کریں ۔ جمعرات کو بلگلور کے باہری اعلاقہ میں ایک اجلاس کو خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جے ڈی ایس تیسرے نمبرکی پارٹی ہے لوگ اسے ووٹ نہ دیں۔

      انہوں نے کہا کہ جے ڈی ایس نے دیگر ریاستوں میں فرقہ وارانہ طاقتوں سے ہاتھ ملایا ہوا ہے ،جو لوگ نکسل وادیوں کی حمایت کرتے ہیں ۔ جے ڈی ایس نے آئندہ انتخابات کے لئے بسپا سے ہاتھ ملا لیا ہے ۔

      واضح رہے کہ دو دن قبل پی ایم مودی نے سابق وزیر اعظم اور جے ڈی ایس سپریمودیوگوڑا کی خوب تعریف کی تھی اور کانگریس صدر راہل گاندھی پر ان کا ان کی توہین کرنے کا الزام لگایا تھا۔

      وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا تھا کہ دیو گوڑا قابل قدراور سب سے بڑے لیڈران میں ان درجہ شمار ہے ، اور وہ ان کی ازت کرتے ہیں۔ لیکن دیو گوڑا پر راہل گاندھی کے بیان سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ مغرور ہو گئے ہیں۔

      واضح رہے کہ وزیر اعظم نے کہا کہ ’’میں نے 15-20روز قبل کانگریس صدر کو ایک ریلی میں سنا تھا، جس طرح انہوں نے دیوگوڑا جی کی بات کہی اس سے لگ رہا تھا ان میں انا آگئی ہے ؟ کیا یہی اپ کی تربیت ہے ‘‘۔

      مودی نے مذکورہ کہاکہ ’’ آپ کی زندگی (کانگریس صدر کے طور پر )ابھی شروع ہوئی ہے ۔دیو گوڑا ملک کے سب سے بڑے لیڈران میں سے ایک ہیں اور آپ ان کی توہین کر رہے ہیں ‘‘۔

      دریں اثنا ان سب کے مدہ نظر سیاسی ماہرین نے قیاس آرائی شروع کر دی ہے کہ جے ڈی ایس بی جے پی کے بی ٹیم کی طرح کام کر رہی ہے، لیکن آج کےپی ایم مودی کے اس بیان نے ایک بار بھر سے سب کو شک میں مبتلا کر دیا ہے ۔
      First published: