ہوم » نیوز » No Category

شریعت مسلمانوں کے جذبات سے وابستہ ،صبرواستقامت ، اتحاد اور حکمت سے لینا ہو گا کام

یادگیر۔ ہندوستان مختلف مذاہب ،عقائد اور تہذیبوں کا گہوارہ ہے ۔ یہاں کے مسلمان اسلامی تعلیمات پر چل کر دیگر مذاہب کا احترام کرتے ہوئے امن وامان کے ساتھ زندگی گذار رہے ہیں۔

  • ETV
  • Last Updated: Nov 05, 2016 08:16 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
شریعت مسلمانوں کے جذبات سے وابستہ ،صبرواستقامت ، اتحاد اور حکمت سے لینا ہو گا کام
یادگیر۔ ہندوستان مختلف مذاہب ،عقائد اور تہذیبوں کا گہوارہ ہے ۔ یہاں کے مسلمان اسلامی تعلیمات پر چل کر دیگر مذاہب کا احترام کرتے ہوئے امن وامان کے ساتھ زندگی گذار رہے ہیں۔

یادگیر۔  ہندوستان مختلف مذاہب ،عقائد اور تہذیبوں کا گہوارہ ہے ۔ یہاں کے مسلمان اسلامی تعلیمات پر چل کر دیگر مذاہب کا احترام کرتے ہوئے امن وامان کے ساتھ زندگی گذار رہے ہیں۔ اور مسلمان مذہبی وشرعی معاملات میں کسی اور کے مداخلت کبھی بھی برداشت نہیں کرسکتے۔ ان خیالات کا اظہار کرناٹک کے یادگیر میں ایک تنظیم کی جانب سے مسلم پرسنل لاء کی دستخطی مہم مکمل ہونےپردانشوروں اور سماجی کارکنوں نے کیا۔ مسلم پرسنل لاء بورڈ کی اپیل پر ملک کے دیگر مقامات کی طرح کرناٹک کے یادگیر شہر میں بھی مختلف ملی اور سماجی تنظیموں کی جانب سے شہر اور دیہی سطح پر دستخطی مہم چلائی گئی۔ اسی طرح دستخطی مہم میں شہر کے ادارہ تنظیم المسلمین اور بیت المال یادگیر کے ذمہ داروں اور کارکنوں نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔ ادارہ تنظیم المسلمین اور بیت المال یادگیر کے ذمہ داروں

اور کارکنوں نے شہر یادگیر کے علاوہ ضلع کے تعلقہ جات اور دیہی علاقوں کا رخ کرکے لوگوں میں شعور بیدار کیا اور مسلم پرسنل بورڈ کی دستخطی مہم چلائی ۔ دستخطی مہم مکمل ہونے پرادارہ تنظیم المسلمین اور بیت المال یادگیر کی جانب سے ایک اجلاس منعقد کیاگیا۔اس موقع پر شہر کی اہم شخصیتوں نے شرکت کی۔


بیت المال یادگیر کے صدر لائق حسین بادل نے کہا کہ گذشتہ کئی دنوں سےادارہ تنظیم المسلمین اور بیت المال یادگیر کے ذمہ داروں اور کارکنوں کے علاوہ مقامی مسلمانوں نے متحد ہوکر دستخطی مہم کو کامیاب بنانے میں اہم رول ادا کیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ مسلمان سب کچھ برداست کرسکتے ہیں لیکن جب ایمان اور شریعت کی بات آتی ہے تو وہ سمجھوتہ نہیں کرسکتے۔ شہر کے معروف ایڈوکیٹ قاضی حسن صدیقی نے کہا کہ شریعت مسلمانوں کے جذبات سے وابستہ ہے اور ان حالات میں مسلمانوں کو استقامت ، اتحاد اور حکمت سے کام لینا ہوگا۔ انہوں نے دستخطی مہم کو کامیاب بنانے پر ادارہ تنظیم المسلمین اور بیت المال یادگیر کے  ذمہ داروں اور کارکنوں کو مبارکباد دی۔ وہیں دوسری طرف یادگیر ضلع کے گوگی شریف کی معروف بارگاہ آستانہ حضرت سید شاہ چندہ حسینی ؒ کے سجادہ نشین مولانا سید محمد محمد الحسینی نے بھی مذہبی اور شرعی معاملات میں مرکزی حکومت کی مداخلت پر شدید ناراضگی کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت مذہبی معاملات میں دخل دینے کے بجائے مسلمانوں کی ترقی کے بارے میں غور وخوض کرے ۔

First published: Nov 05, 2016 08:16 PM IST