ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

سنسنی خیز : ماں نے پہلے 5 ماہ کے اپنے ہی بچے کو ڈوبو کر مارا ڈالا اور پھر اٹھایا ایسا خوفناک قدم ، جان کر اڑ جائیں گے ہوش

واقعہ کی اطلاع ملنے کے بعد پولیس نے جائے وقوع پر پہنچ کر لاشوں کو پوسٹ مارٹم کیلئے بھیج دیا اور پولیس حکام مقامی پولیس اسٹیشن میں معاملہ درج کرکے آگے کی کاروائی کررہے ہیں ۔

  • Share this:
سنسنی خیز : ماں نے پہلے 5 ماہ کے اپنے ہی بچے کو ڈوبو کر مارا ڈالا اور پھر اٹھایا ایسا خوفناک قدم ، جان کر اڑ جائیں گے ہوش
علامتی تصویر

معاشرے میں بعض لوگ حالات سے مایوس ہوکر جذبات میں آکر انتہائی خطرناک قدم اٹھالیتے ہیں ،  جس کی وجہ سے کئی مرتبہ سماج لرز جاتا ہے ۔ کرناٹک کے رائچور ضلع میں ایسا ہی ایک واقعہ پیش آیا ۔ اس واقعہ سے مقامی سطح پر لوگوں میں بے چینی دیکھی جارہی ہے ۔ رائچور ضلع کے مانوی ٹاون میں ایک خاتون نے اپنے ہی پانچ ماہ کے بچے کو پانی میں ڈوبو کر موت کے گھاٹ اتار دیا اور بعد میں پھانسی لگاکر خودکشی کرلی ۔


بتایا جارہا ہے کہ چند سال پہلے رائچور تعلقہ کی جانکی کی شادی ضلع کے مانوی تعلقہ کے ہرن ہللی گاوں کے درگپا مڑیوال نامی لڑکے سے ہوئی تھی ۔ شادی کے بعد درگپا نے مانوی ٹاون میں کپڑوں کی استری کرکے خاندان کا گزر بسر کرتا تھا اور ان دونوں میاں بیوی نے ایک لڑکی اور ایک لڑکے کو جنم دیا ۔ لیکن 7 اگست کی صبح شوہر درگپا کے دوکان جانے کے بعد اور لڑکی کو کچھ کام سے باہر بھیج کر27 سالہ جانکی نے پہلے اپنے بچے کو پانی میں ڈوبو کر مارڈالا اور بعد میں پھانسی لگا کر خودکشی کرلی ۔


واقعہ کی اطلاع ملنے کے بعد پولیس نے جائے وقوع پر پہنچ کر لاشوں کو پوسٹ مارٹم کیلئے بھیج دیا ۔
واقعہ کی اطلاع ملنے کے بعد پولیس نے جائے وقوع پر پہنچ کر لاشوں کو پوسٹ مارٹم کیلئے بھیج دیا ۔


واقعہ کی اطلاع ملنے کے بعد پولیس نے جائے وقوع پر پہنچ کر لاشوں کو پوسٹ مارٹم کیلئے بھیج دیا اور پولیس حکام مقامی پولیس اسٹیشن میں ایک معاملہ درج کرکے آگے کی کاروائی کررہے ہیں ۔ بتایا جارہا ہے کہ جانکی نے گھریلو پریشانیوں کی وجہ سے ہی خودکشی کا راستہ اپنا یا ہے ۔ پولیس جانکی کے شوہر درگپا اور اس کے افراد خاندان سے پوچھ تاچھ کررہی ہے ۔

واضح رہے کہ جانکی اور درگپا مانوی ٹاون کے وارڈ نمبر سات کے ایک مکان میں کرائے پر رہا کرتے تھے ۔ مقامی پولیس سب انسپکٹر سدرام بیدرانی نے مقامی لوگوں اور پڑوسیوں سے بھی معلومات حاصل کیں ۔ واضح رہے کہ جانکی کی خودکشی کی وجوہا ت کے بارے میں کچھ پتہ نہیں چلا ہے۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Aug 08, 2020 06:46 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading