உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    یہاں تیار کی جائے گی مصنوعی ریت

    بنگلورو : وزیر برائے کانکنی و ارضیات و نئے کُلکرنی کا کہنا ہے کہ کرناٹک میں پرائیویٹ یا سرکاری جگہ پر مصنوعی ریت تیار کرنے کےلئے حکومت سے منظوری حاصل ہوگی ۔ ـ منگلور میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کلکرنی نے کہا کہ سرکاری یا پرائیویٹ مقام پر پتھر کی کوائری سے ریت تیار کرنے کی سہولت فراہم کی جائے گی۔

    بنگلورو : وزیر برائے کانکنی و ارضیات و نئے کُلکرنی کا کہنا ہے کہ کرناٹک میں پرائیویٹ یا سرکاری جگہ پر مصنوعی ریت تیار کرنے کےلئے حکومت سے منظوری حاصل ہوگی ۔ ـ منگلور میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کلکرنی نے کہا کہ سرکاری یا پرائیویٹ مقام پر پتھر کی کوائری سے ریت تیار کرنے کی سہولت فراہم کی جائے گی۔

    بنگلورو : وزیر برائے کانکنی و ارضیات و نئے کُلکرنی کا کہنا ہے کہ کرناٹک میں پرائیویٹ یا سرکاری جگہ پر مصنوعی ریت تیار کرنے کےلئے حکومت سے منظوری حاصل ہوگی ۔ ـ منگلور میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کلکرنی نے کہا کہ سرکاری یا پرائیویٹ مقام پر پتھر کی کوائری سے ریت تیار کرنے کی سہولت فراہم کی جائے گی۔

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:

      بنگلورو : وزیر برائے کانکنی و ارضیات و نئے کُلکرنی کا کہنا ہے کہ کرناٹک میں پرائیویٹ یا سرکاری جگہ پر مصنوعی ریت تیار کرنے کےلئے حکومت سے منظوری حاصل ہوگی ۔ ـ منگلور میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کلکرنی نے کہا کہ سرکاری یا پرائیویٹ مقام پر پتھر کی کوائری سے ریت تیار کرنے کی سہولت فراہم کی جائے گی۔


       انہوں نے بتایا کہ کرناٹک میں سالانہ 28 لاکھ میٹرک ٹن ریت کی ڈیمانڈ ہے ۔ ـ ریت کی قلت کی وجہ سے عمارتوں کی تعمیر سمیت دیگر ترقیاتی کاموں کےلئے مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔ ـ اگلے 6 مہینوں میں اس مسئلہ کو حل کرنے کیلئے منصوبہ تیار کیا گیا ہے۔ ـ وزیرموصوف نے مزید بتایا کہ کرناٹک میں فی الحال 86 یونٹس ہیں ، جہاں مصنوعی ریت تیار کی جاتی ہے ۔ جبکہ مزید یونٹس کی ضرورت ہےـ ۔ ایسے یونٹس قائم کرنے والوں کی ریاستی حکومت حوصلہ افزائی کرے گی ـ۔

      First published: