ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

کرناٹک : عبدالعظیم کی جگہ مزمل احمد بابو ہوں گے بی جے پی اقلیتی مورچہ کے نئے صدر

مزمل احمد بابو نے کہا کہ پارٹی نے انہیں ایک بڑی ذمہ داری سونپی ہے اور وہ اس ذمہ داری کو بخوبی طور پر انجام دینے کی کوشش کریں گے ۔

  • Share this:
کرناٹک : عبدالعظیم کی جگہ مزمل احمد بابو ہوں گے بی جے پی اقلیتی مورچہ کے نئے صدر
کرناٹک : عبدالعظیم کی جگہ مزمل احمد بابو ہوں گے بی جے پی اقلیتی مورچہ کے نئے صدر

بنگلورو : مزمل احمد بابو کرناٹک بی جے پی اقلیتی مورچہ کے نئے صدر نامزد ہوئے ہیں ۔ کرناٹک ریاستی اقلیتی کمیشن کے چیئرمین عبدالعظیم کی جگہ مزمل احمد بابو کو اقلیتی مورچہ کا ریاستی صدر بنایا گیا ہے ۔ اس موقع پر نیوز 18 اردو سے خاص گفتگو کرتے ہوئے مزمل احمد نے کہا کہ بی جے پی مسلمانوں کی خیر خواہ ہے ۔ مسلمانوں کے ہرگز خلاف نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ وہ  1992 سے بی جے پی میں شامل ہیں ۔ پارٹی نے ان کی خدمات کا کئی بار اعتراف کیا ہے، مختلف ذمہ داریوں اور عہدوں سے نوازا ہے ، اب پارٹی نے انہیں اقلیتی مورچہ کا ریاستی صدر نامزد کیا ہے ۔ اس نامزدگی پر مزمل احمد نے بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا ، ریاستی صدر نلین کمار کٹیل ، وزیر اعلی بی ایس یدی یورپا ، آر ایس ایس کے نمائندے بی ایل سنتوش اور ارون کمار کا شکریہ ادا کیا ۔


مزمل احمد بابو نے کہا کہ پارٹی نے انہیں ایک بڑی ذمہ داری سونپی ہے اور وہ اس ذمہ داری کو بخوبی طور پر انجام دینے کی کوشش کریں گے ۔ واضح رہے کہ مزمل احمد بابو فی الوقت ریاست کرناٹک میں بی جے پی کے سب سے سینئر مسلم لیڈر ہیں ۔ آر ایس ایس کے بھی سرگرم رکن رہے ہیں ۔ وہ کانگریس کے سینئر لیڈر اور سابق مرکزی وزیر کے رحمان خان کے قریبی رشتہ دار ہیں ۔ مزمل احمد بابو نے کہا کہ وہ 1992 سے پوری سنجیدگی کے ساتھ بی جے پی میں سرگرم رہے ہیں ۔ پارٹی نے انہیں دو مرتبہ اقلیتی مورچہ کا خازن مقرر کیا ہے ۔ ماضی میں سلم بورڈ کے ڈائریکٹر کی حیثیت سے بھی انہیں خدمت کرنے کا موقع ملا ہے ۔


انہوں نے کہا کہ وہ کسی کی سفارش سے نہیں بلکہ اپنی محنت اور شناخت سے اس بڑے عہدے تک پہنچے ہیں ۔ اقلیتی مورچہ کے نئے ریاستی صدر مزمل احمد نے کہا کہ کانگریس اور دیگر پارٹیوں نے بی جے پی کے سلسلے میں اقلیتوں میں کئی غلط فہمیاں پھیلائی ہیں ۔ کانگریس نے اپنے فائدے کیلئے اقلیتوں کو بی جے پی سے دور رکھا ہے ۔ مزمل احمد نے کہا کہ وہ ان غلط فہمیوں کو دور کرتے ہوئے زیادہ سے زیادہ اقلیتوں کو پارٹی میں شامل کراوئیں گے ۔ اقلیتی مورچہ کو آگے بڑھائیں گے۔


مزمل احمد بابو فی الوقت ریاست کرناٹک میں بی جے پی کے سب سے سینئر مسلم لیڈر ہیں ۔ آر ایس ایس کے بھی سرگرم رکن رہے ہیں ۔
مزمل احمد بابو فی الوقت ریاست کرناٹک میں بی جے پی کے سب سے سینئر مسلم لیڈر ہیں ۔ آر ایس ایس کے بھی سرگرم رکن رہے ہیں ۔


انہوں نے کہا کہ بی جے پی نے کرناٹک میں اپنے اقتدار کے دوران اقلیتوں بالخصوص مسلمانوں کی تعلیمی اور معاشی ترقی کیلئے کئی اقدامات کئے ہیں ۔ ریاست میں پہلی مرتبہ عازمین حج کیلئے حج بھون کی بنیاد بی جے پی حکومت میں رکھی گئی ۔ پیش امام اور موذنین کو حکومت سے ماہانہ اعزازیہ دینے کا سلسلہ بی جے پی نے شروع کیا ۔ مسلم طبقہ کی تعلیمی ترقی کیلئے کئی پروگرام بی جے پی کے دور حکومت میں شروع کئے گئے ۔ مزمل احمد بابو نے کہا کہ بی جے پی ہمیشہ سے ہی مسلمانوں کی خیر خواہ ہے ، جبکہ کانگریس نے مسلمانوں کو ہمیشہ دھوکہ دیا ہے اور اقلیتوں کی ترقی کیلئے صرف وعدے کئے ہیں ۔ موجودہ ریاستی کابینہ میں اقلیتوں کو نمائندگی نہ دئے جانے کے سوال پر مزمل احمد خان نے کہا کہ پارٹی اس کمی کو ضرور پورا کرے گی ۔

اقلیتی فلاح و بہبود کے کئی محکموں میں خالی پڑے عہدوں کو اب تک پر نہ کئے جانے ، کرناٹک اردو اکیڈمی تشکیل نہ دئے جانے اور اقلیتوں کی اسکیموں کے فنڈز میں بھاری کٹوتی کئے جانے کے سوال پر مزمل احمد خان نے کہا کہ کورونا کی وبا کی وجہ سے کئی کام رکے ہوئے ہیں ، آنے والے دنوں میں پارٹی اقلیتوں کے مطالبات کو پورا کرے گی ۔ انہوں نے کہا کہ وہ اقلیتی مورچہ کے ریاستی صدر کے طور پر اقلیتوں کے حقوق کو دلوانے ، اقلیتوں کے مسائل کو حل کرنے اور اقلیتوں کی ترقی کیلئے ہر ممکن کوشش کریں گے ۔ مزمل احمد نے مسلمانوں سے اپیل کی کہ وہ بی جے پی کے قریب آئیں ، بی جے پی کو باہر سے دیکھنے کی بجائے اندر سے جاننے کی کوشش کریں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Aug 06, 2020 05:33 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading