ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

بنگلورو میں اقلیتی خواتین کو سماجی و معاشی طورپر مضبوط بنانے کی نئی مہم کا آغاز

بنگلورو کی چند فعال اور متحرک خواتین نےاقلیتی خواتین کو مین اسٹریم میں لانےاورانہیں سماجی و معاشی طورپر مضبوط بنانے کی غرض سے کرناٹک اسٹیٹ مائناریٹی ویمنس کوآپریٹیو سوسائٹی کا آغاز کیا ہے

  • ETV
  • Last Updated: Mar 02, 2017 08:11 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
بنگلورو میں اقلیتی خواتین کو سماجی و معاشی طورپر مضبوط بنانے کی نئی مہم کا آغاز
بنگلورو کی چند فعال اور متحرک خواتین نےاقلیتی خواتین کو مین اسٹریم میں لانےاورانہیں سماجی و معاشی طورپر مضبوط بنانے کی غرض سے کرناٹک اسٹیٹ مائناریٹی ویمنس کوآپریٹیو سوسائٹی کا آغاز کیا ہے

بنگلورو : کرناٹک میں اقلیتی خواتین کو سماجی و معاشی طورپر مضبوط بنانے کیلئے بنگلورو میں کوآپریٹیو سوسائٹی کا آغاز عمل میں آیا۔ کرناٹک اسٹیٹ مائناریٹی ویمنس کوآپریٹیو سوسائٹی کے نام سے اس سوسائٹی کا افتتاح ریاستی وزیر تنویر سیٹھ کے ہاتھوں عمل میں آیا ۔

قابل ذکر ہے کہ بنگلورو کی چند فعال اور متحرک خواتین نےاقلیتی خواتین کو مین اسٹریم میں لانےاورانہیں سماجی و معاشی طورپر مضبوط بنانے کی غرض سے کرناٹک اسٹیٹ مائناریٹی ویمنس کوآپریٹیو سوسائٹی کا آغاز کیا ہے۔ کرناٹک اقلیتی کمیشن کی سابق چیئرپرسن بلقیس بانو کی صدارت میں سوسائٹی کی شروعات ہوئی ہے۔ شہر کے آر ٹی نگر میں سوسائٹی کے دفتر کا افتتاح کرتے ہوئے وزیر برائے اقلیتی امور و تعلیم تنویر سیٹھ نے کہا کہ کوآپریٹیو سیکٹر کیلئے حکومت کی جانب سے کئی اسکیمیں جاری کی گئی ہیں۔ حکومت سے ملنے والی امداد کو عوام تک پہنچانےمیں اس سیکٹر نے اہم رول ادا کیا ہے اور اقلیتی خواتین کی یہ پہل ریاست کی تمام خواتین کے لئے کارآمد ثابت ہو سکتی ہے۔

کرناٹک اسٹیٹ مائناریٹی ویمنس کوآپریٹیو سائٹی کیلئے ریاست بھر سے اقلیتی خواتین کی ممبر سازی کی گئی ہے اور 19 ڈائیرکٹرس منتخب کیے گئے ہیں۔بلقیس بانو کو صدر اور نازنین بیگم کو نائب صدر منتخب کیا گیا ہے۔ سوسائٹی سے کاروبار میں آگے بڑھنے اور تعلیم کے علاوہ ملازمت سے بھی جوڑنے میں مدد حاصل کی جا سکتی ہے۔

First published: Mar 02, 2017 08:11 PM IST