உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    شام میں مارا گیا کیرالہ کا 30 سالہ شخص عبد المناف ، پولیس نے کی تصدیق ، داعش کیلئے لڑ رہا تھا جنگ

    آبائی طور پر کننور ضلع کے کلا پٹینم کا رہنے والا عبد المناف (30) کی گزشتہ سال نومبر میں موت ہوئی تھی ۔

    آبائی طور پر کننور ضلع کے کلا پٹینم کا رہنے والا عبد المناف (30) کی گزشتہ سال نومبر میں موت ہوئی تھی ۔

    کیرالہ کے کننور ضلع کا ایک نوجوان ملک شام میں مارا گیا ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ یہ نوجوان داعش میں شامل ہوگیا تھا ۔

    • Agencies
    • Last Updated :
    • Share this:
      کننور : کیرالہ کے کننور ضلع کا ایک نوجوان ملک شام میں مارا گیا ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ یہ نوجوان داعش میں شامل ہوگیا تھا ۔ پولیس کے ایک سنیئر افسر نے اس بات کی تصدیق کی ہے ۔ آبائی طور پر کننور ضلع کے کلا پٹینم کا رہنے والے عبد المناف (30) کی گزشتہ سال نومبر میں موت ہوئی تھی ۔ پولیس کے مطابق شام میں رہ رہے اس کے ایک دوست نے 17 جنوری کو ٹیلی گرام میسینجر ایپ کے ذریعہ اہل خانہ کو اس کی اطلاع دی۔
      ڈی سی پی پی پی سدانند نے بتایا کہ شام میں نومبر 2017 میں ہوئی لڑائی میں عبد المناف کے مارے جانے کی خبر صحیح ہے ۔ یہ خبر شام میں داعش کے لئے لڑنے والے اس کے دوست قیوم نے دی ہے۔
      انہوں نے بتایا کہ گزشتہ کچھ عرصہ میں کننور ضلع سے تقریبا 15 لوگ دہشت گرد تنظیم داعش میں شامل ہوئے ہیں ۔ سدا نند نے بتایا کہ ان میں سے عبد المناف سمیت چھ لوگوں کی موت ہوگئی ہے جبکہ دیگر پانچ کو گرفتار کرکے جانچ کیلئے این آئی اے کو سونپ دیا گیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ باقی چار شام میں ہی رہ کر آئی ایس کیلئے لڑ رہے ہیں۔
      First published: