உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Monkeypox: کیرالہ میں مونکی پوکس کے خلاف چوکسی میں اضافہ، 5 اضلاع میں خصوصی الرٹ جاری

    ڈبلیو ایچ او کا کہنا ہے کہ اس بیماری کا کوئی خاص علاج نہیں ہے لیکن علامتی علاج سے مدد مل سکتی ہے۔

    ڈبلیو ایچ او کا کہنا ہے کہ اس بیماری کا کوئی خاص علاج نہیں ہے لیکن علامتی علاج سے مدد مل سکتی ہے۔

    ریاستی وزیر صحت وینا جارج نے کہا کہ ترواننت پورم، کولم، پٹھانمتھیٹا، الاپپوزا اور کوٹیم کے اضلاع کو خصوصی الرٹ جاری کیا گیا ہے۔ مریض شارجہ-تھرواننت پورم انڈیگو فلائٹ میں تھا جو 12 جولائی کو کیرالہ میں اتر تھا۔ متاثرہ شخص کے ساتھی مسافر ان 5 اضلاع سے ہیں۔

    • Share this:
      کیرالہ حکومت (Kerala government) نے جمعہ کے روز پانچ اضلاع میں خصوصی الرٹ جاری کیا۔ کیرالہ میں ایک دن قبل مونکی پوکس (Monkeypox) کا ملک کا پہلا کیس رپورٹ ہوا۔ ہے۔ اس کیس کی تصدیق نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف وائرولوجی، پونے (National Institute of Virology, Pune) میں متاثرہ شخص کے طبی نمونوں کی جانچ کے دوران ہوئی ہے۔

      ریاستی وزیر صحت وینا جارج نے کہا کہ ترواننت پورم، کولم، پٹھانمتھیٹا، الاپپوزا اور کوٹیم کے اضلاع کو خصوصی الرٹ جاری کیا گیا ہے۔ مریض شارجہ-تھرواننت پورم انڈیگو فلائٹ میں تھا جو 12 جولائی کو کیرالہ میں اتر تھا۔ متاثرہ شخص کے ساتھی مسافر ان 5 اضلاع سے ہیں۔

      ’’انسانیت کو خطرہ‘‘

      امریکہ میں متعدی امراض کے ماہر ڈاکٹر انتھونی فوکی (Dr. Anthony Fauci) کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس (COVID-19) سے صحت یاب ہونے ایک بہترین مثال ہے کہ آج بھی ہم عالمی سطح کی اور متعدد امراض پر قابو پاسکتے ہے۔ جس سے پوری انسانیت کو خطرہ لاحق ہے۔

      ڈاکٹر انتھونی فوکی نے کہا کہ ویکسینز اور بوسٹرز کے ذریعے فراہم کردہ تحفظ سے ہم مستقبل میں بھی وبائی بیماریوں سے محفوظ رہ سکتے ہیں۔ وائٹ ہاؤس کی بریفنگ کے دوران بات کرتے ہوئے 81 سالہ فوکی نے کہا کہ انہوں نے 14 جون کو وائرس کی علامات کا سامنا کرنا شروع کیا اور ایک دن بعد ان کا ٹیسٹ مثبت آیا۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Covovax for Children:جلد ہی 7-11سال کے بچوں کو لگائی جاسکے گیCovovax

      کووی شیلڈ یا کوویکسین کے ساتھ COVID-19 کے خلاف پوری طرح سے ویکسین لگوانے والوں کے لئے کوربی ویکس کو بوسٹر کے طو رپر منظوری دینے پر NTAGI (امیونائزیشن پر قومی ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ) کی طرف سے غور کیا جا سکتا ہے۔ جس کا اجلاس آج منگل کو ہونے والا ہے۔ ذرائع نے یہ اطلاع دی ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Covid-19 Symptoms in Kids:کیا ریکوری کے بعد بھی آپ کے بچوں میں ہے کورونا کی علامت؟

      ڈرگس کنٹرولر جنرل آف انڈیا (DCGI) نے 4 جون کو کوربی ویکس کو 18 سال یا اس سے زیادہ عمر کے لوگوں کے لیے احتیاطی خوراک کے طور پر منظوری دی تھی۔ ہندوستان کی پہلی مقامی طور پر تیار کردہ آر بی ڈی پروٹین سب یونٹ ویکسین Corbevax فی الحال 12 سے 14 سال کی عمر کے بچوں کو ٹیکے لگانے کے لیے استعمال کی جا رہی ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: