உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سکندرآباد کے ہوٹل میں لگی بھیانک آگ، 8 کی موت، عمارت سے کودنے والے کئی زخمی

     حیدرآباد کے کمشنر سی وی آنند نے نیوز ایجنسی اے این آئی کو بتایا کہ لوگوں نے اپنی جان بچانے کے لیے عمارت سے چھلانگ لگا دی۔ مقامی لوگوں نے اسے بچا لیا۔ کچھ لوگوں کو اسپتال میں بھی داخل کرایا گیا ہے۔

    حیدرآباد کے کمشنر سی وی آنند نے نیوز ایجنسی اے این آئی کو بتایا کہ لوگوں نے اپنی جان بچانے کے لیے عمارت سے چھلانگ لگا دی۔ مقامی لوگوں نے اسے بچا لیا۔ کچھ لوگوں کو اسپتال میں بھی داخل کرایا گیا ہے۔

    حیدرآباد کے کمشنر سی وی آنند نے نیوز ایجنسی اے این آئی کو بتایا کہ لوگوں نے اپنی جان بچانے کے لیے عمارت سے چھلانگ لگا دی۔ مقامی لوگوں نے اسے بچا لیا۔ کچھ لوگوں کو اسپتال میں بھی داخل کرایا گیا ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Telangana | Secunderabad
    • Share this:
      سکندرآباد: تلنگانہ کے سکندرآباد شہر میں منگل کی علی الصبح ایک ہوٹل میں آگ لگنے سے آٹھ لوگوں کی موت ہو گئی۔ آگ گراؤنڈ فلور پر الیکٹرک اسکوٹر ری چارجنگ یونٹ میں لگی۔ دھوئیں کی وجہ سے پہلی اور دوسری منزل پر رہنے والے افراد کا دم گھٹ گیا۔ حیدرآباد کے کمشنر سی وی آنند نے نیوز ایجنسی اے این آئی کو بتایا کہ لوگوں نے اپنی جان بچانے کے لیے عمارت سے چھلانگ لگا دی۔ مقامی لوگوں نے اسے بچا لیا۔ کچھ لوگوں کو اسپتال میں بھی داخل کرایا گیا ہے۔ فائر ٹینڈرز نے موقع پر پہنچ کر آگ پر قابو پالیا۔ بتایا جا رہا ہے کہ روبی ہوٹل کی عمارت کے تہہ خانے میں الیکٹرک گاڑیوں کا شوروم ہے۔

      اس شوروم کے چارجنگ یونٹ میں شارٹ سرکٹ کے باعث آگ لگی اور پوری عمارت میں دھواں پھیل گیا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ معاملے کی تفتیش کی جا رہی ہے۔ ڈی سی پی نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ اس حادثے میں مرنے والوں کی تعداد بھی بڑھ سکتی ہے۔ ہوٹل میں تقریباً 20-25 لوگ ٹھہرے ہوئے تھے۔ مرنے والوں میں دو خواتین بھی شامل ہیں۔ آگ اور دھواں دیکھ کر لوگ خوفزدہ ہوگئے اور انہوں نے کھڑکیوں سے نیچے کودنا شروع کردیا جس میں تقریباً 10 افراد کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں۔ مقامی لوگوں نے بہت سے لوگوں کو ہوٹل سے بحفاظت باہر نکالنے میں مدد کی۔



      تلنگانہ کے وزیر داخلہ محمد محمود علی نے واقعہ کو انتہائی افسوسناک قرار دیتے ہوئے کہا کہ فائر بریگیڈ کی ٹیموں نے ہوٹل سے لوگوں کو باہر نکالنے کی پوری کوشش کی لیکن شدید دھوئیں کی وجہ سے کچھ لوگوں کی دم گھٹنے سے موت ہوگئی۔ ہوٹل سے کچھ لوگوں کو بچا لیا گیا ہے۔ ہم تحقیقات کر رہے ہیں کہ واقعہ کیسے پیش آیا۔ روبی ہوٹل میں کل 23 کمرے ہیں جو سکندرآباد ریلوے اسٹیشن کے قریب واقع ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے حادثے پر افسوس کا اظہار کیا اور معاوضے کا اعلان کیا۔ انہوں نے ٹویٹ کیا، 'تلنگانہ کے سکندرآباد میں آتشزدگی کی وجہ سے ہونے والے جانی نقصان سے غمزدہ، سوگوار خاندانوں سے تعزیت۔ میں زخمیوں کی جلد صحت یابی کی دعا کرتا ہوں۔ PMNRF سے ہر مرنے والے کے لواحقین کو 2 لاکھ روپے ادا کیے جائیں گے۔ زخمیوں کو پچاس ہزار روپے دیے جائیں گے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: