ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

چندریان 2: وکرم لینڈر کا ملبہ ڈھونڈنے میں چنئی کے اس انجینئر نے کی مدد، ناسا نے دیا کریڈٹ

ناسا نے وکرم کا ملبہ ڈھونڈنے کا کریڈٹ چنئی کے ایک مکینیکل انجینئر شنمگا سبرامنین کو دیا ہے۔

  • Share this:
چندریان 2: وکرم لینڈر کا ملبہ ڈھونڈنے میں چنئی کے اس انجینئر نے کی مدد، ناسا نے دیا کریڈٹ
شنمگا سبرامنین: فائل فوٹو

نئی دہلی۔ ہندوستانی خلائی تحقیق تنظیم ( اسرو) کے اولوالعزم مشن چندریان۔2 کے لینڈر وکرم کا ملبہ بالآخر ڈھونڈ لیا گیا ہے۔ امریکی خلائی ایجنسی (ناسا) کے لونر ریکنیسینس آربیٹر ( ایل آر او) نے چاند کی سطح پر وکرم لینڈر کا ملبہ تلاش لیا۔ ناسا نے وکرم کا ملبہ ڈھونڈنے کا کریڈٹ چنئی کے ایک مکینیکل انجینئر شنمگا سبرامنین کو دیا ہے۔ بتا دیں کہ چندریان۔ 2 کے وکرم لینڈر کا ملبہ کریش سائٹ سے 750 میٹر دور تین ٹکڑوں میں ملا ہے۔


وکرم لینڈر کے حادثہ کی جگہ کا پتہ سبرامنین نے کافی تحقیق کے بعد لگایا۔ انہوں نے خود لونرریکنیسینس آربیٹر کیمرہ (ایل آر او سی) سے تصویریں ڈاؤن لوڈ کیں۔ اس کی تصدیق ناسا اور اریزونا اسٹیٹ یونیورسٹی نے پیر کے روز کی۔ ناسا نے کہا کہ پہلی دھندلی تصویر حادثہ کے مقام کی ہو سکتی ہے جو ایل آر او سی کے ذریعہ 17 ستمبر کو لی گئی تصویروں سے بنائی گئی ہے۔ کئی لوگوں نے وکرم کے بارے میں جاننے کے لئے اس تصویر کو ڈاؤن لوڈ کیا۔ ناسا نے اپنے بیان میں کہا ’’ 26 ستمبر کو کریش سائٹ کی ایک تصویر جاری کی گئی تھی اور وکرم لینڈر کے سگنلس کی کھوج کرنے کے لئے لوگوں کو بلایا گیا تھا‘‘۔ ناسا نے آگے بتایا’’ چنئی کے 33 سالہ مکینیکل انجینئر شنمگا سبرامنین ہی پہلے وہ شخص ہیں جنہوں نے ملبے کی شناخت کی‘‘۔






گزشتہ 6 ستمبر کو لانچنگ کے بعد چندریان کے جنوبی قطب پر سافٹ لینڈنگ کرنے کی کوشش کے دوران لینڈر وکرم کا ہندوستانی خلائی تحقیقی ادارہ اِسرو سے رابطہ ٹوٹ گیا تھا۔
First published: Dec 03, 2019 12:02 PM IST