ہوم » نیوز » وطن نامہ

Mann Ki Baat: ہندوستان دوسرے ممالک کے دباؤ میں نہیں، اپنے عزم سے چلتا ہے

وزیر اعظم نریندر مودی نے آج یعنی اتوار کو 11 بجے من کی بات (Mann Ki Baat) کے ذریعے ملک کو خطاب کیا۔ یہ ان کا 77 واں خطاب ہے۔ اس دوران وہ ملک میں کورونا وائرس کے معاملوں اور ٹیکہ کاری کی حالت کو لیکر چرچا کی۔

  • Share this:
Mann Ki Baat: ہندوستان دوسرے ممالک کے دباؤ  میں نہیں، اپنے عزم سے چلتا ہے
وزیر اعظم نریندر مودی نے آج یعنی اتوار کو 11 بجے من کی بات (Mann Ki Baat) کے ذریعے ملک کو خطاب کیا۔ یہ ان کا 77 واں خطاب ہے۔ اس دوران وہ ملک میں کورونا وائرس کے معاملوں اور ٹیکہ کاری کی حالت کو لیکر چرچا کی۔

وزیر اعظم نریندر مودی نے آج یعنی اتوار کو 11 بجے من کی بات (Mann Ki Baat) کے ذریعے ملک کو خطاب کیا۔ یہ ان کا 77  واں خطاب ہے۔ اس دوران وہ ملک میں کورونا وائرس کے معاملوں اور ٹیکہ کاری کی حالت کو لیکر چرچا کی۔


پی ایم مودی نے اس کے ساتھ ہی چکروتی طوفان اور چھوٹے۔موٹے زلزلوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا  کہ ان سے کئی رایستیں متاثر ہوئیں۔ مودی نے کہا ملک کی عوام ان سے پوری طاقت سے لڑی۔ پی ایم نے راحت اور بچاؤ کے کاموں میں حصہ لینے والوں کا شکریہ ادا کیا اور اس آفت میں مارے گئے لوگوں کے کنبوں کیلئے اظہار تعزیت پیش کی۔


آج من کی بات میں آکسیجن کی قلت کا سامنا کرنا پڑا ۔اسکے تعلق سے پی ایم نے کورونا وارئریرس سے بات کی۔جیسے جونپور کے آکسیجن ٹرک چلانے والے ڈرائیور سے بات کی۔انڈین ریلوے کے ذریعہ آکسیجن ٹرین چلائے جانے کا ذکر کیا خاص طور پر آکسیجن ٹرین چلانے والی بہادر خواتین سے بات کی۔ شریشا لوکو پائیلٹ کی حوصلہ افزائی کی۔ خالی ٹینکر کو ہوائی جہاز کے ذریعہ لایا جارہا ہے۔ نئے آکسیجن پلانٹ نصب کیے جا رہے ہیں۔ کیپٹن اے کے پٹنائیک سے ان کے تجربات پی ایم نے ساجھا کیے۔ ان کی بارہ سال کی بیٹی آدیتی سے بات کی۔ایئر فورس نیوی اور آرمی تینوں کے جوانوں کا شکریہ ادا کیا ۔سو سال میں یہ سب سے بڑی آفات ہے پورا ملک ایک ہے۔ بنگلورو کے لیب ٹیکشین کا بھی ذکر کیا۔


اب تک ملک میں تینتیئس کروڑ سے زیادہ سیمپل کی جانچ کی جا چکی ہے۔جس میں بڑی تعداد میں ہمارا طبی عملہ مستعدی سے اپنا کام کر رہا ہے۔ ایسے ہی دہلی کے ایک لیب ٹیکنیسین پرکاش کنڈپال سے کورونا لیب کےان کی تجربات ساجھا کیے۔اور ان جیسے لیب ٹیکنیشینس کا شکریہ بھی ادا کیا۔زراعت کے شعبہکا بھی ذکر کیا۔ اگرتلہ کے کسانوں کے کٹہل کی پیداوار کی تعریف کی۔بہار کی شاہی لیچی کا بھی ذکر کیا۔وجے نگرم کے آم کا کسان ریل کس طرح ملک کے مختلف مقامات تک پہچا رہی ہے اسکا ذکر کیا۔بی جے پی کے سات سال مکمل ہونے کے موقع پر پی ایم نے اپنی حکومت کی حصولیابیوں کا ذکر کیا۔عام لوگوں تک بجلی مکان پانی پہچایا گیا۔آیوشمان یوجنا سے استعفادہ حاصل کرنے والوں کا ذکر کیا۔ڈیجیٹل لین دین نے نئی اونچائیوں کو چھویا۔ سوچھتا یعنی صاف صفائی اور اچھی سڑکوں کا ذکر کیا۔ایک ملک ایک ٹیم ٹیم انڈیا کے طور پر کام کیا ہے۔ملک ہر مصیبت میں ایک ساتھ کھڑا رہا۔



پروگرام میں ، پی ایم مودی نے آکسیجن سپلائی ٹینکر چلانے والے دنیش اپادھیائے سے بات کی۔ اپادھیائے  جو یوپی کے جونپور سے تعلق رکھتے ہیں ، نے کہا ، 'ہم اپنی زندگی میں بہت مطمئن محسوس کرتے ہیں کہ ہم نے یقینی طور پر کچھ اچھے کام کیے ہیں جس سے مجھے ایسی خدمت کرنے کا موقع ملا ہے۔ کھانا دستیاب ہے یا نہیں ، ایک مسئلہ ہے  لیکن جب ہم ایک ٹینکر لے کر اسپتال پہنچ جاتے ہیں تو دیکھیں کہ اسپتال کے لوگ وی کا اشارہ کرتے ہیں ، ان کے کنبہ کے لوگ ، جن کے کنبے کے ممبر مقرر ہوتے ہیں۔

 
Published by: Sana Naeem
First published: May 30, 2021 12:19 PM IST