ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

وقت سے قبل ہی کرناٹک میں ختم کیا گیا لاک ڈاون، عالمی وبا سے لڑنے کیلئے مستحکم معیشت کو بتایا گیا ضروری

ریاست کے عوام سے خطاب کرتے ہوئے سی ایم یڈی یورپا نے کہا کہ لاک ڈاؤن مسئلے کا حل نہیں ہے۔ کرناٹک کے کسی بھی حصے میں بائیس جولائی کی صبح سے کوئی لاک ڈاؤن نہیں ہو گا۔

  • Share this:
وقت سے قبل ہی کرناٹک میں ختم کیا گیا لاک ڈاون، عالمی وبا سے لڑنے کیلئے مستحکم معیشت کو بتایا گیا ضروری
اہم خبر: وقت سے قبل ہی کرناٹک میں ختم کیا گیا لاک ڈاون

بنگلورو۔ کرناٹک میں کورونا بے لگام گھوڑے کی رفتار سے آگے بڑھ رہا ہے۔ گزشتہ ایک ہفتے سے ہر دن 3 ہزار سے زائد کیس سامنے آ رہے ہیں۔ پوزیٹیو کیسوں کی تعداد 70 ہزار سے تجاوز کر گئی ہے۔ وہیں 44 ہزار سے زائد کیس ایکٹیو ہیں۔ ساڑھے چودہ سو سے زائد اموات ہو چکی ہیں۔ دار الحکومت بنگلورو کی حالت تو سب سے زیادہ خراب ہے۔ ریاست کے آدھے پوزیٹیو کیسز صرف بنگلورو سے سامنے آئے ہیں۔


حالات کی سنگینی اور اپوزیشن کے سخت دباؤ کے بعد سی ایم یڈی یورپا نے بنگلورو میں چودہ جولائی شام آٹھ بجے سے بائیس جولائی شام پانچ بجے تک مکمل لاک ڈاؤن کا اعلان کیا تھا۔ بنگلورو کے لاک ڈاؤن اعلان کے بعد ریاست کے کئی اضلاع میں بھی مکمل لاک ڈاؤن کا اعلان کیا گیا۔ لاک ڈاؤن کے دوران بھی کرناٹک میں کیسوں کی تعداد میں کوئی کمی نہیں آئی۔ لاک ڈاؤن کے دوران بھی کرناٹک سے دو بار چار چار ہزار سے زائد معاملے درج کئے گئے۔ باقی ایام میں تین ہزار سے کم معاملے درج نہیں ہوئے۔ ان حالات کو دیکھتے ہوئے لاک ڈاؤن میں توسیع کرنے کا سی ایم یڈی یورپا پر چہار جانب سے دباؤ تھا۔ کچھ اضلاع میں تو ڈپٹی کمشنرس نے اپنے اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے لاک ڈاؤن میں توسیع کر دی تھی۔ بنگلورو کے علاوہ ریاست کے پانچ اضلاع میں بھی مکمل لاک ڈاؤن کا اعلان کیا گیا تھا۔ ضلع گلبرگہ میں بھی چودہ جولائی سے بیس جولائی تک مکمل لاک ڈاؤن کا اعلان کیا تھا، پھر انیس جولائی کی شام میں ڈپٹی کمشنر نے ایک اور آر ڈر جاری کرتے ہوئے لاک ڈاؤن میں ستائیس جولائی تک کی توسیع کا اعلان کیا تھا۔


تاہم، اب سی ایم یڈی یورپا نے لاک ڈاؤن کے اعلان کو واپس لے لیا ہے۔ حالانکہ لاک ڈاؤن بائیس کی شام پانچ بجے تک کیلئے نافذ تھا، لیکن مقررہ وقت سے قبل ہی لاک ڈاؤن سے دستبرداری اختیار کر لی گئی۔ منگل کو ریاست کے عوام سے خطاب کرتے ہوئے سی ایم نے کہا کہ لاک ڈاؤن مسئلے کا حل نہیں ہے۔ کرناٹک کے کسی بھی حصے میں بائیس جولائی کی صبح سے کوئی لاک ڈاؤن نہیں ہو گا۔ ساتھ ہی سی ایم نے واضح کیا کہ کنٹینمنٹ زون میں لاک ڈاؤن نافذ رہیگا، اس کے علاوہ سنڈے لاک ڈاؤن بھی پوری ریاست میں نافذ رہیگا۔


سی ایم کا کہنا ہے کہ معیشت اور عام زندگی کو پٹری پر لانے پر زیادہ توجہ دی جائیگی۔ اس عالمی وبا سے لڑنے کیلئے مستحکم معیشت بھی ضروری ہے۔ سی ایم نے کہا کہ فائیو ٹی، ٹریس، ٹریک، ٹسٹ، ٹریٹ اور ٹکنالوجی کے ذریعے کرناٹک، کورونا کو شکست دے گا۔ سی ایم نے عوام سے سماجی فاصلہ برقرار رکھنے اور ماسک پہننے کو لازمی قرار دیا۔ ساتھ ہی ہجوم میں ماسک کا استعمال نہ کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی دھمکی بھی دی۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Jul 22, 2020 10:27 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading