உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    تمل ناڈو میں مسلسل بارش سے معمولات زندگی درہم برہم، فوج اوراین ڈی آر ایف کے دستے تعینات

    چنئی۔  جنوبی مغربی بنگال کی خلیج میں کم دباؤ کے علاقوں کے اثرات سے تمل ناڈو کی راجدھانی چنئی اور اس کے مضافاتی علاقوں کے علاوہ ریاست کے دیگر حصوں اور آندھراپردیش و پڈوچیري میں مسلسل شدید بارش کے سبب معمولات زندگی درہم برہم ہوچکی ہیں، جبکہ چنئی ہوائی اڈے کے رن وے میں پانی بھرنے کی وجہ سے یہاں سے تمام پروازیں منسوخ کر دی گئیں ہیں۔

    چنئی۔ جنوبی مغربی بنگال کی خلیج میں کم دباؤ کے علاقوں کے اثرات سے تمل ناڈو کی راجدھانی چنئی اور اس کے مضافاتی علاقوں کے علاوہ ریاست کے دیگر حصوں اور آندھراپردیش و پڈوچیري میں مسلسل شدید بارش کے سبب معمولات زندگی درہم برہم ہوچکی ہیں، جبکہ چنئی ہوائی اڈے کے رن وے میں پانی بھرنے کی وجہ سے یہاں سے تمام پروازیں منسوخ کر دی گئیں ہیں۔

    چنئی۔ جنوبی مغربی بنگال کی خلیج میں کم دباؤ کے علاقوں کے اثرات سے تمل ناڈو کی راجدھانی چنئی اور اس کے مضافاتی علاقوں کے علاوہ ریاست کے دیگر حصوں اور آندھراپردیش و پڈوچیري میں مسلسل شدید بارش کے سبب معمولات زندگی درہم برہم ہوچکی ہیں، جبکہ چنئی ہوائی اڈے کے رن وے میں پانی بھرنے کی وجہ سے یہاں سے تمام پروازیں منسوخ کر دی گئیں ہیں۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      چنئی۔  جنوبی مغربی بنگال کی خلیج میں کم دباؤ کے علاقوں کے اثرات سے تمل ناڈو کی راجدھانی چنئی اور اس کے مضافاتی علاقوں کے علاوہ ریاست کے دیگر حصوں اور آندھراپردیش و پڈوچیري میں مسلسل شدید بارش کے سبب معمولات زندگی درہم برہم ہوچکی ہیں، جبکہ چنئی ہوائی اڈے کے رن وے میں پانی بھرنے کی وجہ سے یہاں سے تمام پروازیں منسوخ کر دی گئیں ہیں۔


      تمل ناڈو میں گزشتہ دو روز سے مسلسل ہو نے والی بارش نے گزشتہ 100 سال کا ریکارڈ توڑ دیا ہے۔ مسلسل بارش کی وجہ سے چنئی شہر کی آس پاس کی جھیلوں کا پانی نکل کر شہر کے وڈاپلائي، ولاسروكم اور ندمواكم علاقوں میں داخل ہوگیا ہے۔ وہیں آندھرا پردیش میں گزشتہ 24 گھنٹے میں بارش سے متعلق واقعات میں دو لوگوں کی موت ہوگئی۔


      آج صبح اگرچہ بارش بند ہو گئی لیکن آسمان میں بادل چھائے ہوئے ہیں۔ کل سے مسلسل ہوئی بارش کی وجہ سے شہر کے زیادہ تر حصوں میں پانی بھر گیا ہے۔ چنئی اور گڈور کے درمیان ریل کی پٹریوں پر پانی بہنے سے متعدد ٹرینیں منسوخ کر دی گئی ہیں۔


      چنئی میں سیلاب کی صورت حال خطرناک


      چنئی میں شدید بارش کا سلسلہ جاری ہے ۔ گزشتہ ہفتہ کے مقابلہ زیادہ بارش ریکارڈ کی گئی ہے اور سیلاب کی صورتحال خطرناک ہوتی جارہی ہے ۔ عوام کو محفوظ مقامات پر منتقل کرنے کے اقدامات کئے جارہے ہیں اور راحت کاموں کی شروعات کردی گئی ہے ۔ کئی مکانات اور جھونپڑیاں پانی میں ڈوب گئی ہیں اور سڑکوں پر جھیل کا منظر دکھائی دے رہا ہے ۔


      کئی ذخائر آب کی سطح میں خطرناک حد تک اضافہ ہوگیا ہے ۔ ہزاروں افراد کو محفوظ مقامات پر منتقل کردیا گیا ہے ۔ بارش کے سبب چینئی ایر پورٹ سے طیاروں کی آمد و رفت متاثر ہوئی ہے اور ایر پورٹ کو بند کردیا گیا ہے ۔ کئی ٹرینوں کو منسوخ کیا گیا ہے ۔
      ٹرانسپورٹ نظام درہم برہم ہوگیا ہے ۔ این ڈی آر ایف کی ٹیمیں بچاؤ اور راحت کاموں میں مصروف ہے ۔ ریاستی حکومت نے فوج سے مدد طلب کی ہے ۔ نشیبی علاقے سادیاپیٹ سے عوام کو محفوظ علاقوں میں منتقل کیا جارہا ہے۔ اس سلسلہ میں وزیراعظم نریندر مودی نے وزیراعلی جئے للتا سے فون پر بات کی۔ساتھ ہی انھیں مرکز سے ہرممکن مدد اور تعاون کا یقین دلایا ہے۔ 


      چنئی ائیرپورٹ پر 700 پروازیں منسوخ


      وزیراعلی جئے للیتا نے حالات کا جائزہ لیا اور وزراء کو متاثرہ علاقوں کا دورہ کرنے کی ہدایت دی۔اب تک مہلوکین کی تعداد 189 تک پہنچ گئی ہے۔ جئے للتا نے کہا کہ پولیس، فائر فائٹرز، این ڈی آر ایف، کوسٹل گارڈز حالات پر قابو پانے کے لئے کوشاں ہیں۔ دوسری طرف محکمہ موسمیات کا کہناہیکہ اگلے چار دنوں میں ریاست بھر میں مزید بارش اور کچھ علاقوں میں بھاری بارش کی توقع ہے۔بنگلورو اور آندھرا پردیش سے بھی امدادی ٹیموں کو طلب کیا جارہا ہے۔


      اس بیچ چنئی ائیرپورٹ کو کل صبح چھ بجے تک کیلئے بند کردیا گیا ہے کیونکہ رن وے پر پانی بھر گیا ہے۔تمل ناڈو میں کل رات بارش نے گذشتہ سو برسوں کا ریکارڈ توڑ دیا۔
      بھاری بارش کی وجہ سے اسکول اور کالج بند کر دیے گئے ہیں۔ سڑک اور ریلوے بری طرح متاثر ہوئی ہیں۔

      First published: