اپنا ضلع منتخب کریں۔

    پوچھ گچھ کیلئے وسئی پولیس کے بلاوے سے الرٹ ہوا آفتاب، ثبوتوں کو تیزی سے مٹایا

    تہاڑ کی جیل نمبر 4 میں رہے گا اب آفتاب، سی سی ٹی وی کیمرے سے ہوگی نگرانی

    تہاڑ کی جیل نمبر 4 میں رہے گا اب آفتاب، سی سی ٹی وی کیمرے سے ہوگی نگرانی

    پولیس ذرائع کے مطابق شردھا والکر کا موبائل 20 اکتوبر سے 23 اکتوبر تک ایکٹیو تھا۔ آفتاب نے سے پہلے کہ وہ مانک پور پولیس اسٹیشن پوچھ گچھ کے لیے جانے سے پہلے ۔ 23 اکتوبر کو شردھا کا فون وسئی کریک سمندر میں پھینک دیا تھا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Mumbai
    • Share this:
      ممبئی۔ وسئی آئی دہلی پولیس کے ذرائع کے مطابق، آفتاب پونا والا کو 20 اکتوبر کو وسئی پولیس کے پوچھ گچھ کے لیے بلانے کے بعد الرٹ کیا گیا اور اس نے بقیہ شواہد کو تیزی سے مٹانا کرنا شروع کر دیا تھا۔ پولیس ذرائع کے مطابق شردھا والکر کا موبائل 20 اکتوبر سے 23 اکتوبر تک ایکٹیو تھا۔ آفتاب نے  سے پہلے کہ وہ مانک پور پولیس اسٹیشن پوچھ گچھ کے لیے جانے سے پہلے ۔ 23 اکتوبر کو شردھا کا فون وسئی کریک سمندر میں پھینک دیا تھا۔

      ذرائع کے مطابق وسائی پولیس نے دوران تفتیش آفتاب کا موبائل فون اور اس کے دیگر گیجٹس کو چیک نہیں کیا تھا۔ دہلی پولیس ذرائع کے مطابق آفتاب نے مئی میں ہی شردھا کا سم کارڈ پھینک دیا تھا۔ لیکن اپنا موبائل اپنے پاس رکھتا تھا اور اسے وائی فائی سے کنکٹ کرکے استعمال کرتا تھا اور شردھا کے دوستوں سے بات کرتا تھا، تاکہ کسی کو شک نہ ہو۔ دہلی پولیس ذرائع کے مطابق آفتاب نے قتل کے بعد ممبئی میں شردھا کے کچھ دوستوں سے ملاقات بھی کی تھی اور انہیں شردھا کے ذریعے  رشتہ ٹوٹنے کی کہانی سنائی تھی، تاکہ لوگوں کو اس پر کوئی شک نہ ہو۔

      رمیزراجہ کے ہندوستان میں ہونے والے عالمی کپ کے بائیکاٹ کے بیان پر گوتم گمبھیر نے دیا ردعمل

      تہاڑ جیل سے ستیندر جین ک نیا ویڈیو، بی جے پی کا الزام، خدمت میں لگے ہیں 10 لوگ

      دہلی پولیس ذرائع کے مطابق مانک پور پولیس کی پوچھ گچھ کے بعد آفتاب 4 نومبر کو دہلی واپس آیا اور باقی شواہد کو تباہ کرنا شروع کر دیا۔ مانک پور پولیس نے اس سے پوچھ گچھ کے بعد ہی شردھا کے قتل میں استعمال ہونے والے ہتھیار کو بھی ٹھکانے لگا دیا۔

      اہم بات یہ ہے کہ دہلی پولیس نے آفتاب پونا والا کا پولی گراف ٹیسٹ کرایا تھا۔ لیکن اس نے پولی گراف ٹیسٹ میں کوئی خاص معلومات نہیں دی ہیں۔ آفتاب پونا والا کا پولی گراف ٹیسٹ کرانے والے ایف ایس ایل حکام کا کہنا ہے کہ ان کے ٹیسٹ کا سب سے اہم اور آخری سیشن صرف بخار کی وجہ سے مکمل نہیں ہو سکا۔ اب اس کا نارکو ٹیسٹ کرانے کی تیاریاں جاری ہیں۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: