உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Solar Eclipse 2021 Time: آج اس وقت سے شروع ہوگا سورج گرہن

    آج کا سورج گرہن سال 2021 کا آخری سورج گرہن ہے

    آج کا سورج گرہن سال 2021 کا آخری سورج گرہن ہے

    آج لگنے الا سورج گرہن لگ بھگ 4 گھنٹے کا ہوگا۔ یہ ہندوستان سمیت ساوتھ ایشیا میں دکھائی نہیں دے گا۔ سورج گرہن سے پہلے سوتک کال (Sutak Kaal) لگتا ہے، جس میں کئی کاموں کو کرنے سے منع کیا جاتا ہے۔

    • Share this:
      Solar Eclipse 2021 Time: سال 2021 کا آخری سورج گرہن (Solar Eclipse) آج 04دسمبر کو لگ رہا ہے۔ آج لگنے الا سورج گرہن لگ بھگ 4 گھنٹے کا ہوگا۔ یہ ہندوستان سمیت ساوتھ ایشیا میں دکھائی نہیں دے گا۔ اس سورج گرہن کو آسٹریلیا، ساوتھ امریکہ، انٹارکٹیکا اور ساوتھ افریقہ میں دیکھا جاسکتا ہے۔ ہندومذہبی عقیدے کے مطابق، سورج گرہن سے پہلے سوتک کال (Sutak Kaal) لگتا ہے، جس میں کئی کاموں کو کرنے سے منع کیا جاتا ہے۔

      سورج گرہن 2021 کا وقت
      آج کا یہ سورج گرہن دن میں 10 بج کر 59 منٹ سے شروع ہوگا۔ جو قریب چار گھنٹوں تک رہے گا اور دوپہر 03 بج کر 07 منٹ پر ختم ہوجائے گا۔

      سوتک وقت
      ہندو مذہبی عقیدے کے مطابق، سورج گرہن یا چاند گرہن میں سوتک وقت ہوتا ہے، جسمیں کئی کاموں کو کرنے سے منع کیا جاتا ہے۔ مندروں کے دروازے (کپاٹ) بند کردئیے جاتے ہیں۔ سورج گرہن لگنے سے 12 گھنٹے پہلے سوتک وقت شروع ہوجاتا ہے۔ یہ سورج گرہن بھارت میں دکھائی نہیں دے گا، اس لئے سوتک وقت یہاں نہیں مانا جائے گا۔

      سورج گرہن کے بعد کیا کریں؟
      ہندوروایت کے مطابق سورج گرہن کے بعد کچھ کاموں کو کرنے کی صلاح دی جاتی ہیں۔
      1- سورج گرہن کے بعد گنگا جل ملے ہوئے پانی سے نہانے کو کہا جاتا ہے۔
      2-پوجا کرکے غریبوں کو خیرات کی جاتی ہے۔
      3- گھر کی صاف صفائی، نیگیٹیوٹی دور کرنے کے نمک ملے ہوئے پانی سے گھر کی صاف صفائی کرنے کی صلاح دی جاتی ہے۔
      4-سورج گرہن کے بعد ہی کھانا بنایا جاتا ہے اور گرہن سے پہلے کھانے کو کھانے سے منع کیا جاتا ہے۔

      (Disclaimer: اس مضمون میں دی گئی معلومات اور اطلاعات عام مفروضوں پر مبنی ہیں۔ نیوز18اردوڈاٹ کام اس کی تصدیق نہیں کرتا ہے۔ ان پر عمل کرنے سے پہلے براہ کرم متعلقہ ماہر سے رابطہ کریں)

      قومی، بین الاقوامی اور جموں وکشمیر کی تازہ ترین خبروں کےعلاوہ تعلیم و روزگار اور بزنس کی خبروں کے لیے نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں ۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: