உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سنسنی خیز! 57 سالہ بیوی نے 62 سال کے شوہر کو زندہ جلایا ، وجہ جان کر رہ جائیں گے حیران

    Tamil Nadu News: پولیس کے مطابق بیمہ پالیسی کی رقم حاصل کرنے کیلئے بیوی نے اپنے رشتہ دار راجا کے ساتھ رنگ راج کو مارنے کا پلان بنایا تھا ۔

    Tamil Nadu News: پولیس کے مطابق بیمہ پالیسی کی رقم حاصل کرنے کیلئے بیوی نے اپنے رشتہ دار راجا کے ساتھ رنگ راج کو مارنے کا پلان بنایا تھا ۔

    Tamil Nadu News: پولیس کے مطابق بیمہ پالیسی کی رقم حاصل کرنے کیلئے بیوی نے اپنے رشتہ دار راجا کے ساتھ رنگ راج کو مارنے کا پلان بنایا تھا ۔

    • Share this:
      چنئی : تمل ناڈو میں ایک خاتون ( 57 سال ) نے ساڑھے تین کروڑ روپے کے بیمہ کی رقم حاصل کرنے کیلئے اپنے شوہر (62 سال ) کو آگ کے حوالے کردیا ۔ معاملہ میں پیرمنللور پولیس نے گزشتہ نو اپریل کو خاتون اور اس کے ایک دوست کو گرفتار کرلیا ہے ۔ خبر ہے کہ 62 سال کے رنگ راج ، ایروڈ ضلع کے رہنے والے ہیں اور پاورلوم کے مالک تھے ۔ گزشتہ ماہ 13 مارچ کو رنگ راج ایک سڑک حادثہ کا شکار ہوگئے تھے ، جس کے بعد انہیں کوئمبٹور کے ایک پرائیویٹ اسپتال میں بھرتی کرایا گیا تھا ۔

      اسپتال میں ان کی بیوی جوتھمنی اور ایک دیگر رشتہ دار رنگ راج کی دیکھ بھال کررہے تھے ۔ گزشتہ 8 اپریل کو انہیں اسپتال سے چھٹی دیدی گئی ۔ حالانکہ انہیں چلنے میں اب بھی تھوڑی پریشانی تھی ، اس لئے ان کی اہلیہ جوتھمنی اور رشتہ دار راجا ایک وین لے کر آئے ۔ تاکہ رنگ راج کو اسپتال سے گھر لے جایا جاسکے ۔

      پولیس نے بتایا کہ تھودوپتھی کی جانب جارہے وین کو راجا چلا رہا تھا اور جیسے ہی گاڑی رات کو تقریبا ساڑھے گیارہ بجے والسوپالیم پہنچی تو راجا نے گاڑی روک دی اور پھر راجا و جوتھمنی دونوں وین سے نیچے اتر گئے اور پھر پٹرول ڈال کر گاڑی میں آگ لگادی ۔ کیونکہ رنگ راج چلنے کے قابل نہیں تھے ، تو وہ گاڑی سے نہیں اترسکے اور اپنی جانچ بچانے کیلئے گاڑی کے اندر سے ہی چیختے اور چلاتے رہے ، لیکن گاڑی کی کھڑکی بند ہونے کی وجہ سے ان کی آواز باہر نہیں آسکی اور وین میں ہی ان کی موت ہوگئی ۔

      رنگ راج کی بیوی جوتھمنی اور رشتہ دار راجا نے پولیس کو اس واقعہ کے بارے میں جانکاری دی اور اس کو ایک حادثہ بتایا ، لیکن راجا کے بیان سے پولیس کو شک ہوا اور اس نے جانچ شروع کردی ۔ جانچ کے دوران پولیس کو معلوم ہوا کہ راجا نے ایک پٹرول پمپ سے ایندھن خریدا تھا ۔ پھر کیا تھا ، پولیس نے پٹرول پمپ میں لگے سی سی ٹی وی کے فوٹیج بھی کھنگالے ۔

      پکڑے جانے کے ڈر سے راجا نے خود ہی رنگ راج کو مارنے کی بات پولیس کے سامنے قبول کرلی ۔ جانچ میں یہ بات سامنے آئی کہ رنگ راج کے اوپر کئی لوگوں کا ڈیڑھ کروڑ کا بقایہ تھا ، جس کی وجہ سے وہ سبھی لوگ انہیں اور ان کی بیوی کو پریشان کیا کرتے تھے ۔ اس کے ساتھ ہی رنگ راج نے تین بیمہ پالیسی لے رکھی تھی ، جس کی کل رقم ساڑھے تین کروڑ روپے تھی اور اس نے اس میں اپنی بیوی کو بھی نامنی بنایا تھا ۔

      پولیس کے مطابق بیمہ پالیسی کی رقم حاصل کرنے کیلئے جوتھمنی نے اپنے رشتہ دار راجا کے ساتھ رنگ راج کو مارنے کا پلان بنایا تھا ۔ دونوں میں ڈیڑھ لاکھ روپے کا سمجھوتہ بھی ہوا تھا اور جوتھمنی نے راجا کو بطور ایڈوانس پچاس ہزار روپے بھی دئے تھے ۔ معاملہ کا پورا انکشاف ہونے کے بعد دونوں نے پولیس کے سامنے اپنے جرم کو قبول کرلیا اور دونوں فی الحال جیل میں ہیں ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: