உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Telangana Budget 2022: تلنگانہ بجٹ میں ’تعلیم اور صحت کو دی جائےگی اولین ترجیح، مرکزی حکومت کا تعاون نہیں‘

    Youtube Video

    تلنگانہ میں کسی بھی آبپاشی پراجکٹ کے لیے قومی حیثیت پر غور نہ کرنے کی وجہ پر سوال اٹھاتے ہوئے انہوں نے الزام لگایا کہ مرکز ریاستی حکومت کے ساتھ تعاون نہیں کررہا ہے۔ ونود کمار نے کہا کہ مرکزی وزیر نتن گڈکری نے پہلے پارلیمنٹ میں اعلان کیا تھا کہ ریاستوں میں کوئی قومی آبپاشی پروجیکٹ نہیں ہوگا۔

    • Share this:
      تلنگانہ میں منصوبہ بندی بورڈ کے وائس چیئرمین بی ونود کمار نے کہا کہ عالمی وبا کورونا وائرس (Covid-19) کے چیلنج کے ساتھ تلنگانہ حکومت 23-2022 کے بجٹ میں تعلیم اور صحت کی سرگرمیوں کو ترجیح دے گی۔ بدھ کو میڈیا سے خطاب کرتے ہوئے تلنگانہ شماریاتی رپورٹ (Telangana Statistical Report) کے اجرا کے فوراً بعد ونود کمار نے کہا کہ ریاستی حکومت ترجیحی شعبوں پر کام کر رہی ہے کیونکہ مرکزی حکومت تعاون نہیں کر رہی ہے۔

      بی ونود کمار نے کہا کہ کچھ ایجنسیاں تلنگانہ کی مالی اسناد پر یقین کے ساتھ قرض کی پیشکش کرنے کے لیے آگے آ رہی ہیں۔ انہوں نے صحت اور تعلیم کے شعبوں پر زور دیا۔ ہم ان تجاویز پر غور کر رہے ہیں اور بجٹ میں ان شعبوں پر زیادہ زور دیا جائے گا۔ سابق کریمنگر ایم پی کے مطابق ایک نیا میڈیکل کالج ملوگو اور کوپتھا گوڈیم اضلاع کے قریب بنایا جائے گا۔

      تلنگانہ میں کسی بھی آبپاشی پراجکٹ کے لیے قومی حیثیت پر غور نہ کرنے کی وجہ پر سوال اٹھاتے ہوئے انہوں نے الزام لگایا کہ مرکز ریاستی حکومت کے ساتھ تعاون نہیں کررہا ہے۔ ونود کمار نے کہا کہ مرکزی وزیر نتن گڈکری نے پہلے پارلیمنٹ میں اعلان کیا تھا کہ ریاستوں میں کوئی قومی آبپاشی پروجیکٹ نہیں ہوگا لیکن اب اتر پردیش کو صرف انتخابات کی وجہ سے 40,000 کروڑ روپے دیئے گئے ہیں اور کرناٹک کو بھی مختص کیا جائے گا۔ لیکن اے پی ری آرگنائزیشن ایکٹ 2014 میں کیے گئے ایک بھی وعدے کو پورا نہیں کیا گیا ہے۔

      Telangana Budget 2022: تلنگانہ بجٹ میں فلاح و بہبود کیلئےمزید فنڈز ہوںگےمختص، جانیے تفصیلات



      اسپیشل چیف سکریٹری برائے فینانس، رام کرشنا راؤ نے کہا کہ مالیاتی کمیشن نے ریاستوں کو فنڈز کی مزید منتقلی کی سفارش کی ہے۔ مرکزی حکومت ان تجاویز پر کوئی توجہ نہیں دے رہی ہے۔ تلنگانہ اسمبلی کا بجٹ اجلاس 7 مارچ کو شروع ہوگا۔ ریاستی وزیر خزانہ اور صحت ٹی ہریش راؤ اسی دن 23-2022 کا بجٹ پیش کریں گے۔ بجٹ کو منظور کرنے کے لیے ریاستی کابینہ کا اجلاس 6 مارچ کو ہوگا۔ کاروباری مشاورتی کمیٹی (بی اے سی) سیشن کی مدت کے بارے میں بات کرے گی اور فیصلہ کرے گی۔

      بجٹ میں دلت بندھو اسکیم کے لیے خاطر خواہ بندوبست کیے جانے کا امکان ہے، جس میں دلت خاندانوں کو ہر ایک کو 10 لاکھ روپے کی مالی امداد فراہم کرنے کی کوشش کی گئی ہے۔ فائدہ اٹھانے والے مالی امداد کا استعمال کرتے ہوئے اپنی پسند کا کاروبار شروع کر سکتے ہیں۔ گزشتہ سال حضور آباد اسمبلی حلقہ میں شروع کی گئی اس اسکیم کو چند اور اسمبلی حلقوں میں آزمایا جا رہا ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: