ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

تلنگانہ کابینہ کی توسیع، 10ارکان کی شمولیت، 6 نئے چہرے شامل، کسی بھی خاتون کو نہیں ملی جگہ

ریاستی کابینہ میں یہ توسیع تقریبا دو ماہ کے عرصہ کے بعد کی گئی ہے۔ یہ توسیع اس لحاظ سے بھی اہمیت کی حامل ہے کیونکہ 22فروری سے مقننہ کے بجٹ سشن کا آغاز ہورہا ہے

  • UNI
  • Last Updated: Feb 19, 2019 05:54 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
تلنگانہ کابینہ کی توسیع، 10ارکان کی شمولیت، 6 نئے چہرے شامل، کسی بھی خاتون کو نہیں ملی جگہ
تلنگانہ کے وزیر اعلیٰ کے چندرشیکھر راو، پی ٹی آئی، فائل فوٹو۔

طویل انتظار اورتجسس کے بعد تلنگانہ کے وزیراعلی کے چندرشیکھرراو نے آج کابینہ میں توسیع کردی۔ 19فروری قمری کیلنڈر کے حساب سے مقدس دن مانا گیا ہے جس کی مناسبت سے یہ توسیع کی گئی ہے۔ نئے وزراء کی حلف برداری11.30بجے دن ہوئی۔حیدرآباد کے راج بھون کے سبزہ زار پر منعقدہ سادہ مگر اہم تقریب میں دونوں تلگو ریاستوں تلنگانہ اور آندھراپردیش کے مشترکہ گورنر ای ایس ایل نرسمہن نے نئے وزرا کو عہدہ اور رازداری کا حلف دلایا۔

اسمبلی انتخابات میں شاندار کامیابی کے بعد 12دسمبر کو چندرشیکھرراو نے واحد وزیر محمد محمودعلی کے ساتھ حلف لیا تھا۔ ریاستی کابینہ میں یہ توسیع تقریبا دو ماہ کے عرصہ کے بعد کی گئی ہے۔ یہ توسیع اس لحاظ سے بھی اہمیت کی حامل ہے کیونکہ 22فروری سے مقننہ کے بجٹ سشن کا آغاز ہورہا ہے۔ اس دن 11.30بجے بجٹ پیش کیا جائے گا۔ ذرائع کے مطابق وزیراعلی کے چندرشیکھرراو علم نجوم میں کافی یقین رکھتے ہیں ،اسی لئے مقدس تاریخ کے لئے انہوں نے انتظار کیا ۔


وزیراعلی نے اپنی پہلی کابینہ کے کئی افراد کو نئی کابینہ میں جگہ نہیں دی۔ دس وزراء اندراکرن ریڈی،ٹی سرینواس یادو،جگدیش ریڈی ،ای راجندر،سنگی ریڈی نرنجن ریڈی،کے ایشور،ای دیاکرراو،وی سرینواس گوڑ ، وی پرشانت ریڈی اور سی ملاریڈی نے تلگو زبان میں خدا کے نام پر حلف لیا۔ یہ کابینہ نئے اور پرانے چہروں کا امتزاج ہے۔ اس میں چار پرانے چہروں اندرا کرن ریڈی،ٹی سرینواس یادو،جگدیش ریڈی،ای راجندر کو جگہ دی گئی ہے جبکہ 6نئے چہروں میں سنگی ریڈی نرنجن ریڈی،کے ایشور،ای دیاکرراو،وی سرینواس گوڑ ، وی پرشانت ریڈی اور سی ملاریڈی شامل ہیں۔


تمام وزرا نے حلف برداری کے بعد گورنر اور وزیراعلی سے ملاقات کی۔ اہم چہرے جن کو اس کابینہ میں شامل نہیں کیا گیا ہے ، ان میں وزیراعلی کے فرزند و حکمران جماعت ٹی آرایس کے کارگزار صدر کے ٹی راماراو ،وزیراعلی کے بھانجے ہریش راو کے علاوہ کڈیم سری ہری،این نرسمہاریڈی ،سی لکشماریڈی، جوگورامنا اور ٹی پدما راو شامل ہیں۔ یہ تمام چندرشیکھر راو کی پہلی کابینہ میں وزیر رہ چکے ہیں۔ اس کابینہ میں کوئی بھی خاتون وزیر نہیں ہے۔
First published: Feb 19, 2019 05:54 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading