ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

کیمرے میں قید ہوا ڈاکٹر کے ساتھ انتہائی گھٹیا حرکت کا معاملہ، مریض کے اہل خانہ نے کر ڈالا یہ خوفناک کام

Doctor Attacked in Assam: وائرل ہو رہے ویڈیو میں صاف دیکھا جاسکتا ہے کہ ڈاکٹر زمین پر گرا ہوا ہے اور ملزم مسلسل کچرے کی پیٹی ، جھاڑو اور دیگر چیزوں کے ساتھ بڑی بے رحمی سے مار پیٹ کر رہے ہیں۔

  • Share this:
کیمرے میں قید ہوا ڈاکٹر کے ساتھ انتہائی گھٹیا حرکت کا معاملہ، مریض کے اہل خانہ نے کر ڈالا یہ خوفناک کام
Doctor Attacked in Assam: وائرل ہو رہے ویڈیو میں صاف دیکھا جاسکتا ہے کہ ڈاکٹر زمین پر گرا ہوا ہے اور ملزم مسلسل کچرے کی پیٹی ، جھاڑو اور دیگر چیزوں کے ساتھ بڑی بے رحمی سے مار پیٹ کر رہے ہیں۔

آسا م میں کووڈ (Covid-19)  مریضوں کا علاج سامنے آیا ہے۔ منگل کو ریاست کے ہوجائی میں ایک مریض کی موت غصائے کچھ لوگوں نے ڈاکٹر کو اینٹ، کچرے کی پیٹی جیسی چیزوں سے بری طرح پیٹا۔ حملے کا ویڈیو سوشل میڈیا (Social Media)  پر وائرل ہو رہا ہے۔ ہے۔ سی ایم ہیمنت بسوا شرما نے پولیس کو ملزموں کے خلاف سخت کارروائی کی ہدایت دی ہیں۔


معاملہ گوہاٹی سے تقریبا 140 کلو میٹر دور ہوجائی کا بتایا جا رہا ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق یہاں واقع اڈالی ماڈل اسپتال اہل خانہ کے علاوہ مقامی لوگوں نے بھی ڈاکٹر سیوز کمار سون پتی کے ساتھ مار پیٹ کی ہے۔ وائرل ہو رہے ویڈیو میں صاف دیکھا جاسکتا ہے کہ ڈاکٹر زمین پر گرا ہوا ہے اور ملزم مسلسل کچرے کی پیٹی ، جھاڑو اور دیگر چیزوں کے ساتھ  بڑی بے رحمی سے مار پیٹ کر رہے ہیں۔ متاثرہ ڈاکٹر کو بھی اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔ ان کی حالت مستحکم بتائی جارہی ہے۔ سی ایم نے جانکاری دی ہے کہ وہ خود اس معاملے کی نگرانی کر رہے ہیں اور 24 لوگوں کی گرفتاری ہو چکی ہے۔


کیا ہے معاملہ


کہا جا رہا ہے کہ ہیپل پکھوری گاؤں کے رہنے والے غیاس الدین نام کے ایک مریض کی کووڈ کے چلتے منگل کو موت ہو گئی تھی۔ صحافیوں سے بات چیت میں ڈاکٹر سین پتی نے بتایا، مریض کے ساتھ موجود لوگ میرے پاس آئے اور کہنے لگے مریض کی حالت سنگین ہے اور صبح سے یورن کے پاس نہیں ہو رہی ہے۔ میں کمرے میں گیا اور پایا کہ مریض کی موت ہو چکی ہے۔ میں نے جیسے ہی یہ خبر تیمارداروں کو بتائی تو ایک رشتے دار نے گالیاں دینا شروع کر دیا۔

HCM @himantabiswa sir.



مریض کی موت سے مشتعل بھیڑ نے اسپتال پر حملہ کر دیا۔ اس دوران زیادہ تر استاف بچ کر نکل گیا۔ وہیں ڈاکٹر سین پتی نے خود کو کمرے میں بند کر لیا۔ اس کے بعد بھیڑ نے کمرے میں گھس کر ان کے ساتھ بے رحمی سے مار پیٹ کی۔ ڈاکٹر نے بتایا، انہوں نے اسپتال میں توڑ پھوڑ کردی، ہم بچنے کیلئے بھاگے۔ میں ایک کمرے میں گیا اور چھپنے کی کوشش کی لیکن انہوں نے مجھے کھوج لیا اور مار پیٹ کر دی۔ انہوں نے میری سونے کی چین، انگوٹھی اور میرا موبائل بھی چھین لیا۔ انہوں نے جانکاری دی کہ وہ تقریبا تیس لوگ تھے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Jun 03, 2021 03:42 PM IST