ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

سابق مرکزی وزیر سی کے جعفرشریف کے کارناموں کو خراج تحسین، بنگلورو مہانگر پالیکےکا فیصلہ

بنگلورو مہانگر پالیکے نے تاخیر سے ہی لیکن کوئنس روڈ کو سابق مرکزی وزیر سی کے جعفر شریف کےنام سے منسوب کرنےکا فیصلہ لیا ہے۔

  • Share this:
سابق مرکزی وزیر سی کے جعفرشریف کے کارناموں کو خراج تحسین، بنگلورو مہانگر پالیکےکا فیصلہ
سابق مرکزی وزیر سی کے جعفرشریف کے کارناموں کو خراج تحسین

بنگلورو: دیر سے ہی صحیح کرناٹک میں سابق مرکزی وزیر سی کے جعفرشریف کے کارناموں کو خراج تحسین پیش کرنے کا فیصلہ لیا گیا ہے۔ بروہت بنگلورو مہانگر پالیکے نے شہرکی ایک اہم سڑک کو سی کے جعفرشریف کے نام سے منسوب کرنےکا فیصلہ لیا ہے۔ بی بی ایم پی کی آج کونسل میٹنگ منعقد ہوئی۔ مئرگوتم جین کی صدارت میں ہوئی اس میٹنگ میں اتفاق رائے سےکوئنس روڈکو مرحوم سی کے جعفرشریف کا نام دینےکا فیصلہ لیا گیا۔ بنگلورو کےکوئنس روڈکا شمار شہرکی اہم سڑکوں میں ہوتا ہے۔ شہرکےقلب میں واقع یہ سڑک کنٹونمنٹ ریلوے اسٹیشن کے سرکل سے شروع ہوکر انڈین ایکسپریس سرکل تک اختتام پذیر ہوتی ہے۔ اس روڈ پرکرناٹک پردیش کانگریس کمیٹی کا مرکزی دفتر موجود ہے۔ اس کے علاوہ مسلمانوں کی ملی سماجی سرگرمیوں کا مرکز دارالسلام، شہرکا مشہور شفاء اسپتال، سرکاری ای ایس آئی اسپتال، انسٹی ٹیوشن آف اگریکلچرل ٹکنالوجسٹس اس طرح کئی اہم عمارتیں، دفاتراس سڑک پر موجود ہیں۔


سی کے جعفرشریف 25نومبر 2018کو انتقال کرگئے۔ جعفرشریف کا شمار ملک کے ممتاز لیڈروں، کانگریس کے سرکردہ شخصیات میں ہوا کرتاتھا۔ فائل فوٹو
سی کے جعفرشریف 25نومبر 2018کو انتقال کرگئے۔ جعفرشریف کا شمار ملک کے ممتاز لیڈروں، کانگریس کے سرکردہ شخصیات میں ہوا کرتاتھا۔ فائل فوٹو


بی بی ایم پی کے کارپوریٹر اے آرذاکر نےکہا کہ کونسل نےاتفاق رائے سے یہ قرارداد منظورکی ہے۔ اس قراردادکو ریاستی حکومت کے پاس بھیجا جائے گا۔ امید کی جارہی ہےکہ ایک ماہ کے اندر اس سڑک کو جعفر شریف کے نام سے منسوب کرنے کی کارروائی مکمل ہوگی۔ واضح رہےکہ بی بی ایم پی میں بی جے پی پارٹی برسراقتدار ہے۔ ریاستی حکومت بھی بی جے پی کی ہی ہے۔ لہذا توقع کی جارہی ہےکہ بغیرکسی رکاوٹ کے ریاستی حکومت بھی اس قرارداد کو منظوری دے دےگی۔



سی کے جعفرشریف 25نومبر 2018کو انتقال کرگئے۔ جعفرشریف کا شمار ملک کے ممتاز لیڈروں، کانگریس کے سرکردہ شخصیات میں ہوا کرتاتھا۔
بنگلورو کےنارتھ پارلیمانی حلقے سے 7مرتبہ لوک سبھا کیلئے آپ منتخب ہوئے۔ نہ صرف کرناٹک بلکہ قومی سطح پر اپنی پہچان بنائی۔ بحیثیت ریلوے وزیر ملک کے ریلوے نظام کو ترقی پر لے جانے میں ان کی خوب محنتیں رہیں۔ بلاتفریق مذہب وملت لوگ آپ کو چاہتے تھے۔ بی جےپی اور دیگر حریف جماعتوں کے لیڈر بھی آپ کی قدر کرتے تھے۔ جعفرشریف کے انتقال کے بعد آپ کے نام اور کارناموں کو زندہ رکھنے کیلئے حکومت کے سامنے کئی تجویزیں پیش کی گئی ہیں۔ بنگلورو کے کنٹونمنٹ ریلوے اسٹیشن کو جعفرشریف کا نام دینے، شہر کے ایک اہم سڑک کو آپ کے نام سے منسوب کرنے جیسی  تجویز پیش کی گئی ہیں۔
First published: Mar 01, 2020 12:10 AM IST