ہوم » نیوز » No Category

علامہ اقبال پر گلبرگہ میں ادبی نشست کا انعقاد، ماہرین اقبالیات نے شاعرمشرق کو قرار دیا خضرعصر

گلبرگہ۔ ماہرین اقبالیات کا کہنا ہے کہ علامہ اقبال کی آنکھ نے ایک صدی قبل ہی شاید آج کا دور دیکھ لیا تھا، جس کو انھوں نے اپنے کلام کے ذریعے زمانے پر آشکار کر دیا۔

  • ETV
  • Last Updated: Nov 30, 2016 07:54 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
علامہ اقبال پر گلبرگہ میں ادبی نشست کا انعقاد، ماہرین اقبالیات نے شاعرمشرق کو قرار دیا خضرعصر
گلبرگہ۔ ماہرین اقبالیات کا کہنا ہے کہ علامہ اقبال کی آنکھ نے ایک صدی قبل ہی شاید آج کا دور دیکھ لیا تھا، جس کو انھوں نے اپنے کلام کے ذریعے زمانے پر آشکار کر دیا۔

گلبرگہ۔ ماہرین اقبالیات کا کہنا ہے  کہ علامہ اقبال کی آنکھ نے ایک صدی قبل ہی شاید آج کا دور دیکھ لیا  تھا،  جس کو انھوں  نے اپنے کلام کے  ذریعے زمانے پر آشکار کر دیا۔  افکار اقبال پر گلبرگہ میں منعقدہ ادبی نشست میں ماہرین  نے اقبال کو  ’خضر عصر‘  قرار دیا ۔

ماہرین اقبالیات کا کہنا ہے کہ  اقبال کی شاعری میں ایک فکر، ایک کرب،  ایک تڑپ ایک بے چینی نمایاں طور  پر نظر آتی  ہے اور علامہ  کی پوری شاعری اُسی فکرو تڑپ کے گرد گھومتی ہے۔


ماہرین نے کہا کہ علامہ از خود شاعری نہیں کرتے  تھے بلکہ شعر ان پر وارد ہوتے تھے۔ گلبرگہ میں منعقدہ ادبی نشست میں اقبال کی تصنیفات ’ابلیس  کی مجلس شوریٰ‘ اور ’مسجد قرطبہ‘ پر روشنی ڈالی گئی۔ اس کے علاوہ اقبال کے تصور زن پر بھی اظہار خیال کیا گیا۔

حیدرآباد کرناٹک مسلم ڈیولپمنٹ فورم کی جانب سے منعقد ادبی نشست کی صدارت، کرناٹک اردو اکیڈمی کے سابق صدر ڈاکٹر وہاب عندلیب نے کی۔ ادبی نشست میں ممتاز شاعر نور الدین نور نے  اقبال کو منظوم خراج عقیدت پیش کیا۔ وہیں طیب یعقوبی نے اقبال کے کلام کو ساز پر پیش کیا۔ رات میں سخت سردی کے باوجود اقبال  کو سننے کیلئے شیدائیان اقبال کی بڑی تعداد ادبی نشست کے اختتام تک موجود رہی۔

First published: Nov 30, 2016 07:54 PM IST