ہوم » نیوز » وطن نامہ

جب لڑکیاں گھر میں اکیلے ہوتی ہیں تو کرتی ہیں یہ پرائیویٹ کام

لڑکیاں اپنی پرسنل زندگی کے بارے میں اتنی پرائویٹ ہوتی ہیں کہ کسی کو ان کانوں کان بھی خبر نہیں لگنے دیتی ہیں۔

  • Share this:
جب لڑکیاں گھر میں اکیلے ہوتی ہیں تو کرتی ہیں یہ پرائیویٹ کام
علامتی تصویر

لڑکیوں کو ہر پہلو سے سمجھنا کافی مشکل ہوتا ہے اور مشکل ہی نہیں بلکہ ناممکن بھی۔۔۔ لڑکیاں اپنی پرسنل زندگی کے بارے میں اتنی پرائویٹ ہوتی ہیں کہ کسی کو ان کانوں کان بھی خبر نہیں لگنے دیتی ہیں۔ کچھ لڑکیاں اپنی نجی زندگی سے جڑی کچھ باتیں اپنی اچھی دوست سے شیئر کر لیتی ہیں تو کچھ لڑکیاں اپنی پرسنل زندگی اس طرح چھپا کر رکھتی ہیں کہ سامنے والے کو بھنک بھی نہیں لگ پاتی۔ اگر آپ بھی اس بات سے اتفاق رکھتے ہیں تو چلئے آپ کی الجھن کو ہم سلجھا دیتے ہیں۔ لڑکیاں پبلک میں اور اکیلے میں الگ ہوتی ہیںَ کچھ کنفیوزن اس لئے بھی پیدا ہوتا ہے۔ آپ کو یہ تو پتہ ہے کہ وہ پبلک میں کیسے رہتی ہیں پر پرائیوٹ میں وہ کیا کرتی ہیں یہ جانتے ہیں۔

آیئے آپ کو بتاتے ہیں کہ وہ 7 کام جو لڑکی اکیلے میں کرتی ہے اور کسی کو کانوں کان خبر نہیں ہونے دیتیں۔

لڑکیاں پبلک میں برا کے بغیر نہیں جاتیں اس کیلئے صحیح قسم کی برا کا منتخب کرتی ہیں لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ اکیلے میں وہ اسے پہننا بالکل پسند نہیں کرتیں ۔گھر جاکر سب سے پہلا کام ہوتا ہے برا اتارکر کمفرٹ میں آنا۔

لڑکیاں اپنی پرسنیلٹی کے حساب سے کپڑے پہنتی ہیں۔ جس میں ان کا فیگر پرفیکٹ لگے۔ اکیلے میں وہ اپنی باڈی کو ان پرفیکٹ آؤٹ فٹ کے بغیر دیکھتی ہیں۔ پیٹ کی ایکسٹرا چربی ، اسٹریچ مارکس ۔ کوئی داغ یا جسم کے شیپ کو ہر طرح سے دیکھتی ہیں۔

اکیلے میں وہ ہاٹ انداز میں تصویریں لیتی ہیں۔ یہ تصویریں وہ کسی کے ساتھ شیئر کریں یا نہیں پر ان کے پاس کلکشن ضرور ہوتا ہے۔

اکیلے میں کئی لڑکیاں پورن بھی دیکھتی ہیں اور سیکس لائف کو بہتر بناے کی نالج لیتی ہیں۔ پارٹنر کے ساتھ دیکھنے میں وہ زیادہ وہ ٹھیک نہیں سمجھتیں ۔
آئیٹم سانگ پر تھرکنا لڑکیوں کیلئے اکیلے میں سب سے اچھا ٹائم پاس کا آپشن رہتا ہے۔ وہ ایکٹرس کی طرح ہی کمر مٹکاتی ہیں۔
اکیلے میں لڑکیاں اپنے ایکس یا کرش کی بھی تصویریں دیکھتی ہیں اور کسی کو کانوں کان خبر بھی نہیں ہونے دیتیں۔
کئی لڑکیاں اکیلے ایسے کپڑے پہنتی ہیں او رمیک اپ کرتی ہیں جو وہ سب کے سامنے نہیں کر سکتیں۔
Published by: Sana Naeem
First published: Mar 20, 2021 09:07 PM IST