உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Southwest monsoon season:جنوب مغرب مونسون کی وجہ سے نہ ہو پریشانی، تیار رہیں ریاستیں: مرکزی داخلہ سکریٹری

    جنوب مغرب مونسون کو لے کر داخلہ سکریٹری نے دی یہ ہدایتیں۔

    جنوب مغرب مونسون کو لے کر داخلہ سکریٹری نے دی یہ ہدایتیں۔

    Southwest monsoon season: مرکزی وزیر داخلہ نے اس بات پر بھی زور دیا ہے کہ اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ جہاں تک ممکن ہو گرمی کی لہر اور آسمانی بجلی گرنے جیسے واقعات میں لوگ ہلاک نہ ہوں۔

    • Share this:
      Southwest monsoon season: جنوب مغربی مانسون کی وجہ سے کسی بھی قدرتی آفت سے نمٹنے کے لیے ریلیف کمشنروں اور ڈیزاسٹر مینجمنٹ محکموں کے سیکریٹریوں کی دو روزہ سالانہ کانفرنس کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔ کانفرنس میں حصہ لیتے ہوئے، مرکزی داخلہ سکریٹری اجے کمار بھلا نے بدھ کو تمام ریاستوں، مرکز کے زیر انتظام علاقوں اور مرکزی ایجنسیوں کو مشورہ دیا کہ وہ جنوب مغربی مانسون کی وجہ سے پیدا ہونے والی پریشانیوں سے نمٹنے کے لیے تیار رہیں۔ بارش کی وجہ سے سیلاب، طوفان، لینڈ سلائیڈنگ جیسی آفات سے نمٹنے کے لیے تیار رہنے کا بھی مشورہ دیا گیا۔

      ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے نظریہ میں آئی تبدیلی
      کورونا وبا کی وجہ سے دو سال کے وقفے کے بعد جسمانی طور پر منعقد ہونے والی کانفرنس کے افتتاحی اجلاس میں مرکزی داخلہ سکریٹری نے اس بات پر خوشی کا اظہار کیا کہ مرکزی حکومت کی مسلسل کوششوں کے ذریعے قدرتی آفات کے انسانی زندگی پر اثرات کم کرنے میں قابل ہوگئے ہیں۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Weather News: شدید بارش کے بعد بنگلورو میں مشکلات کا سامنا، شہر میں اورنج الرٹ جاری

      انہوں نے مزید کہا، 'مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے کہا تھا کہ 2014 کے بعد ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے طریقہ کار میں بڑی تبدیلی آئی ہے۔ پہلے نقطہ نظر صرف ریلیف پر مبنی تھا، اب انسانی جان بچانے کا نقطہ نظر ایک اضافی جزو بن گیا ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      Heavy Rain:کچھ گھنٹےکی بارش سےبےحال ہوابنگلورو،سڑکیں بنی تالاب، کئی جگی سیلاب جیسی صورتحال

      لُو اور بجلی گرنے کی وجہ سے جان نہ جائے
      بھللا نے کہا کہ مرکزی وزیر داخلہ نے اس بات پر بھی زور دیا ہے کہ اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ جہاں تک ممکن ہو گرمی کی لہر اور آسمانی بجلی گرنے جیسے واقعات میں لوگ ہلاک نہ ہوں۔ 1984 بیچ کے انڈین ایڈمنسٹریٹو سروس آفس نے خطرات کو مزید کم کرنے کے لیے صحیح قدم اٹھانے اور وسائل کی بروقت سرمایہ کاری کی اہمیت پر زور دیا۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: