ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

چپکو موومنٹ کی مشہور شخصیت سندر لال بہوگونا (Sundarlal Bahuguna) کی کووڈ۔19 سے موت؛ وزیر اعظم نے کہا ’’ بڑا نقصان‘‘۔

میگسسے ایوارڈ یافتہ چندی پرساد بھٹ (Magsaysay award winner Chandi Prasad Bhatt ) نے نیوز 18 کو فون پر بتایا ’’مجھے بہوگونا جی کے بارے میں جان کر رنج ہوا۔ میں اپنے جذبات کا اظہار کرنے کی پوزیشن میں نہیں ہوں‘‘۔

  • Share this:
چپکو موومنٹ کی مشہور شخصیت سندر لال بہوگونا (Sundarlal Bahuguna) کی کووڈ۔19 سے موت؛ وزیر اعظم نے کہا ’’ بڑا نقصان‘‘۔
پی ایم مودی نے سندر لال بہوگنا کے انتقال پر رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے کہا ، " سندر لال بہوگونا جی کی موت ہمارے ملک کے لئے بہت بڑا نقصان ہے۔

ماہر ماحولیات سندر لال بہوگونا (Environmentalist Sundarlal Bahuguna) جو پانچ دہائیاں قبل جنگلات کی کٹائی کے خلاف چپکو تحریک کی قیادت کرنے کے لئے مشہور تھے، جمعہ کے روز آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنس (All India Institute of Medical Science) رشیکیش میں کووڈ۔19 کی وجہ سے انتقال کر گئیں۔ وہ 94 سال کے تھے۔اسپتال انتظامیہ نے بتایا کہ جمعرات کی دوپہر سے ہی ان کے آکسیجن کی سطح میں کمی آرہی تھی۔ انتظامیہ نے کہا کہ کوششوں کے باوجود ان کی جان نہیں بچائی جاسکی۔میگسسے ایوارڈ یافتہ چندی پرساد بھٹ (Magsaysay award winner Chandi Prasad Bhatt ) نے نیوز 18 کو فون پر بتایا ’’مجھے بہوگونا جی کے بارے میں جان کر رنج ہوا۔ میں اپنے جذبات کا اظہار کرنے کی پوزیشن میں نہیں ہوں‘‘۔بھٹ کا بہوگونا سے گہرا تعلق تھا۔ یہ دونوں  جنگلات کے لیے چلائے گئے چپکو موومنٹ میں سب سے آگے تھے۔ اتراکھنڈ (اس وقت اتر پردیش میں) جنگلات کے تحفظ کی ایک مہم جس نے عالمی سطح پر اپنی منفرد شناخت بنالی تھی۔ یہ تحریک ہمالیہ کے دامن میں گڑھوال میں درختوں کی کٹائی کے خلاف تھی۔



بہوگونا جی کی موت ہمارے ملک کے لئے ایک بہت بڑا نقصان ہے: وزیر اعظم مودی

پی ایم مودی نے سندر لال بہوگنا کے انتقال پر رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے کہا ، " سندر لال بہوگونا جی کی موت ہمارے ملک کے لئے بہت بڑا نقصان ہے۔ انہوں نے ماحولیات کے ساتھ ہم آہنگی کے اورہمارے ملک کے قدیم اخلاقیات کو فروغ دیاہے ۔ ان کی سادگی اور ہمدردی کے احساس کوکبھی فراموش نہیں کیا جائے گا۔ میرے ان کے کنبے اور بہت سارے مداحوں کے ساتھ اظہارِ تعزیت کرتا ہوں ۔"


اتراکھنڈ کے وزیر اعلیٰ تیرت سنگھ راؤت نے سندر لال بہوگونا کی موت پر اظہارِ تعزیت کی کیاہے۔ سی ایم راؤت نے کہا کہ پہاڑوں میں پانی ، جنگل اور زمین کے امور کو اپنی ترجیح کے طور پر رکھنے اور عوام کو ان کے حقوق دلانے کے لئے بہوگونا جی کی کاوشوں کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔وزیراعلیٰ تیراتھ سنگھ راؤت نے ٹویٹ کیا ، 'مجھے پدمو وبھوشن سندر لال بہوگونا جی ، جو دنیا کے عظیم ماحولیات ، چپکو تحریک کے رہنما وِرکشمیترا کے نام سے جانا جاتا ہے ، کے انتقال کی بڑی تکلیف دہ خبر موصول ہوئی ہے۔ یہ خبر سن کر ذہن بہت تکلیف میں ہے۔ یہ نہ صرف اتراکھنڈ بلکہ پورے ملک کے لئے ناقابل تلافی نقصان ہے۔


ماہر ماحولیات سندر لال بہوگونانے چند سال قبل صحافی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ"میں ، سیکڑوں شہریوں کے ساتھ ، پوری دنیا کو مضبوطی سے یہ پیغام دینے میں کامیاب رہا ہوں کہ بڑے ڈیم کبھی بھی پانی کا مسئلہ حل نہیں کرسکتے ہیں۔"

سند ر لال بہوگنا کو 9 جنوری کو ضلع ٹہری سے شرو ع ہونے والی چپکو تحریک کا علمبردار سمجھا جاتا ہے۔ انہوں نے گورا دیوی اور بہت سے دوسرے لوگوں کے ساتھ مل کر ستر کی دہائی میں جنگل کو بچانے کے لئے چپکو تحریک شروع کی تھی۔سندر لال بہوگونا کو ، پدم وِبھوشن سمیت بہت سے ایوارڈز سے نوازا گیا تھا۔ سندر لال بہوگونا نے بھی ٹہری ڈیم کی تعمیر کی شدید مخالفت کی تھی اور انہوں نے بھی 84 دن تک بھو ک ہڑتال کی تھی ۔ایک بار انہوں نے احتجاج کے طور پر اپنا سر بھی منڈوا دیا تھا۔ان کا گھر ٹہری ڈیم ڈیم کے ذخیرے میں ڈوب گیا تھا۔ جس کے بعد حکومت کے خلاف احتجاج میں جیل گئے اوراس طرح ٹہری ڈیم کی تعمیر کے خلاف احتجاج کامیاب رہا ۔ وہ ہمالیہ میں ہوٹلوں اور عیش و آرام کی سیاحتی اداروں کے قیام کی بھی مخالفت کیا کرتے تھے۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: May 21, 2021 05:03 PM IST