سیتارام یچوری کوسپریم کورٹ نے دی کشمیرجانے کی اجازت، ساتھ رکھی یہ شرط

سپریم کورٹ نے لیفٹ لیڈرسیتا رام یچوری کوبھی سری نگرجانے کی اجازت دے دی ہے۔ یچوری نےاپنے رکن اسمبلی محمد یوسف تاریگامی سے ملنے کی اجازت مانگی تھی۔ اس پرچیف جسٹس سے ملنےکی اجازت دیں گے، لیکن اس دوران آپ کچھ اورکام نہیں کرپائیں گے۔

Aug 28, 2019 03:49 PM IST | Updated on: Aug 28, 2019 03:51 PM IST
سیتارام یچوری کوسپریم کورٹ نے دی کشمیرجانے کی اجازت، ساتھ رکھی یہ شرط

سی پی ایم کے جنرل سکریٹری سیتا رام یچوری۔

نئی دہلی: کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا (سی پی ایم) کے سکریٹری جنرل سیتا رام یچوری سپریم کورٹ کےبدھ کوفیصلےکے پیش نظراپنی پارٹی کے بیمارلیڈرمحمد یوسف تاریگامی کی عیادت کےلئےجمعرات کوکشمیرجائیں گے۔ سیتا رام یچوری نےآج جموں وکشمیرکےگورنر ستیہ پال ملک کوخط لکھ کرانہیں اس بات کی اطلاع دی ہے۔ انہیں سپریم کورٹ نےحکم دیا ہےکہ وہ اپنے معاون محمد یوسف تاریگامی کی عیادت کےلئے جاسکتے ہیں اس لئے وہ کل کشمیرآرہے ہیں۔

ستیہ پال ملک نےملک کوخط میں لکھا ہےکہ ان کی صحت ٹھیک نہیں ہے، اس لئےانہیں اپنے ساتھ ایک معاون لےجانے کی اجازت دی جائے۔ سیتا رام یچوری نےیہ بھی کہا ہےکہ انہیں امید ہےکہ ستیہ پال ملک اس بات کویقینی بنائیں گےکہ وہ یوسف تاریگامی سےان کی ملاقات ہوکیونکہ گزشتہ مرتبہ جب سیتا رام یچوری کشمیرگئےتھے، توانہیں ہوائی اڈے سے ہی واپس بھیج دیا گیا تھا۔

سیتا رام یچوری اس کےبعد لوٹ آئے اورانہیں محمد یوسف تاریگامی کے حبس بے جا کی عرضی دائرکی جس سے متعلق عدالت نےآج فیصلہ سنایا ہےکہ سیتا رام یچوری ان سےملنے جاسکتے ہیں۔ عدالت نے یہ بھی کہا ہےکہ سیتا رام یچوری، تاریگامی سے ملنے کے بعد ان کےصحت کے بارے میں اپنی رپورٹ بھی انہیں سونپیں۔

Loading...

سپریم کورٹ سپریم کورٹ

عدالت نے یچوری کودی یہ وارننگ

عدالت نے یچوری سے واضح طورپرکہا کہ آپ دھیان رکھیں۔ آپ کوصرف دوست سے ملنے جانے کی اجازت دے رہے ہیں۔ وہاں جاکرآپ کوئی سیاسی سرگرمی نہیں کرسکتے۔ آپ وہاں کسی اورکام میں حصہ لیں گے، تواسے عدالت کی خلاف ورزی مانی جائے گی۔ اس پرسی پی آئی جنرل سکریٹری نے کہا کہ وہ احکامات پرمکمل طورپرعمل کریں گے۔

Loading...