ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

تبلیغی جماعت نے شمال مشرقی دہلی فساد کنکشن کو کیا مسترد، ترجمان نے دہلی پولیس سے متعلق کہی یہ بات

دہلی پولیس نے اپنی چارج شیٹ میں واضح طور پر کہا ہے کہ فساد کی سازش کا ملزم راجدھانی اسکول کا مالک فیضل فاروق تبلیغی جماعت کے سربراہ مولانا سعد کے قریبی علیم کے رابطے میں تھا جبکہ تبلیغی جماعت نے اس الزام کو مسترد کردیا ہے۔

  • Share this:
تبلیغی جماعت نے شمال مشرقی دہلی فساد کنکشن کو کیا مسترد، ترجمان نے دہلی پولیس سے متعلق کہی یہ بات
تبلیغی جماعت نے شمال مشرقی دہلی فساد کنکشن کو کیا مسترد

نئی دہلی: شمال مشرقی دہلی میں ہوئے فسادات معاملے میں تبلیغی جماعت کنکشن سامنے آیا ہے۔ دہلی پولیس نے اپنی چارج شیٹ میں صاف طور پر کہا ہے کہ فساد کی سازش کا ملزم راجدھانی اسکول کا مالک فیضل فاروق تبلیغی جماعت کے سربراہ مولانا سعد کے قریبی علیم کے رابطے میں تھا تو وہیں اس معاملے میں تبلیغی جماعت کی طرف سے ترجمان اور ایڈوکیٹ مجیب الرحمن نے دہلی پولیس کی چارج شیٹ اور دعوے کو مسترد کردیا ہے۔


نیوز 18 اردو سے بات کرتے ہوئے مجیب الرحمن نے کہا کہ دہلی پولیس کی یہ گھٹیا تھیوری ہے کہ مسلمانوں کو نشانہ بنانے کے لئے اس طرح کی کی تھیوری لائی گئی ہے، جس کو عدالت میں ثابت کرنا پڑے گا۔ پولیس کے ذریعے بہت ساری کہانیاں بنائی جاتی ہیں، لیکن عدالت میں ان کے ثابت نہیں کر پانے پر ملزم بری ہوجاتے ہیں یہ تھیوری کرونا وائرس کو لے کر سرکار کی ناکامی کو چھپانے کے لئے سامنے لائی گئی ہے۔




واضح رہے کہ دہلی پولیس کی ٹیم کی جانب  سے شمال مشرقی فساد سازش معاملے میں چارج شیٹ داخل کی گئی ہے جس میں تبلیغی جماعت سے کنکشن سے متعلق بھی الزام تراشی کی گئی ہے۔ بلکہ راجدھانی اسکول کے مالک فیضل فاروق کو ملزم بنایا گیا ہے۔ راجدھانی اسکول کی چھت  پر مبینہ طور پر بڑی دلیل پائی گئی تھی جب کہ قریبی اسکول کو بھی نقصان پہنچا تھا۔ چارج شیٹ میں کہا گیا ہے کہ فسادیوں کا مقصد ڈی پی آر اسکول کو نقصان پہنچانا تھا۔

 
First published: Jun 04, 2020 08:31 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading