உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Take Care In Summer: اگر لو لگ گئی ہے تو یہ ہیں دیسی تدابیر، جنہیں کرتے ہی آپ کو ہونے لگے گا فائدہ

    Take Care In Summer: اگر لو لگ گئی ہے تو یہ ہیں دیسی تدابیر، جنہیں کرتے ہی آپ کو ہونے لگے گا فائدہ ۔ علامتی تصویر ۔

    Take Care In Summer: اگر لو لگ گئی ہے تو یہ ہیں دیسی تدابیر، جنہیں کرتے ہی آپ کو ہونے لگے گا فائدہ ۔ علامتی تصویر ۔

    Take Care In Summer: گرمی کی وجہ سے عام آدمی کا برا حال ہے۔ تیز دھوپ میں تھوڑی سی لاپروائی ہیٹ اسٹروک کا خطرہ بڑھا دیتی ہے۔ دراصل دھوپ میں جسم میں پانی کی کمی ہوتی ہے، اگر مشروبات وقت پر نہ پیئے جائیں تو لو لگ سکتی ہے۔

    • Share this:
      Take Care In Summer: گرمی کی وجہ سے عام آدمی کا برا حال ہے۔ تیز دھوپ میں تھوڑی سی لاپروائی ہیٹ اسٹروک کا خطرہ بڑھا دیتی ہے۔ دراصل دھوپ میں جسم میں پانی کی کمی ہوتی ہے، اگر مشروبات وقت پر نہ پیئے جائیں تو لو لگ سکتی ہے۔ خیال رہے کہ دھوپ میں نکلنے سے پہلے پیٹ بھرا ہونا چاہئے۔ پانی بھی پی کر باہر نکلیں، راستے میں کہیں رک جائیں اور تھوڑا تھوڑا پانی پیتے رہیں۔ اس کے باوجود اگر کسی وجہ سے آپ کو لو لگ جاتی ہے تو گھبرائیں نہیں، چند گھریلو علاج سے اس کا اثر کم کیا جا سکتا ہے۔

      آپ کو لو لگی ہے یا نہیں، اس کی علامت کو جاننا انتہائی ضروری ہے۔ ہیٹ اسٹروک کی صورت میں جسم کا درجہ حرارت بڑھ جاتا ہے۔ جسم تھکا ہوا محسوس کرتا ہے۔ جسم میں حرارت کا احساس ہوتا ہے۔ اگر ایسی کوئی علامت نظر آئے تو سمجھ لینا چاہئے کہ آپ کو لو لگ گئی ہے ۔ لو کیلئے کچھ ابتدائی علاج گھر پر ہی کئے جا سکتے ہیں۔

       

      یہ بھی پڑھئے : عید پر موسم گرما میں خوبصورت نظر آنے کیلئے اپنائیں یہ Skin Care Tips: ڈاکٹر شیلا اگروال


      لو سے بچنے کے لئے دھوپ میں کھلے بدن میں نہ جائیں، دھوپ میں نکلتے وقت سر کو ڈھانپ لیں ۔ جسم کو شدید گرمی سے بچانے کیلئے ہلکے رنگ کے سوتی کپڑے ہی پہنیں۔ ٹھنڈ سے گرم، یا گرم سے اچانک ٹھنڈی جگہوں پر نہ جائیں۔ سلاد ضرور کھائیں، اس میں کچا پیاز روزانہ کھائیں۔

       

      یہ بھی پڑھئے : پیاز گرمیوں کی سپر فوڈ ہے، اسے جیب میں رکھ کر Heatstroke کو کہیں بائے: جانئے اس کے حیرت انگیز فائدے


      اگر آپ کو لو لگنے کا احساس ہوتا ہے تو ڈاکٹر سے مشورہ کریں۔ ابتدائی طبی امداد کے طور پر لو کے کچھ گھریلو علاج کئے جا سکتے ہیں۔ سب سے پہلے کھلی ہوا میں رہیں۔ تیز بخار کی صورت میں پیشانی پر ٹھنڈے پانی کی پٹی رکھنی چاہئے۔ گیلے تولیہ سے پورے جسم کو پوچھنے کا عمل دن میں دو یا تین مرتبہ کریں ۔ ٹھنڈا پانی ضرور پینا چاہیے لیکن خیال رہے کہ فرج کا نہیں بلکہ مٹکا یا صراحی کا پانی پینا چاہئے ۔

      نوٹ : یہ تمام تدابیر سبھی مریضوں کے لیے مفید نہیں ہیں، کسی بھی علاج سے پہلے ڈاکٹر سے مشورہ آخری اور موثر تدبیر ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: