ہوم » نیوز » وطن نامہ

میڈ ان انڈیا نہیں پاکستانی ہے Mitron ایپ، 2600 روپئے میں خریدا گیا سورس کوڈ

تیزی سے مقبول ہورہی ویڈیو شیئرنگ ایپ متروں (Mitron) کو لے کر ایک اہم جانکاری سامنے آئی ہے۔ نیوز18 کی رپورٹ کے مطابق ٹک ٹاک کو ٹکر دینے والی یہ متروں ایپ میڈن انڈیا نہیں ہے اور نہ ہی اسے کسی IIT کہ اسٹوڈنٹ نے بنایا ہے۔

  • Share this:
میڈ ان انڈیا نہیں پاکستانی ہے Mitron ایپ، 2600  روپئے میں خریدا گیا سورس کوڈ
تیزی سے مقبول ہورہی ویڈیو شیئرنگ ایپ متروں (Mitron) کو لے کر ایک اہم جانکاری سامنے آئی ہے۔

تیزی سے مقبول ہورہی ویڈیو شیئرنگ ایپ متروں (Mitron) کو لے کر ایک اہم جانکاری سامنے آئی ہے۔ نیوز18 کی رپورٹ کے مطابق ٹک ٹاک کو ٹکر دینے والی یہ متروں ایپ میڈن انڈیا نہیں ہے اور نہ ہی اسے کسی IIT کہ اسٹوڈنٹ نے بنایا ہے۔ نیوز18 نے پایا کہ متروں ایپ کا پورا سورس کوڈ جس میں سارے فیچرز اور یوزرس انٹرفیس موجود ہے، اسے پاکستانی سافٹ ویئر کمپنی Qboxus کے فاؤنڈر اور چیف ایگزیکٹیو عرفان شیخ کے مطابق ان کی کمپنی نے ایپ کا سو رس کوڈ متروں کے پرموٹر کو $34 یعنی کہ کہ تقریبا2600 روپے میں بیچا ہے۔

نیو ز 18 سے بات چیت میں عرفان شیخ نے بتایا ہم امید کرتے ہیں کہ ہمارے کسٹمر ہمارے کو ڈ کا استعمال کرکے کچھ پروڈکٹ بنائیں۔ لیکن Mitron کے ڈویلپر نے ہو بہو ہمارا پروڈکٹ لے لیا۔ انہوں نے صرف اس کا لوگو Logo بدل کر اپنے اسٹور پر اپلوڈ کر دیا۔

عرفان شیخ نے ساتھ ہی کہا کہ ڈویلپر نے جو کیا ہے اس سے کوئی پریشانی نہیں ہے۔ کیونکہ اس نے اسکپٹ کے لئے پیسے دیے تھے جس کا اس نے استعمال کیا۔ لیکن دقت یہ ہے کہ لوگ اسے ہندوستانی ایپ بتا رہے ہیں جو کہ سچ نہیں ہے اور خاص طور پر تب جب انہوں نے اس میں کوئی تبدیلی نہیں کی ہے۔ عرفان شیخ نے آگے کنفرم کیا کہ کمپنی نے ایپ کو Mitron کو Codecanyon پر 34$ میں بیچا ہے جو کہ تقریبا 2600 روپے ہے۔

اس کے علاوہ جب ان سے ڈیٹا ہوسٹنگ کے بارے میں پوچھا گیا تو شیخ نے بتایا کہ Qboxus یوزر کے ڈیٹا کو ان کے خود کے سر ور پر ہوسٹ کرنے کا آپشن دیتا ہے۔ لیکن متروں نے اس options کو نہیں چنا اور اسے اپنے سرور پر ہوسٹ کو سلیکٹ کیا۔ حالانکہ ابھی تک متروں کے یوزر ڈیٹا کے ٹریٹمینٹ کو لے کر کوئی کوئی وضاحت نہیں ہے۔

نیوز 18 کے سوالوں کے ای میل کے جواب میں ایک کامرس شاپ کلر (Mitron ایپ کا پرموٹر) نے کہا ہم اپنا کام چپکے سے کرنا چاہتے ہیں اور نہیں چاہتے ہیں کہ لوگ ہمیں ہمارے نام سے جا نیں۔ مجھے آرٹیکل تھوڑا مایوس کن لگا۔ ہم آپ سے چاہتے ہیں کہ آپ اس حقیقت کی سراہنا کریں کہ ہم ایپ پر سخت محنت کر رہے ہیں اور ایپ کو بنانے کا مقصد صرف لوگوں کو میک ان انڈیا کا آپشن دینا تھا۔

اس سے پہلے رپورٹ آئی تھی لانچ ہونے کے ایک مہینے کے اندر متروں ایپ کو گوگل پلے اسٹور سے 5 ملین ((50لاکھس) سے زیادہ ڈاؤن لوڈ کیا جا چکا ہے ساتھ ہی یہ بھی سامنے آیا تھا کہ اسے IIT Roorkee کے اسٹوڈینٹ نے بنایا ہے۔
First published: Jun 07, 2020 01:51 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading