உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مرکزی وزیر مختار عباس نقوی کے سر پر گرگئی چھت، ساتھ میں ریاستی وزیر بلدیو اولکھ

    مرکزی وزیر مختار عباس نقوی کے سر پر گرگئی چھت

    مرکزی وزیر مختار عباس نقوی کے سر پر گرگئی چھت

    UP News: رامپور میں ہنرہاٹ کی تیاریوں کا جائزہ لینے پہنچے مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور مختار عباس نقوی کے سر پر پریس کانفرنس کے دوران چھت گر گئی۔ حالانکہ اس دوران وہاں موجود سبھی لوگ بال بال بچ گئے اور کسی کو چوٹ نہیں پہنچی۔

    • Share this:
      رامپور: اترپردیش کے رامپور میں اپنے 4 روزہ دورے پر پہنچے مرکزی وزیر مختار عباس نقوی جمعرات کو بڑے حادثے کا شکار ہوگئے۔ وہ 16 اکتوبر سے ہونے والے ہنر ہاٹ کی تیاریوں کا جائزہ لینے کے لئے ریاستی وزیر بلدیو اولکھ کے ساتھ پہنچے تھے۔ تیاریوں کا جائزہ لینے کے بعد جب وہ صحافیوں سے بات چیت کے لئے کانفرنس میں پہنچے تو وہاں کی چھت گر گئی۔ اس دوران مختار عباس نقوی، ریاستی وزیر بلدیو اولکھ اور ڈی ایم رویندر کمار اس کے نیچے تھے۔ غنیمت یہ رہی کہ کسی کو بھی اس دوران چوٹ نہیں لگی اور سبھی بال بال بچ گئے۔

      واضح رہے کہ ہنر ہاٹ کا افتتاح مرکزی وزیر دھرمیندر پردھان کریں گے۔ اس دوران ان کے ساتھ پارلیمانی امور اور تہذیب وثقافت کے وزیر ارجن رام ویدوال بھی موجود رہیں گے۔ یہ ہنرہاٹ 16 اکتوبر سے 25 اکتوبر تک چلے ا۔ اس میں تقریباً تیس ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام ریاستوں کے دستکار اور کاریگر حصہ لیں گے۔

      پورے ملک کا ہنر رامپور میں ملے گا

      مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور مختار عباس نقوی نے پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ اس ہنر ہاٹ میں پورے ملک کے دستکاروں، کرافٹ مین، کاریگروں اور ہنر کے استادوں کو موقع اور بازار ایک ہی جگہ پر ملے گا۔ انہوں نے بتایا کہ کشمیر سے لے کر کنیا کماری سے کٹک تک، کولکاتا سے اودھ تک، رامپور سے دہلی تک، آگرہ سے پنجاب، ہریانہ تک سبھی شہروں کے پکوان آپ کو یہاں پر ملیں گے۔ انہوں نے کہا کہ نمائش گراؤنڈ، پن وَڑِیا، رام پور میں منعقد ہونے والے’ہنر ہاٹ‘ میں تیس (30) سے زائد ریاستوں اور مرکز کے زیرِ انتظام علاقوں کے تقریباً 700 دستکار، فنکار، کاریگر اپنے ہاتھوں سے تیار دیسی مصنوعات کو نمائش اور فروخت کے لئے لائے ہیں۔ اِس 29/ ویں ’ ہنر ہاٹ‘ میں اترپردیش، اتراکھنڈ ، راجستھان، دہلی، ناگالینڈ، مدھیہ پردیش، منی پور، بہار، آندھرا پردیش، جھارکھنڈ، گوا، پنجاب، لداخ، کرناٹک، گجرات، ہریانہ، جموں وکشمیر، مغربی بنگال، مہاراشٹر، چھتیس گڑھ، تمل ناڈو، کیرالہ اور دیگر علاقوں سے ہنر کے استاد کاریگر اپنے ساتھ لکڑی، براس، بانس، شیشے، کپڑے، کاغذ، مِٹی وغیرہ کی شاندار مصنوعات لے کر آئے ہیں۔

      مختار عباس نقوی نے کہا کہ ’ہنر ہاٹ‘ میں ، ’کباڑ سے کمال‘ کو حوصلہ بخشتے ہوئے پھینک دیئے جانے والے لوہے، ربر، پلاسٹک، کپڑے، شیشے، پیتل، تانبہ، سیرامِک، لکڑی وغیرہ سے بنی ہوئی اشیاء، ’ہنر ہاٹ‘ آنے والے لوگ دیکھ اور خرید سکیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ملک کے ہر کونے سے روائتی خصوصی پکوانوں کا سیکشن ”باورچی خانہ“ میں ایک ہی جگہ پر بھارت کے سبھی علاقوں کے پکوان ہوں گے۔ ان روایتی پکوانوں میں اودھ، رام پور، حیدرآباد، مہاراشٹر، گوا، بہار، راجستھان، شمال مشرق، اوڈیشہ، مغربی بنگال، دہلی، ہریانہ، پنجاب، میسور، وغیرہ کے لذیذ کھانوں سے لوگ لطف اندوز ہو سکیں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ رام پور میں منعقد ہو رہے ’ہنر ہاٹ‘ میں ہر روز شام میں مشہور فنکار مثلاً پنکج اودھاس، اَنّو کپور، سدیش بھونسلے، کمار سانو، الطاف راجہ، وِنود راٹھوڑ، نظامی برادران، وِویک مِشرا، نیلم چوہان، ریکھا راج، پریم بھاٹیہ، نورین سِسٹرس، جونئیر محمود جیسے مشہور و معروف فنکار شاندار گیت، سنگیت اور غزل پیش کریں گے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: