ہوم » نیوز » عالمی منظر

کشمیر پر بیان بازی اور پاکستان سے دوستی ملیشیا کو پڑی مہنگی ، اب ہندوستان سے کرنا چاہتا ہے بات چیت

ہندوستان میں خوردنی تیل کا ایک تہائی حصہ پام آئل کا ہے ۔ ہندوستان سالانہ تقریبا 9 ملین ٹن پام آئل کی درآمد کرتا ہے ۔

  • Share this:
کشمیر پر بیان بازی اور پاکستان سے دوستی ملیشیا کو پڑی مہنگی ، اب ہندوستان سے کرنا چاہتا ہے بات چیت
کشمیر پر بیان بازی اور پاکستان سے دوستی ملیشیا کو پڑی مہنگی ، اب ہندوستان سے کرنا چاہتا ہے بات چیت

جموں و کشمیر پر بیان بازی اور پاکستان سے دوستی ملیشیا کو مہنگی پڑتی نظر آرہی ہے ۔ ہندوستان نے ملیشا سے پام آئل کی درآمد میں تخفیف کردی ہے۔ لہذا وہاں پام آئل کی قیمتیں 11 سالوں کی نچلی سطح تک پہنچ گئی ہیں ۔ پام آئل کا دوسرا سب سے بڑا ملک ملیشیا ہے۔ قیمتوں میں کمی کی وجہ سے ملیشیا کافی پریشان ہے اور اب وہ دوبارہ ہندوستان سے بات چیت کرنے کی تیاری کر رہا ہے ۔


خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق ملیشیا کے وزیر تجارت ڈیرل لیکنگ اگلے ہفتے داووس میں ورلڈ اکنامک فورم کے اجلاس کے موقع پر اپنے ہندوستانی ہم منصب پیوش گوئل سے ملاقات کرسکتے ہیں ۔ فی الحال اس اجلاس کے لئے کوئی ایجنڈا طے نہیں کیا گیا ہے ، لیکن مانا جارہا ہے کہ پام آئل کی درآمدات پر بات چیت ہوسکتی ہے ۔ ادھر پیوش گوئل نے کہا کہ حکومت نے ملیشیا کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کی ہے ۔ کہا جارہا ہے کہ ہندوستان بھی ملیشیا کے ساتھ اچھے تعلقات برقرار رکھنا چاہتا ہے ۔ ملیشیا میں ہندوستانی نژاد 10 لاکھ سے زیادہ افراد کام کرتے ہیں ۔


ہندوستان میں خوردنی تیل کا ایک تہائی حصہ پام آئل کا ہے ۔ ہندوستان سالانہ تقریبا 9 ملین ٹن پام آئل کی درآمد کرتا ہے ۔ زیادہ تر یہ انڈونیشیا اور ملیشیا سے درآمد کیا جاتا ہے ۔ تاہم حکومت کی وارننگ کے بعد اب ہندوستان کے پام آئل امپورٹرس انڈونیشیا سے پام آئل 10 ڈالر فی ٹن پریمیم ریٹ پر درآمد کررہے ہیں ۔


بتادیں کہ کچھ عرصے سے ایشیائی ملک ملیشیا کشمیر ، سی اے اے اور این آر سی جیسے معاملات پر ہندوستان کی مخالفت کرتا رہا ہے ۔ علاوہ ازیں وہ اسے بین الاقوامی فورموں پر بھی اٹھا رہا ہے ۔ صرف یہی نہیں اس نے ڈاکٹر ذاکر نائک کو بھی پناہ دے رکھی ہے ، جو گزشتہ تین سالوں سے ہندوستان سے فرار ہیں ۔

یہی نہیں گزشتہ سال اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں ملیشیا کے وزیر اعظم مہاتیر محمد نے جموں وکشمیر سے آرٹیکل 370 کو ہٹانے پر ہندوستان پر نشانہ سادھا تھا ۔ مہاتیر محمد نے ہندوستان اور پاکستان کو بھی اس معاملہ پر بات چیت کرنے کا مشورہ دیا تھا۔
First published: Jan 19, 2020 04:33 PM IST