ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Toolkit Case: دشا روی کو جھٹکا ، کورٹ نے تین دنوں کی عدالتی تحویل میں بھیجا

Toolkit case: ٹول کٹ کیس میں دہلی کی پٹیالہ ہاوس کورٹ نے دشا روی کو تین دنوں کی عدالتی تحویل میں بھیج دیا ہے ۔ بتادیں کہ دشا کی پولیس حراست کی مدت آج ختم ہورہی تھی ۔

  • Share this:
Toolkit Case: دشا روی کو جھٹکا ، کورٹ نے تین دنوں کی عدالتی تحویل میں بھیجا
Toolkit Case: دشا روی کو جھٹکا ، کورٹ نے تین دنوں کی عدالتی تحویل میں بھیجا

ٹول کٹ کیس میں دہلی کی پٹیالہ ہاوس کورٹ نے دشا روی کو تین دنوں کی عدالتی حراست میں بھیج دیا ہے ۔ بتادیں کہ دشا کی پولیس ریمانڈ کی مدت آج ختم ہورہی تھی ۔ کسان آندولن سے وابستہ ماحولیاتی کارکن دشا روی پر ٹول کٹ کو مبینہ طور پر ایڈٹ کرنے کا سنگین الزام لگا ہے ۔ غور طلب ہے کہ دشا کی گرفتاری پر کانگریس سمیت کئی اپوزیشن پارٹیوں نے سرکار پر نشانہ سادھا تھا ۔


دشا روی کو تین زرعی قوانین کے خلاف کسانوں کی احتجاج سے وابستہ ٹول کٹ کو مبینہ طور پر ایڈٹ کرکے اس کو سوشل میڈیا پر شیئر کرنے کے الزام میں دہلی پولیس کی اسپیشل سیل کی ٹیم نے 13 فروری کو بنگلورو کے سولادیون ہللی علاقہ میں اس کے گھر سے گرفتار کیا تھا ۔ دشا روی بنگلورو کے ایک پرائیویٹ کالج سے بی بی اے کی ڈگری ہولڈر ہیں اور وہ فرائڈیز فار فیوچر انڈیا نام کی تنظم کی فاونڈر ممبر بھی ہیں ۔




اس سے پہلے گریٹا تھنبرگ ٹول کٹ معاملہ میں دشا روی کوپانچ دنوں کی پولیس ریمانڈ پر بھیج دیا گیا تھا ۔ اس ماہ کی چار تاریخ کو دہلی دہلی پولیس نے ٹول کٹ کو لے کر کیس درج کیا تھا ۔ دہلی پولیس نے عدالت میں دشا کی سات دنوں کی ریمانڈ مانگی تھی ۔

پولیس کا کہنا تھا کہ یہ خالصتانی گروپ کو دوبارہ کھڑا کرنے اور ہندوستان کے خلاف ایک بڑی سازش ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Feb 19, 2021 05:16 PM IST