'یہ حادثہ نہیں بلکہ ریلوے کی طرف سے کیا گیا قتل ہے'

ہردا۔ مدھیہ پردیش کے ہردا میں ہوئے المناک ٹرین حادثے کی وجوہات کو لے کر الگ الگ دعوے کئے جا رہے ہیں۔

Aug 05, 2015 11:26 AM IST | Updated on: Aug 05, 2015 11:26 AM IST
'یہ حادثہ نہیں بلکہ ریلوے کی طرف سے کیا گیا قتل ہے'

ہردا۔ مدھیہ پردیش کے ہردا میں ہوئے المناک ٹرین حادثے کی وجوہات کو لے کر الگ الگ دعوے کئے جا رہے ہیں۔ ریلوے کا کہنا ہے کہ اچانک آئے پانی کے تیز بہاؤ سے ٹریک کو نقصان پہنچا ہو گیا جس کی وجہ سے ٹرینوں کے ڈبے پٹری سے اتر گئے، وہیں علاقے کے ممبر اسمبلی نے اسے ریلوے کی لاپرواہی کا نتیجہ بتاتے ہوئے یہاں تک کہہ دیا کہ یہ حادثہ نہیں بلکہ ریلوے کی طرف سے کیا گیا قتل ہے۔

ہردا سے کانگریس ممبر اسمبلی آر کے ڈونگنے نے آئی بی این خبر سے بات چیت میں کہا کہ یہ انتہائی المناک حادثہ ہے لیکن اس میں ریلوے کے مقامی ملازمین کی لاپرواہی نظر آ رہی ہے۔ پٹرياں ٹوٹ گئیں اور پانی میں بہہ گئیں لیکن ریلوے کے ملازمین نے توجہ نہیں دی جس کی وجہ سے یہ حادثہ ہوا۔

Loading...

 

ریلوے کے پی آر او کے اس بیان پر کہ اچانک پانی آنے سے ٹریک بہہ گیا، ممبر اسمبلی ڈونگنے نے کہا کہ وہاں بیٹھ کر پی آر او کی طرف سے باتیں بنا دینا آسان ہے لیکن ہم یہاں کی حقیقت جانتے ہیں۔ یہ ایک دن کی بات نہیں ہے۔ سالوں سے یہاں پانی کا ایسا ہی بہاؤ ہے۔ چھوٹا بچہ بھی جائے تو وہ حادثہ کو دیکھ کر بتا دے گا کہ کس طرح کی لاپرواہی ہوئی ہے۔

ڈونگنے نے کہا کہ ہر سال یہاں ایسی ہی بارش ہوتی ہے۔ یہ ٹریک کافی دنوں سے ڈیمیج ہوتا رہا ہو گا۔ عینی شاہدین تو یہ کہہ رہے ہیں کہ یہ حادثہ نہیں بلکہ ریلوے کی طرف سے کیا گیا قتل ہے۔ میں مطالبہ کروں گا کہ وزیر ریل اور وزیر اعظم خود آئیں اور یہاں کے حالات دیکھیں۔

Loading...