உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Twin Towers:ملک میں پہلی مرتبہ گرائی جائیں گی اتنی اونچی عمارتیں، کئی سیکورٹی ایجنسیاں مورچے پر ہیں تعینات

    Twin Tower Demolition: آج توڑدئیے جائیں گے یہ ٹوئن ٹاورس۔

    Twin Tower Demolition: آج توڑدئیے جائیں گے یہ ٹوئن ٹاورس۔

    Twin Towers: اتھارٹی کا محکمہ باغبانی پارکوں میں درختوں اور پودوں کے تحفظ کے لیے کام کرے گا۔ اے ٹی ایس اور ایمرالڈ کورٹ میں 50-50 مزدور صفائی کا کام کریں گے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Noida | New Delhi | Madhya Pradesh | Goalpara | Aurangabad [Aurangabad]
    • Share this:
      Twin Towers: سیکٹر-93اے ایمرالڈ کورٹ ٹوئن ٹاور کے ایپکس ٹاور کی اونچائی 100 میٹر ہے تو سیان کی اونچائی 97 میٹر ہے۔ ملک میں پہلی مرتبہ اتنی اونچی عمارتیں آج اتوار کو دوپہر 2:30 بجے دھماکے کے ساتھ منہدم کردی جائیں گی۔ اس کو محفوظ طریقے سے منہدم کرنے کے لئے سبھی ایجنسیوں نے ایڑی چوٹی کا زور لگارکھا ہے۔

      نوئیڈا اتھارٹی، سینٹرل بلڈنگ ریسرچ انسٹی ٹیوٹ، ایڈیفیس انجینئرنگ، جیٹ ڈیمولیشن، آئی آئی ٹی چنئی، محکمہ آلودگی، فائر ڈپارٹمنٹ، واٹر ڈپارٹمنٹ، محکمہ صحت عامہ، ضلع محکمہ صحت، انوائرنمنٹ کنزرویٹر، اینیمل کنزرویٹر، آر ڈبلیو اے اور اپارٹمنٹ آنر ایسوسی ایشن، سول پولیس، ٹریفک پولیس سمیت تمام ایجنسیاں الرٹ ہیں۔ میٹنگوں کے کئی دور ہوچکے ہیں۔ آخر میں تیاری کا اندازہ لگایا گیا ہے. ٹوئن ٹاورز کے اردگرد کی عمارتوں کی مضبوطی کی جانچ کی گئی ہے اور کمزور عمارتوں کی مرمت کی گئی ہے۔

      ایسے سنبھالیں گے مورچہ
      اتھارٹی کا محکمہ باغبانی پارکوں میں درختوں اور پودوں کے تحفظ کے لیے کام کرے گا۔ اے ٹی ایس اور ایمرالڈ کورٹ میں 50-50 مزدور صفائی کا کام کریں گے۔ 50 دیگر اہلکاروں کے علاوہ چار مکینیکل سویپنگ مشینیں مٹی کی صفائی کے لیے استعمال کی جائیں گی۔ ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے محاذ کو سنبھالنے کے لیے این ڈی آر ایف کے 50 ارکان کی ایک ٹیم ہوگی۔ اسموگ گنز دھول سے بچانے کے لیے کام کریں گی۔

      یہ بھی پڑھیں:

      Madhya Pradesh: ضابطہ کی خلاف ورزی کرنے والے مدارس کے خلاف ہوگی کارروائی

      یہ بھی پڑھیں:
      MP News: بھوپال ڈی بی مال میں نماز پڑھنے کو لے کر شروع ہوا تنازع، جانئے کیا ہے پورا معاملہ

      صبح سے ہی بند رہیں گی دکانیں اور بازار
      آس پاس کے دکانداروں کو کہا گیا ہے کہ وہ شام تک جگہ خالی کردیں۔ صبح سات بجے ان کے لئے آخری موقع ہوگا۔ اس دوران گیزا بازار پوری طرح سے بند ہوجائے گا۔ چاہے وینڈر زون ہو یا پھر بازار، سب پوری طرح سے بند رہے گا۔ شام میں کلیئرنگ ملنے کے بعد ہی بازار کھل پائیں گے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: