உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    انٹیگرل یونیورسٹی میں انڈو۔۔ازبیک میٹ اور بین الاقوامی کانفرنس کاانعقاد، مقررین کا اظہارِخیال

     دوروزہ کانفرنس کی افتتاحی تقریب میں ملک وبیرونِ ملک کی ممتاز شخصیات  کی شرکت

    دوروزہ کانفرنس کی افتتاحی تقریب میں ملک وبیرونِ ملک کی ممتاز شخصیات کی شرکت

    ازبیکستان،تاشقند کے خصوصی وفد کی نمائندگی کررہے مہمان سربراہوں ، پروفیسر نارتوجی اور پروفیسر بوترعثمانوو نے بھی اس مشترکہ کانفرنس کی اہمیت اور افادیت پر اظہار خیال کرتے ہوئےکہا کہ انٹیگرل یونیورسٹی کی اس پیش رفت سے نہ صرف ہندوستان وازبیکستان کے رشتے مزید مستحکم ہوں گے بلکہ تعلیم وتحقیق کے میدان میں بھی نئی راہیں کھلیں گی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Lucknow, India
    • Share this:
    انٹیگرل یونیورسٹی کے سینٹرل ایڈیٹوریم میں ڈپارٹمنٹ آف بایو ٹیکنالوجی اور تاشقند کیمیکل ٹیکنالوجیکل انسٹی ٹیوٹ کے باہمی اشتراک سے اہم کانفرنس منعقد کی گئی ۔اس دوروزہ کانفرنس کی افتتاحی تقریب میں ملک وبیرونِ ملک کی ممتاز شخصیات نے،خوردنی اشیا کی پیداوار،تحفظ ،مطالبات اور وقت کے تقاضوں کے پیش نظر بڑھتی ضرورتوں کے حوالوں اور موضوع کی مناسبت سے معنی خیزاظہارکیا۔

    انٹیگرل یونیورسٹی کے بانی وچانسلر پروفیسر سید وسیم اختر کی سرپرستی میں منعقدہ اس کانفرنس میں ڈاکٹر شنڈی واسودیوپّا نے مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کی، ازبیکستان،تاشقند کے خصوصی وفد کی نمائندگی کررہے مہمان سربراہوں ، پروفیسر نارتوجی اور پروفیسر بوترعثمانوو نے بھی اس مشترکہ کانفرنس کی اہمیت اور افادیت پر اظہار خیال کرتے ہوئےکہا کہ انٹیگرل یونیورسٹی کی اس پیش رفت سے نہ صرف ہندوستان وازبیکستان کے رشتے مزید مستحکم ہوں گے بلکہ تعلیم وتحقیق کے میدان میں بھی نئی راہیں کھلیں گی۔

    اس موقع پر اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ کے صلاح کار ومشیرجناب جی این سنگھ نے بھی اپنی تقریر میں کہاکہ اس انداز کی کانفرنسز سے طلبا وطالبات کو تو نئی روشنی ملتی ہی ہے ساتھ ہی موضوع کی مناسبت سے وضع کی جانے واللی مستقبل کی حکمت عملی اور لائحہ عمل میں بھی مدد ملتی ہے ، انٹیگرل یونیورسٹی نے ایک ایسے موضوع کا انتخاب کیاہے جس کی اس وقت شدید ضرورت ہے انہوں نے مزید کہاکہ خوردنی اشیا کے تحفظ اور پیداوار بڑھانے کے باب میں وزیر اعظم نریندر مودی جی اور اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ جی خود بہت کام کررہے ہیں۔

    یہ پڑھیں

    اس اہم کانفرنس کی افتتاحی تقریب میں پروفیسر اشونی پاریک، ڈاکٹر شری دیوی انا پورنا سنگھ ،انٹیگرل یونیورسٹی کے پروچانسلر ڈاکٹر ندینم اختراور وائس چانسلرپروفیسر جاوید مسرت نے بھی اپنی بصیرت افروز تقریروں کے ذریعے موضوع کا حق ادا کیا۔اس موقع پر پروفیسر سید وسیم اختر نے اپنے خطاب میں واضح کیا کہ علمی اور تحقیقی میدانوں میں طلبا وطالبات کو آگے بڑھانے اور انہیں ملک وانسانیت کی خدمت کے لئے تیار کرنے کے لئے وہ ہر ممکن کوشش کرتے رہیں گے انہوں نے طلبا و طالبات کی حوصلہ افزائی کے پیش نظر ایک شعر بھی پڑھا ۔
    میں اکیلا ہی چل تھا جانبِ منزل مگر لوگ ساتھ آتے گئے اور کارواں بنتاگیا

    انہوں نے باہر سے تشریف لائے مہمانوں کا خصوصی شکریہ ادا کرتے ہوئےانہیں اعزازات اور یادگاری نشانات بھی پیش کئے۔ ڈپارٹمنٹ آف بایو انیجنئرنگ کی سربراہ ڈاکٹر الوینہ فاروقی نے استقبالیہ کلمات پیش کئے ۔یونیورسٹی کے رجسٹرار پروفیسر حارث صدیقی نے یونیورسٹی کا تعارف پیش کیاجبکہ نظامت کے فرائض ڈاکٹر صبا صدیقی نے انجام دئے،واضح رہے کہ یہ دوروزہ کانفرنس کل بھی جاری رہے گی جسمیں مباحثوں ،مقالوں اور دیگر علمی و تحقیقی پروگراموں کے ساتھ آخر میں کلچر پروگرام بھی پیش کئے جائیں گے۔
    Published by:Mirzaghani Baig
    First published: