پاکستانی ہنی ٹریپ میں پھنسےفوج کےدو جوان، جودھپورریلوے اسٹیشن سے حراست میں لئےگئے

ذرائع کےمطابق، پاکستانی خاتون کے جھانسے میں آکراسٹریٹجک معلومات بھیجنےکےملزم ان دونوں جوانوں کوایجنسیاں جودھ پورسےجے پورلےکرپہنچی ہیں۔ ان سے یہاں پوچھ گچھ کی جارہی ہے۔

Nov 06, 2019 06:46 PM IST | Updated on: Nov 06, 2019 06:46 PM IST
پاکستانی ہنی ٹریپ میں پھنسےفوج کےدو جوان، جودھپورریلوے اسٹیشن سے حراست میں لئےگئے

پاکستانی ہنی ٹریپ میں پھنسےفوج کےدو جوان

جے پور: ہندوستانی فوج (انڈین آرمی) کےدوجوانوں کے پاکستانی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کےہنی ٹریپ میں پھنسنےکا معاملہ سامنےآیا ہے۔ ملزم دونوں جوان راجستھان کے پوکرن میں تعینات تھے۔ منگل کوچھٹی پرپوکرن سےگاؤں جاتے وقت خفیہ ایجنسیوں نےانہیں جودھ پور ریلوے اسٹیشن سے حراست میں لےلیا۔

ذرائع کےمطابق، پاکستانی خاتون کے جھانسے میں آکراسٹریٹجک معلومات بھیجنےکے ملزم ان دونوں جوانوں کوایجنسیاں جودھ پورسے جے پورلےکرپہنچی ہیں۔ ان سے یہاں پوچھ گچھ کی جارہی ہے۔ راجستھان انٹلی جینس کے ایڈیشنل ڈائریکٹرجنرل اومیش مشرا کے مطابق، روایتی طورپردونوں جوانوں کا ہنی ٹریپ شکارہونا پایا گیا ہے۔ اس کی پختہ اطلاع اورجانچ کےبعد دونوں کوجودھپورریلوے اسٹیشن سے حراست میں لیا گیا ہے۔

Loading...

ایسے ہنی ٹریپ میں پھنسے فوج کے جوان

اطلاعات کےمطابق، گزشتہ ڈیڑھ سال سے ہنی ٹریپ میں پھنسےدونوں جوان اسٹریٹجک اطلاعات بھیج رہےتھے۔ ابتدائی جانچ میں فیس بک اورواٹس اپ کےذریعہ اہم اطلاعات پاکستان بھیجنا سامنےآیا ہے۔ ایک جوان مدھیہ پردیش اوردوسرا اوڈیشہ کا رہنے والا ہے۔ دونوں کوپاکستانی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی نےایک خاتون کےذریعہ ہنی ٹریپ میں پھنسایا۔ خاتون کا نام اوربولنےکا لہجہ پنجابی تھا۔ اسی کا فائدہ اٹھاکراس نےانٹرنیٹ کال کےذریعہ دونوں جوانوں کواپنے جال میں پھنسایا۔

آئی ایس آئی کےہنی ٹریپ میں پھنسےدونوں جوان پوکرن میں تعینات تھے۔ علامتی تصویر آئی ایس آئی کےہنی ٹریپ میں پھنسےدونوں جوان پوکرن میں تعینات تھے۔ علامتی تصویر

ہنی ٹریپ میں خاتون نےاپنےنام اوربولنےکےلہجےکےساتھ ہی وائس اوورانٹرنیٹ پروٹوکول (وی اوآئی پی) کا استعمال کرتے ہوئے جوانوں کوفون کیا۔ اس سے پاکستان میں رہتے ہوئے خاتون نے ہندوستانی نمبرسے جوانوں کوفون کیا۔ ملزم جوان ہندوستانی نمبردیکھ کرجھانسے میں آگئےاوراس سےاہم اطلاعات شیئرکربیٹھے۔

اطلاعات کےمطابق، دونوں جوانوں پرپوکرن میں تعیناتی کےدوران وہاں فوج کی تعیناتی، سازوسامان اورمشق وغیرہ کےاطلاعات بھیجنےکےالزامات ہیں۔ اس کےعوض ان کے کھاتوں میں پانچ پانچ ہزارروپئے جمع ہونےکی بھی بات سامنےآئی ہے۔ انٹلی جنس کے مطابق جوانوں کےخلاف پختہ اطلاعات ملنےکے بعد ان دونوں کوپکڑا گیا ہے۔

Loading...