ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مہاراشٹر: ادھو ٹھاکرے کے وزیر پر آبروریزی کا الزام، بی جے پی کا وزیر اعلیٰ سے کارروائی کا مطالبہ

حزب اختلاف کی بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی )نے بدھ کے روز وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے پر زور دیاہے کہ وہ ایک وزیر دھننجئے منڈے کے خلاف کارروائی کریں ، جس میں ایک خاتون کے ساتھ مبینہ جنسی زیادتی کا الزام ہے۔ بی جے پی خواتین کی ونگ لیڈر چترا واگ نے مطالبہ کیا کہ منڈے سے استعفی دینے کو کہا جائے اور پولیس کو غیر جانبدارانہ تحقیقات کرنی چاہئیں۔

  • UNI
  • Last Updated: Jan 14, 2021 01:01 AM IST
  • Share this:
مہاراشٹر: ادھو ٹھاکرے کے وزیر پر آبروریزی کا الزام، بی جے پی کا وزیر اعلیٰ سے کارروائی کا مطالبہ
مہاراشٹر: ادھو ٹھاکرے کے وزیر پر آبروریزی کا الزام، بی جے پی کا وزیر اعلیٰ سے کارروائی کا مطالبہ

ممبئی: مہاراشٹر میں اپوزیشن  بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی ) نے بدھ کے روز وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے پر زور دیا ہے کہ وہ ایک وزیر دھننجے منڈے کے خلاف کارروائی کریں، جن پر ایک خاتون کے ساتھ مبینہ جنسی زیادتی کا الزام ہے۔ بی جے پی خواتین کی ونگ لیڈر چترا واگ نے مطالبہ کیا کہ دھننجے منڈے سے استعفی دینےکو کہا جائے اور پولیس کو غیر جانبدارانہ تحقیقات کرنی چاہئے۔ اسی طرح سابق ممبر پارلیمنٹ کیریٹ سومیا نے الیکشن کمیشن آف انڈیا (ای سی آئی) کو اپنی شکایات کا نشانہ بناتے ہوئے 2019 کی اسمبلی میں انتخابی حلف نامہ۔ "ان کی دو بیویاں اور تمام بچوں اور ان کے ناموں میں جائیدادوں" کے بارے میں معلومات دبانے پر دھننجے منڈے کے خلاف تحقیقات اور مناسب کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

ریاست کے 45 سالہ دھننجے منڈے کے خلاف 11 جنوری کو ایک خاتون نے ممبئی پولیس میں ایک تحریری شکایت درج کروانے کے بعد ان پر کئی سالوں سے عصمت دری کا الزام لگایا گیا تھا۔ اگرچہ اوشیوارا پولیس نے ابھی تک اس بارے میں کوئی کارروائی نہیں کی ہے، یا اس معاملے میں ایف آئی آر درج نہیں کی ہے۔ دھننجے منڈے نے منگل کے روز دیر سے ایک تفصیلی سوشل میڈیا پوسٹ میں اس معاملہ میں وضاحت پیش کرنے کی کوشش کی، حالانکہ این سی پی نے ابھی تک اس تنازعہ پر کوئی تبصرہ نہیں کیا ہے۔ اس معاملے کی تفصیل دیتے ہوئے، دھننجے منڈے نے کہا- ان کے خلاف لگائے گئے الزامات جعلی، ہتک عزت آمیز ہیں اور ان کے پاس ایس ایم ایس ثبوت ہیں کہ اس عورت نے اپنے موبائل سے لاکھوں روپئے بلیک میل کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔


مہاراشٹر میں اپوزیشن بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی ) نے بدھ کے روز وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے پر زور دیا ہے کہ وہ ایک وزیر دھننجے منڈے کے خلاف کارروائی کریں، جن پر ایک خاتون کے ساتھ مبینہ جنسی زیادتی کا الزام ہے۔
مہاراشٹر میں اپوزیشن بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی ) نے بدھ کے روز وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے پر زور دیا ہے کہ وہ ایک وزیر دھننجے منڈے کے خلاف کارروائی کریں، جن پر ایک خاتون کے ساتھ مبینہ جنسی زیادتی کا الزام ہے۔


انہوں نے اعتراف کیا کہ وہ 2003 سے ایک عورت (جس کا نام کرونا شرما ہے) کے ساتھ تعلقات میں تھے، جس کے ذریعہ ان کا ایک بیٹا اور بیٹی ہے اور وہ ان کی دیکھ بھال اپنی اہلیہ اور کنبہ کے مکمل علم اور رضامندی سے کرتے ہیں۔ دھننجے منڈے نے کہا کہ انہوں نے (کرونا شرما) کے لئے انشورنس پالیسی اور ہم آہنگی کے ساتھ ایک گھر کا بندوبست کیا ہے، لیکن، 2019 سے (کرونا شرما) اور اس کی بہن (رینو شرما) نے مجھے بلیک میل کیا اور رقم کا مطالبہ کرنا شروع کردیا۔ پولیس نے ان تمام معاملات کے بارے میں بھی شکایت درج کروائی ہے، جو 12 نومبر 2020 سے ہو رہے ہیں۔
دھننجے منڈے نے کہا کہ انہیں ان کے بھائی (برجیش شرما) نے دھمکی دی تھی اور نومبر 2020 میں (کرونا شرما) نے ان سے متعلق کچھ ذاتی اور نجی مواد سوشل میڈیا پر شائع کیا تھا اور اسے بلیک میل کیا تھا۔ مندے نے کہا کہ "اسی لئے میں اس معاملے میں اپنے لئے انصاف دلانے کی کوشش کر رہا ہوں۔ (کرونا شرما) کے خلاف ہائی کورٹ میں ایک درخواست دائر کی گئی ہے۔ ہائی کورٹ نے اس کے اس طرح کے مواد کی اشاعت پر پابندی کے خلاف احکامات منظور کرلیے ہیں۔ درخواست مزید سماعت کے لئے زیر التوا ہے۔ اس دوران دونوں فریقین کے وکلاء کے ذریعہ مفاہمت کا عمل بھی جاری ہے۔ تاہم، انہوں نے کہا کہ پچھلے دو دنوں سے، (رینو شرما) شادی کے وعدے کے ساتھ مبینہ زیادتی کے جھوٹے دعوے کر رہی ہے، جو ان دونوں بہنوں اور ان کے بھائی کے ذریعہ بلیک میل کرنے کے منصوبے کا ایک حصہ ہے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Jan 13, 2021 11:59 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading