ہوم » نیوز » وطن نامہ

کورونا وائرس : ہندوستان کو ویکسین کیلئے خام مال دینے کیلئے تیار ہوا امریکہ

US India Covid 19 Cooperation : یہ اتفاق رائے امریکہ کے قومی سلامتی کے مشیر اور ہندوستان کے قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوبھال کے درمیان ہوئی بات چیت میں قائم ہوا ۔

  • Share this:
کورونا وائرس : ہندوستان کو ویکسین کیلئے خام مال دینے کیلئے تیار ہوا امریکہ
کورونا وائرس : ہندوستان کو ویکسین کیلئے خام مال دینے کیلئے تیار ہوا امریکہ

نئی دہلی : ہندوستان میں کورونا وائرس انفیکشن کی دوسری لہر کافی خطرناک ثابت ہورہی ہے ۔ ایسے میں برطانیہ نے پہلے ہندوستان کو مدد دینے کا فیصلہ کیا ۔ اس کے بعد امریکہ نے بھی ہندوستان کو ویکسین پروڈکشن ، آکسیجن سے لے کر وینٹی لینٹرس تک ہر سطح پر مدد کرنے کی بات کہی ہے ۔ یہ اتفاق رائے امریکہ کے قومی سلامتی کے مشیر اور ہندوستان کے قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوبھال کے درمیان ہوئی بات چیت میں قائم ہوا ۔ اس بات چیت میں امریکہ نے ہندوستان کو کورونا ویکسین کووی شیلڈ کیلئے خام مال دینے کیلئے اتفاق رائے بھی ظاہر کیا ہے ۔


اتوار کو امریکہ کے این ایس اے جیک سولون نے ہندوستان کے این ایس اے اجیت ڈوبھال سے فون پر بات چیت کی ۔ اس دوران انہوں نے ہندوستانیوں کے تئیں ہمدردی ظاہر کی ۔ ہندوستان اور امریکہ میں ان دنوں سب سے زیادہ کورونا بحران کے وقت بھی ایک دوسرے کا ساتھ دینے کی بات کہی ہے ۔ کورونا وبا کی شروعات میں ہندوستان نے امریکہ کو مدد بھیجی تھی ۔ اب امریکہ ہندوستان کو مدد دینے پر متفق ہوا ہے ۔


امریکہ اس دوران جلد سے جلد ہندوستان کو کورونا بحران سے لڑائی کیلئے ہر ممکن مدد دینے اور وسائل دستیاب کرانے کیلئے تیار ہے ۔ امریکہ ہندوستان میں بن رہی کورونا ویکسین کووی شیلڈ کے پروڈکشن کیلئے خام مال دینے کیلئے بھی تیار ہے۔ ہندوستان میں کورونا مریضوں کے بہتر علاج اور فرنٹ لائن ورکرس کو محفوظ رکھنے کیلئے امریکہ ضروری پی پی ای کٹ ، ٹیسٹنگ کٹ ، وینٹی لیٹرس سمیت دیگر چیزیں بھیجے گا ۔


امریکہ ہندوستان کی ہر ممکن مدد کرے گا : بلنکن

ادھر امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے کہا کہ واشنگٹن ہندوستان میں کورونا وبا کی وجہ سے پیدا ہونے والی بدترین صورتحال میں ان کے ساتھ کھڑا ہے۔ ہم ہندوستانی حکام کے ساتھ مل کر کام کر رہے ہیں اور اس کے صحت کارکنوں کو اضافی مدد فراہم کریں گے ۔ مسٹر بلنکن نے ٹویٹ کیا کہ کووڈ ۔ 19 وبائی بیماری کے پھیلنے کے درمیان ہم ہندوستانی عوام کے ساتھ کھڑے ہیں ۔ ہم ہندوستانی حکام کے ساتھ مل کر کام کر رہے ہیں اور اس کے صحت کے کارکنوں کو اضافی مدد فراہم کریں گے۔

دریں اثنا امریکی چیمبر آف کامرس نے بھی ملکی انتظامیہ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ہندوستان ، برازیل اور اس طرح کے دیگر ممالک میں وبائی امراض کا شکار لاکھوں افراد کے لئے لاکھوں 'ایسٹروجینا ویکسین کی خوراکیں' بھیجیں۔ امریکی چیمبر آف کامرس کے ایگزیکٹو نائب صدر اور بین الاقوامی امور کے سربراہ میرون برلنٹ نے ایک بیان میں کہا کہ ان ویکسینوں کی امریکہ میں ضرورت نہیں ہوگی ، جہاں یہ قیاس کیا جارہا ہے کہ ویکسین تیار کرنے والے ہر امریکی کو جون کے اوائل تک ٹیکہ لگادینے کے لئے مناسب مقدار میں خوراک تیار کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ یہ قدم امریکہ کی قیادت میں اٹھایا گیا ہے۔ کوئی بھی اس وبا سے محفوظ نہیں ہے۔

اہم بات یہ ہے کہ اس وقت ہندوستان میں کورونا کی دوسری لہر ہے اور لوگوں کو ویکسین لگانے کے لئے مزید ویکسین کی ضرورت ہوگی۔ ہندوستان کی وزارت صحت کے مطابق ، ملک میں اب تک 14،09،16،417 ویکسین لگائی جا چکی ہیں۔

یو این آئی ان پٹ کے ساتھ ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Apr 26, 2021 12:10 AM IST