உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    UP Election: یوپی الیکشن کے چوتھے مرحلہ میں 60 فیصد ووٹنگ، اس ضلع میں ہوئی سب سے زیادہ پولنگ، دیکھئے پوری فہرست

    UP Election: یوپی الیکشن کے چوتھے مرحلہ میں 60% ووٹنگ، اس ضلع میں ہوئی سب سے زیادہ پولنگ

    UP Election: یوپی الیکشن کے چوتھے مرحلہ میں 60% ووٹنگ، اس ضلع میں ہوئی سب سے زیادہ پولنگ

    UP Assembly Election 2022: اترپردیش اسمبلی انتخابات کے چوتھے مرحلہ کی ووٹنگ پرامن طریقہ سے اختتام پذیر ہوئی ۔ اس دوران 60 فیصد ووٹنگ ہوئی ۔ حالانکہ 2017 کے اسمبلی انتخابات میں اس مرحلہ کی 59 سیٹوں پر 62.69 فیصد ووٹ پڑے تھے ۔

    • Share this:
      لکھنو : اترپردیش اسمبلی انتخابات کے چوتھے مرحلہ کی ووٹنگ پرامن طریقہ سے اختتام پذیر ہوئی ۔ اس دوران 60 فیصد ووٹنگ ہوئی ۔ حالانکہ ابھی یوپی الیکشن کمیشن نے چوتھے مرحلہ کے فائنل اعداد و شمار جاری نہیں کئے ہیں ۔ اس کے ساتھ ہی رائے بریلی ، پیلی بھیت ، لکھیم کھیری ، سیتا پور ، ہردوئی ، لکھنو ، اناو، فتح پور اور باندہ کی 59 سیٹوں پر 624 امیدواروں کی قسمت ای وی ایم میں بند ہوگئی ہے ۔ حالانکہ 2017 کے اسمبلی انتخابات میں اس مرحلہ کی 59 سیٹوں پر 62.69 فیصد ووٹ پڑے تھے ۔ یہی نہیں ، اب تک پہلے چار مرحلوں میں یوپی اسمبلی کی 403 میں سے 231 سیٹوں کیلئے ووٹ ڈالے جاچکے ہیں ۔

      یوپی اسمبلی انتخابات کے چوتھے مرحلے میں پیلی بھیت میں سب سے زیادہ 67.16 فیصد ووٹ ڈالے گئے۔ وہیں اگر سب سے کم ٹرن آؤٹ کی بات کریں تو اناؤ میں 58.95 فیصد ووٹ پڑے ہیں ۔ اس کے علاوہ لکھیم پور کھیری میں 62.42 فیصد، سیتا پور میں 58.39، ہردوئی میں 55.29، لکھنؤ میں 61.01، رائے بریلی میں 61.94، باندہ میں 57.54 اور فتح پور میں 57.02 فیصد ووٹنگ ہوئی ہے۔

      اتر پردیش کے چیف الیکٹورل افسر اجے کمار شکلا کے مطابق انتخابات کے اعلان کے بعد سے چوتھے مرحلے کی پولنگ کے اختتام تک 9 اضلاع میں 6.85 کروڑ روپے نقد اور 3.76 لاکھ لیٹر شراب ضبط کی گئی ہے۔ ساتھ ہی یہ بھی بتایا کہ اس دوران انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کے 503 واقعات نوٹ کیے گئے اور ضروری کارروائی کی گئی۔

      یوپی انتخابات کے چوتھے مرحلے میں لکھنؤ مشرقی اسمبلی سیٹ سے بی جے پی کے آشوتوش ٹنڈن، لکھنؤ کی سروجنی نگر سیٹ سے بی جے پی امیدوار اور ای ڈی کے جوائنٹ ڈائریکٹر رہے راجیشور سنگھ اور اونچاہار سے ایس پی کے سینئر لیڈر منوج پانڈے میدان میں ہیں۔ اس کے علاوہ رائے بریلی صدر سے بی جے پی کی ادیتی سنگھ، ہردوئی کی سنڈیلہ سے بی ایس پی کے سابق وزیر عبدالمنان، فتح پور کی حسین گنج سیٹ سے یوگی کے وزیر رنویندر پرتاپ سنگھ عرف دھونی سنگھ اور فتح پور کی بدانکی سے اپنا دل (ایس) کے جئے کمار سنگھ جیکی میدان میں ہیں ۔

      خیال رہے کہ گزشتہ انتخابات میں اس مرحلے میں بی جے پی کا دبدبہ تھا، اس لئے سب کی نظریں اس کے ہی زیادہ تر لیڈروں پر مرکوز ہیں۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: