உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کیا ہندو VS مسلمان پر فوکس ہوچکا ہے یوپی الیکشن، جانیے کیوں اُٹھ رہے ہیں یہ سوال

    ان سب کے درمیان یو پی کے الیکشن میں نفرت کا لاوڈاسپیکر بھی زور و شور سے بجنے لگا ہے۔ تازہ ہیٹ اسپیچ توقیر رضا خان کے سامنے آئی ہے جنہوں نے ایک دن پہلے ہی کانگریس سے ہاتھ ملایا ہے۔

    ان سب کے درمیان یو پی کے الیکشن میں نفرت کا لاوڈاسپیکر بھی زور و شور سے بجنے لگا ہے۔ تازہ ہیٹ اسپیچ توقیر رضا خان کے سامنے آئی ہے جنہوں نے ایک دن پہلے ہی کانگریس سے ہاتھ ملایا ہے۔

    ان سب کے درمیان یو پی کے الیکشن میں نفرت کا لاوڈاسپیکر بھی زور و شور سے بجنے لگا ہے۔ تازہ ہیٹ اسپیچ توقیر رضا خان کے سامنے آئی ہے جنہوں نے ایک دن پہلے ہی کانگریس سے ہاتھ ملایا ہے۔

    • Share this:
      لکھنو: یو پی الیکشن (UP Assembly Election) کو لے کر دوسرے دن دلی میں بی جے پی کی کور گروپ کی میٹنگ ہوئی۔ 5 گھنٹے چلی اس میٹنگ میں کاشی اور گورکھپور سمیت سبھی سیٹوں پر بات چیت ہوئی۔ اس میٹنگ میں مرکزی وزیر اور یو پی کے بی جے پی انچارج دھرمیندر پردھان، پارٹی کے ریاستی صر سوتنتر دیو سنگھ، سی ایم یوگی آدتیہ ناتھ سمیت کئی بڑے لیڈر شامل ہوئے۔ بتایا جاتا ہے کہ یوپی کی جن 231 سیٹوں پر ابھی ٹکٹ تقسیم نہیں ہوئے اس کو لے کر بھی تفصیلی بات چیت ہوئی۔

      ان سب کے درمیان یو پی کے الیکشن میں نفرت کا لاوڈاسپیکر بھی زور و شور سے بجنے لگا ہے۔ تازی ہیٹ اسپیچ توقیر رضا خان کے سامنے آئی ہے جنہوں نے ایک دن پہلے ہی کانگریس سے ہاتھ ملایا ہے۔

      اتحاد ملت کاونسل کے صدر توقیر رضا خان نے کہا کہ جس دن میرا نوجوان میرے کنٹرول سے باہر آگیا، جس دن میرا کنٹرول ان نوجوانوں سے ختم ہوگیا، میں کہتا ہوںکہ پہلے میں لڑوں گا بعد میں تمہارا نمبر آئے گا۔ میں ہندو بھائیوں سے خاص طور سے کہنا چاہتا ہوں کہ مجھے اس وقت سے ڈر لگتا ہے جس دن نوجوان قانون اپنے ہاتھ میں لے لے گا۔ جس دن یہ نوجوان بے قابو ہوگیا اور قانون اپنے ہاتھ میں لینے پر مجبور ہوگیا تو تمہیں ہندوستان میں کہیں پناہ نہیں ملے گی۔۔۔ ہندوستان کا نقشہ بدل جائے گا۔ ہم تو پیدائشی جنگجو ہیں۔‘

      ایک دن پہلے توقیر رضا خان نے کانگریس کو سپورٹ کرنے کا اعلان کیا اور آج اُن کی نئی ہیٹ اسپیچ سامنے آگئی۔ 59 سیکنڈ کے اس ویڈیو کو بی جے پی کے ترجمان سامبیت پاترا نے شیئر کیا اور کہا کہ ہندووں کو دھمکی دینے والے اس مولانا کی پارٹی نے کانگریس سے سمجھوتہ کیا ہے۔

      سامبیت پاترا نے کی تنقید
      اس سے کچھ ہی دیر پہلے یوپی کانگریس کے ٹوئٹر ہینڈل سے توقیر رضا اور کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی کی تصویر شیئر کی گئی۔ اس میں کانگریس کو حمایت دینے کو لے کر اُن کے نام کے قصیدے پڑھے گئے تھے۔ سامبیت پاترا نے اسی ٹوئٹ کو ری ٹوئٹ کرتے ہوئے ایک تیر سے دو نشانے لگائے ہیں۔ پرینکا گاندھی پر طنز کیا اور سماج وادی پارٹی کو یہ کہتے ہوئے گھیرا کہ ہندووں کے خلاف زہر اگلنے والوں اور دنگا کرانے والوں کو سماج وادی پارٹی ٹکٹ دیتی رہی ہے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: