உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    محرم کے لئے جاری سرکلر پر تنازعہ، ڈی جی پی نے کہا- مذہبی جذبات مجروح کرنا ہمارا مقصد نہیں

    محرم کے لئے جاری سرکلر پر تنازعہ، ڈی جی پی نے کہا- مذہبی جذبات مجروح کرنا ہمارا مقصد نہیں

    کورونا انفیکشن (Corona Infection) کے سبب اترپردیش میں اس سال 19 اگست کو محرم کے دوران جلوس اور تعزیہ نکالنے کی جازت نہیں ہوگی۔ کورونا وبا کو دیکھتے ہوئے یوپی پولیس کی طرف سے گائڈ لائن جاری کی گئی ہیں۔ اب اس سرکلر پر تنازعہ (Circular Dispute) کھڑا ہوگیا ہے۔

    • Share this:
      لکھنو: کورونا انفیکشن (Corona Infection) کے سبب اترپردیش میں اس سال 19 اگست کو محرم کے دوران جلوس اور تعزیہ نکالنے کی جازت نہیں ہوگی۔ کورونا وبا کو دیکھتے ہوئے یوپی پولیس کی طرف سے گائڈ لائن جاری کی گئی ہیں۔ اب اس سرکلر پر تنازعہ (Circular Dispute) کھڑا ہوگیا ہے۔ اسی ضمن میں پیر کو یوپی کے ڈی جی پی مکل گوئل نے نیوز 18 سے بات چیت میں کہا، ’کووڈ پروٹوکول کے تحت سپریم کورٹ کے احکامات پر محرم کے جلوس پر پابندی ہے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ کافی وقت سے محرم پر یہی سرکلر جاری ہو رہا ہے، یہ کوئی نیا نہیں ہے‘۔ ڈی جی پی کے مطابق، یہ سرکلر فورس کے لئے ہے، جو گزشتہ کچھ معاملوں کو دیکھتے ہوئے تیار کیا گیا ہے۔ تیوہار کے دوران بہتر لا اینڈ آرڈر بنائے رکھنے کے لئے سرکلر جاری کیا گیا ہے۔ مکل گوئل نے بتایا کہ ہمارا مقصد کسی کے مذہبی جذبات کو ٹھیس پہنچانا نہیں ہے۔

      شیعہ مذہبی رہنما مولانا کلب جواد نے پوری ریاست کی محرم کمیٹیوں کو پولیس کی کسی بھی میٹنگ میں شامل نہ ہونے کی ہدایت دی ہے۔
      شیعہ مذہبی رہنما مولانا کلب جواد نے پوری ریاست کی محرم کمیٹیوں کو پولیس کی کسی بھی میٹنگ میں شامل نہ ہونے کی ہدایت دی ہے۔


      پولیس انتظامیہ کے نازیبا الفاظ والے محرم سرکلر کی مخالفت میں معروف اور سینئر شیعہ مذہبی رہنما مولانا کلب جواد نے پوری ریاست کی محرم کمیٹیوں کو پولیس کی کسی بھی میٹنگ میں شامل نہ ہونے کی ہدایت دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس معاملے میں پہلے بیان ڈی جی پی واپس لیں، تبھی کوئی بات ممکن ہے۔ مولانا کلب جواد نے کہا کہ یہ بیان ڈی جی پی کا نہیں بلکہ ابو بکر بغدادی کا معلوم ہو رہا ہے۔ شیعہ علمائے کرام نے ڈی جی پی اترپردیش کے ذریعہ جاری اس گائڈ لائن کو واپس لے کر ڈرافٹ تیار کرنے والے ملازمین کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔



      ڈی جی پی مکل گوئل نے پولیس افسران کو مذہبی رہنماوں، امن کمیٹی کے عہدیداران اور معزز شہریوں سے بات چیت کرکے انہیں کووڈ-19 کے پیش نظر مذہبی انعقاد کو لے کر سپریم کورٹ اور انتظامیہ کی گائڈ لائن سے متعلق جانکاری دینے کے بھی احکامات دیئے گئے ہیں۔

      اترپردیش کے ڈی جی پی کی جانب سے محرم سے متعلق جاری کی گئی گائڈ لائن میں استعمال کئے گئے الفاظ کی وجہ سے تنازعہ پیدا ہوگیا ہے۔
      اترپردیش کے ڈی جی پی کی جانب سے محرم سے متعلق جاری کی گئی گائڈ لائن میں استعمال کئے گئے الفاظ کی وجہ سے تنازعہ پیدا ہوگیا ہے۔





      عیدالاضحیٰ پر جاری ہوئی تھی گائڈ لائن

      یوپی حکومت نے عیدالاضحیٰ (بقرعید) کو لے کر بھی گائڈ لائن جاری کی تھی، جس میں کہا گیا تھا کہ عیدالاضحیٰ کے موقع پر ضروری پابندیاں نافذ کی جائیں۔ کووڈ کو دیکھتے ہوئے تیوہار سے متعلق کسی انعقعاد میں 50 سے زیادہ لوگ ایک مقام پر ایک وقت میں جمع نہ ہوں۔ یہ یقینی بنایا جائے کہ کہیں بھی گائے، اونٹ یا دیگر ممنوعہ جانور کی قربانی نہ ہو۔ ساتھ ہی قربانی عوامی مقامات پر نہ کی جائے۔


      Published by:Nisar Ahmad
      First published: