உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    UP Violence: نماز جمعہ کے بعد ہوئے تشدد کے معاملہ میں اب تک 255 گرفتار، جانئے کیا ہے یوگی کا حکم؟

    UP Violence: نماز جمعہ کے بعد ہوئے تشدد کے معاملہ میں اب تک 255 گرفتار، جانئے کیا ہے یوگی کا حکم؟

    UP Violence: نماز جمعہ کے بعد ہوئے تشدد کے معاملہ میں اب تک 255 گرفتار، جانئے کیا ہے یوگی کا حکم؟

    UP Violence: اترپردیش کے کئی اضلاع میں جمعہ کی نماز کے بعد ہوئے تشدد کے سلسلے میں پولیس کی کارروائی جاری ہے ۔ اب تک پولیس نے 255 افراد کو گرفتار کیا ہے ۔ وہیں وزیر اعلی یوگیہ آدتیہ ناتھ نے تشدد کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کا حکم دیا ہے ۔

    • Share this:
      لکھنو: اترپردیش کے کئی اضلاع میں جمعہ کی نماز کے بعد ہوئے تشدد کے سلسلے میں پولیس کی کارروائی جاری ہے ۔ اب تک پولیس نے 255 افراد کو گرفتار کیا ہے ۔ وہیں یو پی کے ای ڈی جی لا اینڈ آرڈر پرشانت کمار نے کہا کہ کل جو واقعات پیش آئے ، اس میں کچھ اضلاع میں کچھ افراد نے امن و امان میں خلل ڈالنے کی کوشش کی، جن کی شناخت کی جاچکی ہے اور ان کی گرفتاری کافی تیزی سے کی جارہی ہے ۔ وہیں وزیر اعلی یوگیہ آدتیہ ناتھ نے تشدد کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کا حکم دیا ہے ۔

      ہفتہ کی شام کو وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے ویڈیو کانفرنس میں پولیس افسران کو حکم دیا ہے کہ تشدد کرنے والوں کے خلاف ایسی کارروائی ہو جو غیرسماجی عناصر کیلئے ایک نظیر بنے اور ماحول بگاڑنے کے بارے میں کوئی سوچ بھی نہ سکے ۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے پولیس اور انتظامیہ کو 24 گھنٹے الرٹ موڈ پر رہنے کا حکم دیا ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: ہاوڑہ میں پھر تشدد، پولیس افسران کا تبادلہ، مرشد آباد میں انٹرنیٹ بند


      نیز وزیر اعلی نے یہ بھی کہا کہ کوئی بھی اگر قانون کو اپنے ہاتھوں میں لے رہا ہے یا کوئی بھی تنظیم ہو اس کے خلاف سختی سے نمٹنے کی کارروائی ضلع سطح پر ہو۔ ہر سرگرمی پر مضبوطی کے ساتھ اس کا نوٹس لیا جائے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: Saharanpur Violence: پولیس نے 64 افراد کو کیا گرفتار، دو کے گھر پر چلا بلڈوزر


      وہیں یوپی پولیس کے مطابق جمعہ کو اترپردیش کے نو اضلاع میں تشدد کے واقعات پیش آئے ، جس میں اب تک 255 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے ۔ اس دوران سہارنپور میں 64، ہاتھرس میں 50، امبیڈکر نگر میں 28، پریاگ راج میں 68، مراد آباد میں 27، فیروز آباد میں 13، علی گڑھ میں تین اور جالون میں دو افراد کو گرفتار کیا گیا ہے ۔

      دریں اثنا اترپردیش کے کئی اضلاع میں جمعہ کی نماز کے بعد ہوئے تشدد سے متاثرہ علاقوں میں ہفتہ کو پولیس نے فلیگ مارچ نکالا ۔ اس دوران لکھنو کے ساتھ پریاگ راج اور سہارنپور میں پولیس کی زبردست چہل قدمی دیکھنے کو ملی ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: