ہوم » نیوز » وطن نامہ

لوک سبھا کی کارروائی پیر تک کےلئے ملتوی

پارلیمنٹ کے بجٹ سیشن کے دوسرے مرحلہ میں لوک سبھا میں مسلسل 17 ویں دن اپوزیشن پارٹیوں کے ارکان نے آج بھی بھاری ہنگامہ کیا جس کے بعد اسپیکر سمترا مہاجن کو ایوان کی کارروائی پیر تک کیلئے ملتوی کرنی پڑی۔

  • UNI
  • Last Updated: Mar 28, 2018 01:50 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
لوک سبھا کی کارروائی پیر تک کےلئے ملتوی
پارلیمنٹ کے بجٹ سیشن کے دوسرے مرحلہ میں لوک سبھا میں مسلسل 17 ویں دن اپوزیشن پارٹیوں کے ارکان نے آج بھی بھاری ہنگامہ کیا جس کے بعد اسپیکر سمترا مہاجن کو ایوان کی کارروائی پیر تک کیلئے ملتوی کرنی پڑی۔

نئی دہلی۔پارلیمنٹ کے بجٹ سیشن کے دوسرے مرحلہ میں لوک سبھا میں مسلسل 17 ویں دن اپوزیشن پارٹیوں کے ارکان نے آج بھی بھاری ہنگامہ کیا جس کے بعد اسپیکر سمترا مہاجن کو ایوان کی کارروائی پیر تک کیلئے ملتوی کرنی پڑی۔دوپہر 12 بجے ایک بار ملتوی ہونے کے بعد ایوان کی کارروائی جیسے ہی شروع ہوئی چیئرکے سامنے بینر لئے پہلے سے ہی موجود انادرمک کے ارکان نے کاویری واٹر مینجمنٹ بورڈ قائم کرنے کا مطالبہ کو لے کر نعرے لگاتے ہوئے اور ہاتھوں میں بینر لے کر زبردست ہنگامہ آرائی شروع کر دی۔


بتادیں کہ ہنگامے کے درمیان ہی اسپیکر نے ضروری کاغذات ایوان میں ركھوائے۔ ایوان میں کانگریس کے لیڈر ملک ارجن کھڑگے نے بھی اپنے نام کے آگے بیان کردہ رپورٹ ایوان میں رکھنے کے بعد ہنگامے پر کچھ بولنا چاہا لیکن اسپیکرنے فہرست میں متعین اگلے رکن کا نام پکارا جس کی وجہ سے مسٹر کھڑگے کچھ بول نہیں پائے۔

اسپیکر نے ارکان سے ہنگامہ نہ کرنے اور عدم اعتماد کی تحریک کو پیش کرنے کے لئے ماحول بنانے کی اپیل کی لیکن ان کی بات نہیں سنی گئی اور کانگریس، لیفٹ پارٹیاں اور اپوزیشن کے دیگر تمام اراکین اپنی اپنی نشستوں پر کھڑے ہوکراحتجاج کرنے لگے۔ اسی درمیان پارلیمانی امور کے وزیر اننت کمار نے الزام لگایا کہ کانگریس نے ایوان میں عدم اعتماد کی تحریک کو لے کر ارکان کی تعداد کا جس طرح مظاہرہ کیا وہ ضابطوں کے مطابق غلط تھا۔

اسپیکر کے حکم کے بغیر کوئی بھی پارٹی اس طرح کی کارروائی نہیں کر سکتی ہے۔ انہوں نے کانگریس کے اس رویے کو غلط بتایا اور کہا کہ حکومت عدم اعتماد کی تحریک پر بحث کے لئے تیار ہے۔

First published: Mar 28, 2018 01:43 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading